۔4جنوری کی شام سے موسم پھر تبدیل ہوگا

سرینگر //بالائی علاقوں میں ہلکی برف باری اور میدانی علاقوں میں ہلکی بارشوں کے بعد اتوار کو موسم خشک رہا تاہم محکمہ موسمیات کا کہنا ہے کہ آج شام سے پھر موسم بدل سکتا ہے اور 4 سے6جنوری تک کئی مقامات پر درمیانہ درجے یا بھاری برف باری ہو سکتی ہے ۔سنیچر اور اتوار کی درمیانی رات گلمرگ ،سونہ مرگ اور کپوارہ کے بالائی علاقوں میں برف باری ہوئی جو رات بھر جاری رہی ۔برف بھاری کی وجہ سے اگرچہ کپوارہ ضلع کی کئی ایک سڑکیں گاڑیوں کی آمد ورفت کیلئے بند ہوئیں تاہم بعد دوپہر کرناہ کپوارہ شاہراہ کو گاڑیوں کی آمد ورفت کیلئے بحال کر دیا گیا۔ کرناہ کپوارہ شاہراہ پر قریب 2فٹ برف جمع ہے جبکہ کیرن اور مژھل سڑکیں گاڑیوں کی آمد ورفت کیلئے بند ہیں ۔ ضلع میں اگرچہ اتوار کو دن بھر موسم صاف رہا لیکن بعد دوپہر کچھ ایک علاقوں میںہلکی برف باری بھی ہوئی ۔ گلمرگ سمیت ضلع بارہمولہ کے دیگر بالائی علاقوں میں بھی برف باری ہوئی ،جس سے ٹھنڈ میں اضافہ ہوا ۔گلمرگ میں گذشتہ رات 4.2سینٹی میٹر برفباری ریکارڈ کی گئی اور صبح کے وقت یہاں برف جمی تھی جس کے بعد سڑکیں صاف کی گئیں۔ کنگن سے نامہ نگار غلام نبی رینہ کے مطابق سونہ مرگ زوجیلا، گگن گیر، کلن گنڈ، گنہ ون، کنگن میں گذشتہ شب سے سال نو کی تازہ برفباری ہوئی ۔ ایس ڈی ایم دراس اصغر حسین نے کشمیر عظمیٰ کو بتایا کہ دراس سے سرینگر کی طرف چھوٹی بڑی 78 گاڑیوں کو روانہ کیا گیا ۔ ادھر کرگل،دراس، منی مرگ گومری ،مٹاین ،پاندراس میں بھی تازہ برفباری ہوئی ہے۔ زوجیلا میں چار انچ، سونہ مرگ میں3انچ ،گگن گیر گنڈ کلن کنگن میں 2 انچ برف ریکارڈ کی گئی۔ محکمہ موسمیات کے ڈائریکٹر سونم لوٹس کے مطابق پہاڑی علاقوں میں تازہ برف باری کے بعد شبانہ درجہ حررات میں بہتری آئی ہے ۔انہوں نے مزید بتایا کہ 4سے6جنوری کو بالائی علاقوں میں بھاری برف باری ہو سکتی ہے جس کے پیش نظر فضائی اور زمینی رابطے متاثر ہوسکتے ہیں ۔ ادھرمحکمہ کے ترجمان نے بتایا کہ سرینگر میں سنیچر اور اتوار کی درمیانی رات کم سے کم درجہ حرارت 0.3ڈگری سلسیش ریکارڈ کیا گیا۔قاضی گنڈ میں منفی1.0،پہلگام میں منفی1.7 اور گلمرگ میں منفی 6.2ڈگری سلسیش ریکارڈ کیا گیا ۔