کرسو راجباغ میں بجلی کی بار بار کٹوتی سے صارفین کی ناک میں دم

سرینگر//بجلی ٹرانسفامروں کی صلاحیت اور ڈھیلی ترسیلی لائنوں کی مرمت میں ناکام محکمہ بجلی نے سرما کے ان آیام میں کرسو راجباغ علاقے کو اندھیرے میں دھکیل دیا ہے اور گھنٹوں بجلی غائب رہنے کے نتیجے میں عام صارفین کے ساتھ ساتھ طلاب کو سخت ترین مشکلات کا سامنا کرنا پڑ رہا ہے ۔مقامی لوگوں نے کشمیر عظمیٰ کو بتایا کہ اس علاقے میں سب سے پہلے محکمہ بجلی نے میٹر نصب کئے ہیں اور یہاں ایسا کوئی گھر نہیں ہے جہاں میٹر نصب نہ ہو لیکن اکثر سرما کے موسم میں یہاں کے صارفین کو اندھیرے میں رہنا پڑتا ہے ۔ کرسو راجباغ بنڈ کے آس پاس کے علاقوں میں رہنے والے صارفین کا کہنا ہے وہ پچھلے ایک ماہ سے بجلی کی ابتر صورتحال کا سامنا کر رہے ہیں ۔انہوں نے بتایا کہ اگر میٹر والے علاقوں میں 4گھنٹے بجلی بند رکھنے کاا علان محکمہ بجلی نے کیا ہے لیکن یہ علان صرف کاغذات تک ہی محدود ہے ۔انہوں نے کہا کہ اگر شہر کے کرسو راجباغ کی حالت ایسی ہے، تو دیگر نان میٹر یافتہ علاقوں کا کیا ہو تا ہو گا ۔راجباغ کے عمر نامی ایک نوجوان نے بتایا کہ محکمہ لوگوں سے ماہانہ بجلی وصول کرتا ہے اور لوگوں کو بھاری بجلی کی بلیں بھی تھما دی جاتی ہیںلیکن گرمیوں کے موسم میں بجلی کے تباہ حال ڈھانچہ کی مرمت کی جانب کوئی دھیان نہیں دیا جاتا ۔ عمر نے کہا کہ لوگ اس انتظار میں رہتے ہیں کہ انہیں شیڈول کے مطابق بجلی آئے گی، لیکن جیسے ہی بجلی آتی ہے، اس کے کچھ ہی منٹوں بعد گل ہو جاتی ہے، پھر گھنٹوں تک بجلی کا انتظار کرنا پڑتا ہے ۔عمر نے مزید کہا کہ جب محکمہ کے ٹول فری نمبر پر رابطہ کرتے ہیں ،تووہاں شکایت کو ٹال دیا جاتا ہے۔ سہیل احمد نامی ایک نوجوان نے کہا کہ بجلی کی حالت ایسی ہے کہ یہاں صبح گھنٹہ ڈیڑھ گھنٹہ دوپہر کو کئی گھنٹوں تک بجلی بند رکھی جاتی ہے اس کے بعد عصر کے وقت اور شام کے وقت بھی بجلی بند رکھی جاتی ہے۔سہیل نے مزید کہا بجلی کی بار بار کٹوتی اور غیر اعلانیہ بریک ڈاون کی وجہ سے لوگ سخت پریشان ہوچکے ہیں۔ مشتاق احمد نامی ایک شہری کا کہنا تھا محکمہ بجلی یہ  بہانے کر رہا ہے کہ اورلوڈنگ کی وجہ سے یہ سارا معاملہ پیش آتا ہے، لیکن لوگ پوچھتے ہیں کہ گرمیوں میں جب محکمہ لوگوں کے گھروں میں میٹر نصب کر رہا تھا اس وقت کیوں بجلی ٹرانسفامروں کی صلاحت اور بجلی کے ترسیلی نظام کو درست نہیں کیا گیا اور آج لوگوں کو اورلوڈنگ کا بہانہ بنا کر تنگ کیا جاتا ہے ۔مشتاق نے کہا کہ محکمہ یہ سوچ رہا ہے کہ یہاں سمارٹ میٹر نصب کریں لیکن جس علاقے میں بجلی کا نظام ہی بیکار ہو وہاں سمارٹ میٹر کیا نصب کئے جائیں گے ۔مقامی لوگوں نے انتظامیہ اور محکمہ بجلی کے اعلیٰ افسران سے اپیل کی ہے کہ وہ کرسو راج باغ میں بجلی کی معقولیت کیلئے اقدامات اْٹھائیں تاکہ لوگوں کو پریشانی کا سامنانہ کرنا پڑے۔