تازہ ترین

موسمی صورتحال میں بہتری| وادی میں شبانہ درجہ حرارت گرنے لگا

گلمرگ میں منفی 10، 16 جنوری تک مزید کمی کی پیش گوئی

تاریخ    11 جنوری 2022 (00 : 01 AM)   


اشفاق سعید
سرینگر //ٹنل کے آر پار حالیہ دنوں ہونے والی برف باری کے بعد موسم میں تبدیلی آنے کے نتیجے میں شبانہ درجہ حرارت میں پھر گراوٹ آگئی ہے۔ اس دوران محکمہ موسمیات کا کہنا ہے کہ آنے والے دنوں میں شبانہ سردی میں اضافہ ہو گا  جبکہ دن کا درجہ حرارت بڑھے گا۔ محکمہ موسمیات کی پیش گوئی کے مطابق16 جنوری تک موسم مجموعی طور پر خشک رہنے کا امکان ہے۔محکمہ کے ایک ترجمان کے مطابق اتوار اور سوموار کی درمیانی رات سرینگر میں رات کا کم سے کم درجہ حرارت 0.2 ڈگری سلسیش ریکارڈ کیا گیا۔ گلمرگ ،جہاں قریب تین فٹ برف جمع ہے، میں کم سے کم درجہ حرارت منفی10.0 ڈگری سلسیش ریکارڈ کیا گیا ۔ پہلگام میں منفی2.5 ، کپوارہ میں منفی0.6 ،قاضی گنڈ میں0.6  ریکارڈ ہوا ۔ادھر لیہہ میں کم سے کم درجہ حرارت منفی9.5 ڈگری سلسیش ریکارڈ کیا گیا جبکہ کرگل میں منفی7.0 اور  دراس میں کم سے کم درجہ حرارت منفی8.8 ڈگری ریکارڈ کیا گیا۔یاد رہے کہ وادی میں گذشتہ دو روز سے موسم خشک ہے اور دیہی علاقوں میں سڑکوں پر پھسلن کی وجہ سے صبح کے وقت گاڑیوں کی آمد و رفت متاثر رہی ہے۔کرگل سرینگر شاہراہ کو سرکاری طور پر بند کر دیا گیا ہے تاہم کنگن سے سونہ مرگ سڑک کو رواں سال گاڑیوں کی آمد ورفت کیلئے کھلا چھوڑا گیاہے، البتہ سیاحوں کو گگن گیر سے آگے جانے کی اجازت نہیں ہے ۔حکام کا کہنا ہے کہ موسم میں بہتری کے بعد ہی سیاحوں کو آگے جانے کی اجازت ہو گی ۔ادھر کرناہ کپواڑہ شاہراہ پر بیکن نے سڑک سے برف ہٹانے کا کام شروع کر دیا ہے اور آئندہ کچھ روز میں شاہراہ کو بحال کر دیا جائے گا ۔کیرن ، مژھل اور کرناہ سے ملانے والی سڑکیں پچھلے 6روز سے بند ہیں۔ مغل روڑ پر بھی انتظامیہ نے برف ہٹانے کا کام شروع کیا ہے ۔ادھر بانڈی پورہ گریز شاہراہ پر رازدان ٹاپ پر 2فٹ برف جمع ہے جس کے نتیجے میں اس شاہراہ کو بھی آمد وفت کیلئے بند رکھا گیا ہے۔ادھر خالد جاوید نے بتایا کہ ضلع کے بالائی علاقوں نندی مرگ، دبدبن ، ڑار پورہ، اہربل، ٹنگمرگ،وٹو، وگے پورہ ، بوکھڑ پتی ،بکروال چک ،ٹنگہ تراجی،کٹہ مرگ اور حالن کے علاوہ دیگر کئی دیہات میں ابھی معمول کی زندگی بحال نہ ھوسکی، ان دیہات میں بجلی،پانی اور گاڑیوں کی نقل و حمل بری طرح متاثر ہے۔