نئے کالجوں کی تعمیر میں گرین بلڈنگ ٹیکنالوجی استعمال کی جائے: گنائی

 سرینگر//گورنر کے مشیر خورشید احمد گنائی نے ریاست میں نئے کالجوں کی تعمیر کو حتمی شکل دینے سے متعلق میٹنگ کی صدارت کی۔ میٹنگ میں محکمہ اعلیٰ تعلیم کے سیکرٹری طلعت پرویز، منیجنگ ڈائریکٹر جے کے پی سی سی ، ایم راجو، ڈائریکٹر کالجز ظہور احمد ژاٹ، تعمیرات عامہ کے چیف انجنیئران، چیف آرکیٹیکٹ جموں وکشمیر، ایف اے سی اے او اعلیٰ تعلیم اور پرنسپل جی سی ای ٹی سرینگر کے علاوہ دیگر متعلقین نے شرکت کی۔میٹنگ کے دوران خورشید گنائی جن کے پاس محکمہ تعلیم کا قلمدان بھی ہے، نے نئے کالجوں کی تعمیر میں گرین بلڈنگ ٹیکنالوجی کو بروئے کار لانے پر زور دیا۔ انہوں نے متعلقہ عمل آوری ایجنسیوں کو ڈی پی آر کی تشکیل میں شمسی توانائی اور رین واٹر ہارویسٹنگ کی گنجائش رکھنے کی صلاح دی۔ انہوں نے محکمہ اعلیٰ تعلیم اور متعلقہ ایجنسیوں کو سلامتی ضوابط پر کوئی بھی سمجھوتہ نہ کرنے کی ہدایت دی۔ انہوں نے عمارتوں کی تعمیر میں مقامی ثقافت کو مد نظر رکھنے پر زور دیا۔میٹنگ میں بتایا گیا کہ کالجوں میں اکیڈیمک اور انتظامی بلاکوں کے علاوہ آڈیٹوریم کی گنجائش بھی رکھی جائے گی۔صلاحکار نے ہوسٹلوں اور رہایشی کوارٹروں کی تعمیر کی گنجائش کو دھیان میں رکھنے پر زور دیا۔ انہوں نے ہر ایک پروجیکٹ کو حتمی شکل دینے سے قبل جگہ کا دورہ کرنے کی ہدایت دی۔ انہوں نے ہر ایک کالج میں غیر نصابی سرگرمیوں کے لئے جگہ دستیاب رکھنے کی بھی ہدایت دی۔ریاست میں قائم کئے جارہے ان کالجوں کے لئے تعمیراتی منصوبے تشکیل دینے کے لئے کام پر لگائے گئے نجی ایجنسیوں کے نمائندوں نے پاور پوائنٹ پریذنٹیشن کے ذریعے متعلقہ تفاصیل پیش کیں۔