موسلادھار بارش کے بعد مینڈھر قصبہ بنا جھیل

 
مینڈھر //گزشتہ روز مینڈھر میں ہوئی تیز بارش کے بعد قصبہ کی نالیوں کے بند ہو نی کی وجہ سے بارش کا پانی لوگوں کے گھروں اور دکانوں میں داخل ہو نے کی وجہ سے دکانداروں کا لاکھوں روپے کا نقصان ہوا ۔دکانداروں نے مقامی انتظامیہ کو تنقید کا نشانہ بنا تے ہوئے کہاکہ مینڈھر قصبہ میں صفائی ستھرائی کے بہترین انتظامات ہی نہیں کئے جاتے جبکہ صفائی کرمچاریوں کی جانب سے تمام گندگی کو نالیوں میں ڈال دیا جاتا ہے جس کی وجہ سے قصبہ کی متعدد نالیوں بند ہو چکی ہیں ۔یہاں یہ بات قابل ذکر ہے کہ مینڈھر میں ہوئی بارش کی وجہ سے بارش کا پانی سڑکوں اور گلیوں پر سے بہنے کی وجہ سے مقامی لوگوں ،دکانداروں اور عام راہگیروں کو کئی گھنٹوں تک مسائل کا سامنا کرنا پڑا جبکہ اس دوران کئی ایک دکانداروں کا سامان بھی تباہ ہوا ۔دکانداروں نے انتظامیہ پر الزام عائد کرتے ہوئے کہاکہ محکمہ دیہی ترقی کی جانب سے تعینات شدہ صفائی کرمچاری سنجیدگی کیساتھ اپنی ڈیوٹی انجام نہیں دیتے لیکن متعلقہ محکمہ بھی اس طرف توجہ نہیں دیتا جبکہ صفائی کرمچاریوں کو محکمہ کی جانب سے تنخواہ کے علاوہ دکانداروں کی جانب سے بھی فی دکان سو روپے ماہانہ دیا جاتا ہے لیکن پھر بھی نالیوں و قصبہ کی گلیوں میں صفائی ستھرائی کا فقدان رہتا ہے ۔دکانداروں نے اپیل کرتے ہوئے کہاکہ مینڈھر میں نکاسی آب کے ساتھ ساتھ صفائی ستھرائی کیلئے ایک معقول قاعدہ بنایا جائے تاکہ بارشوں کے دنوں میں ان کو مسائل کا سامنا نہ کرنا پڑے ۔انہوں نے انتباہ دیا کہ اگر نظام کو بہتر نہیں کیا گیا تو اس سلسلہ میں احتجاج شروع کیا جائے گا ۔