منفی 3.4کیساتھ پہلگام سرد ترین مقام آنے والے دنوں میں شبانہ ٹھنڈ بڑھے گی

 عظمیٰ نیوز سروس

سرینگر// وادی کشمیر کے بیشتر مقامات پر پیر کے روز کم سے کم درجہ حرارت نقطہ انجماد کے قریب یا اس سے نیچے گر گیا ۔محکمہ موسمیات کے نے بتایا کہ جہاں سرینگر شہر اور جنوبی کشمیر کے کوکرناگ قصبے میں کم سے کم درجہ حرارت نقطہ انجماد سے معمولی حد تک اوپر رہا، پہلگام اور گلمرگ میں درجہ حرارت صفر سے نیچے چلا گیا۔ اننت ناگ ضلع کے پہلگام، جو امرناتھ یاترا کے بیس کیمپوں میں سے ایک کے طور پر کام کرتا ہے، میں اتوار کی رات پارہ منفی 3.4 ڈگری سیلسیس تھا، جس سے یہ وادی میں سب سے سرد مقام رہا۔عہدیداروں نے بتایا کہ گلمرگ میں کم سے کم درجہ حرارت منفی 3 جبکہ سرینگر میں کم سے کم درجہ حرارت 0.7 ڈگری سیلسیس تھا۔قاضی گنڈ میں منفی 0.4 اور کوکرناگ قصبے میں کم سے کم 0.8 ڈگری سیلسیس تھا۔گزشتہ جمعرات کو کشمیر میں تین ہفتوں سے جاری خشک موسم کا خاتمہ ہوا کیونکہ وادی کے درمیانی اور اونچی جگہوں پر برف باری ہوئی جبکہ میدانی علاقوں میں بارش ہوئی۔محکمہ موسمیات کا کہنا ہے کہ آسمان جزوی طور پر ابر آلود رہے گا تاہم 10 دسمبر تک موسم خشک رہے گا۔انہوں نے کہا کہ اس دوران وادی کے شبانہ درجہ حرارت میں 3.5 ڈگری سینٹی گریڈ تک گراوٹ متوقع ہے۔دریں اثنا سرینگر – جموں قومی شاہراہ پر ٹریفک کی نقل و حمل حسب معمول جاری ہے جبکہ تاریخی مغل روڈ پر بھی اتوار کی شام چار روز بعد ٹریفک بحال کیا گیا۔وادی کو لداخ یونین ٹریٹری کے ساتھ جوڑنے والی سری نگر – لیہہ شاہراہ بھی ٹریفک کے لئے کھلی ہے۔