ہائی وے بند کرنے سے کشمیری مزید الگ تھلگ محسوس کریں گے: اکونومک الائنس

سرینگر/کشمیر اکونومک الائنس کے چیئر مین محمد یاسین خان نے جمعہ کو کہا کہ ہفتے میں دو دن کشمیر ہائی وے بند کرنے سے کشمیری لوگ مزید الگ تھلگ محسوس کریں گے۔

  خان نے مزید کہا کہ حکومت کو چاہئے کہ اس معاملے کو لیکر شہریوں کی بات سنے۔

خان نے ایک بیان میں کہا''ایسے غیر انسانی فیصلے عوام کو مزید الگ تھلگ کریں گے۔حکومت کو چاہئے کہ اولین فرصت میں اس فیصلے پر نظر ثانی کرے کیونکہ عوام کی نقل و حرکت نوے کی دہائی میں بھی نہیں روکی گئی تھی''۔

انہوں نے کہا کہ کشمیریوں کے پاس متبادل راستے نہیں ہیں اور کشمیر ہائی وے ہی اُن کی لائف لائن ہے۔

انہوں نے سوال پوچھتے ہوئے کہا'' بیمار لوگ کیسے اسپتال پہنچیں گے؟طالب علم کیسے تعلیمی اداروں تک پہنچیں گے؟سرکاری ملازم دفتروں تک کیسے پہنچیں گے؟ اور تجارت کیسے ہوگی؟''