گول ڈھیڈہ روڈ پر پسی گر آئی ، عوام سراپا احتجاج

گول //گول ڈھیڈہ روڈ پر گزشتہ روز ایک بھاری پسی گر آنے اور سڑک کی حالت خستہ پر مقامی لوگوں نے سخت احتجاج کیا اور اس سلسلے میں ایک وفد نے ایس ڈی ایم گول غیاث الحق سے ملاقی ہوا اور انہیں ایک یاداشت پیش کی ۔ بعد اذاں مقامی لوگوں نے گول صدر مقام پر ذرائع ابلاغ کے نمائندوں سے بات کرتے ہوئے اس بات پر سخت تشویش کا اظہار کیا کہ محکمہ کے آفیسران ضلع صدر مقام سے ہی اعلیٰ حکام کو تمام کاروائی لکھتے ہیں اور زمینی سطح کی حالت جوں کی توں ہے ۔ انہوں نے کہا کہ یہ نہ صرف ایک ڈھیڈہ سڑک کی حالت بلکہ سب ڈویژن گول میں اکثر سڑکوں کی حالت ابتر ہے جس میں محکمہ تعمیرات عامہ اور پی ایم جی ایس وائی آتا ہے ،۔یہاں اگر گول سلبلہ روڈ کی بات کریں تو گو ل بازار کے ساتھ ہی اس کی حالت ابتر ہے ۔ روڈ کو اتنا تنگ کر کے رکھ دیا ہے کہ یہاں پر گاڑیوں کے ساتھ ساتھ انسانوں کو بھی چلنے میں کافی دشواریوں کا سامنا کرنا پڑتا ہے ،وہیں گول ڈھیڈہ روڈ جو زیرو پوائنٹ تک پی ڈبلیو ڈی کے تحت آتا ہے جس کی حالت نہایت ہی خراب ہے اور وہاں سے ڈھیڈہ تک پی ایم جی ایس وائی کے تحت آتا ہے اور یہاں پر سالہا سال سے محکمہ نے کوئی نظر نہیں دی اور جو پسیاں گر آتی ہیں وہ وہیں ہوتی ہیں او ر نالیوں کا کوئی نام و نشان نہیں ہے ۔ سڑک کے بیچوں بیچ بڑے بڑے کھڈے پڑے ہیں ان کو کوئی نہیں بھرتا ہے ۔ مقامی لوگوں نے کہا کہ اگر چہ ہر سال محکمہ لاکھوں روپے ان سڑکوں کے رکھ رکھائو کے لئے خزانہ عامرہ سے نکالتے ہیں اور ان کے لئے بنیادی سطح کے ملازمین بھی تعینات ہیں لیکن افسوس کا مقا م ہے کہ ان رقوم کا خرد برد ہوتا ہے اور یہ ملازمین سالوں سے نظر نہیں آ رہے ہیں ۔ مقامی لوگوں نے ایکسن رام بن پی ڈبلیو ڈی کی ایک لیٹر کی سخت تردید کرتے ہوئے کا کہا کہ یہ تمام جھوٹ ہے زمینی سطح پر کوئی ملازم دکھائی نہیں دے رہا ہے اور سڑکوں کی حالت جوں کی توں ہے یہ اعلیٰ حکام اور سرکار کی آنکھوں میں دھول پھینکی جا رہی ہے جسے کسی بھی صورت میں برداشت نہیں کیا جائے گا ۔ اس سلسلے میں ایس ڈی ایم گول نے کہا کہ انہوں نے ایکسن رام بن سے بات کی ہے اور دیگر مسائل کو حل کرنے کے لئے بھی انتظام کام کر رہا ہے ۔