کشمیر کی تاریخ مسخ کرنے کی کوشش

 سرینگر // جھیل ڈل میںموسیقی فواروں کو کشمیر کی تاریخ مسخ کرنے کی کوشش قرار دیتے ہوئے نیشنل کانفرنس کے صدر ڈاکٹر فاروق عبداللہ نے کہا کہ اس طرح کی کوشش قابل قبول نہیں۔سنیچر کو خانیار میں چناوی جلسے میںاپنی تقریر میں کہا کہ ’’میں کل جھیل ڈل میں نصب کئے گئے میوزکل فوارے کو دیکھنے کیلئے گیا تھا، وہاں جو پہلا حصہ تھا وہ بہت اچھا تھا لیکن دوسرے وقفے میں یہاں کی تاریخ کو مسخ کرکے پیش کیا گیا، جو انتہائی تشویشناک اور افسوسناک ہے۔ اس وقفے کے دوران اُن حکمرانوں کی تعریفیں کی گئیں جنہوں نے کشمیریوں پر مظالم کے پہاڑ ڈھائے۔ میں حکومت اور انتظامیہ پر زور دیتا ہوں کہ سچی تاریخ عوام کے سامنے پیش کریں، تاریخ کو توڑ مروڑ اور مسخ کرکے پیش کرنا ہمیں قطعی قبول نہیں‘‘۔