مزید خبریں

چندرکوٹ میں بھگت سبھا کی میٹنگ | ایس سی کے لئے اسمبلی نشستیں مختص کرنے کی مانگ

زاہد بشیر
 رام بن // ضلع رام بن کے چندرکوٹ میں ایتوار کو بھگت مہا سبھا کی ایک میٹنگ کا انعقاد کیا گیا۔جسکی صدارت سابقہ ایم ایل سی شام لال بھگت نے کی۔اس موقع پر موجودہ سیاسی صورتحال پر تبادلہ خیال کیا گیا۔اور حد بندی کمیشن کی رپورٹ پر تشویش کا اظہار بھی کیا۔بھگت مہا سبھا کے سینئر لیڈر و سابقہ رکن قانون ساز اسمبلی نے حد بندی کمیشن میں انہیں نمائندگی نہ ملنے پر حکومت و انتظامیہ سے مطالبہ کیا کہ سال 1952کے بعد ایس سی سیٹوں میں اضافہ نہیں گیا گیا اور ہمیں امید تھی کہ جس طرز پر ایس ٹی کی نو پہلی سیٹیں مختص کی گئیںلیکن ایس سی طبقے کو کمیٹی پرپوزل میں سیٹیں نہ ملنے پر انہوں نے افسوس کا اظہار کرتے ہوئے کہا 15 فیصدی ریزرویشن کے حساب سے ایس ای کی 12 اسمبلی نشستیں بنتی ہیں لیکن ڈاکٹر بھیم راؤ امبیدکر کے زمانے میں دی گئیں7نشستوں پر کوئی نظر ثانی نہیں کی گئی جو قابل افسوس ہے ۔ انہوں نے ایس سی سیٹوں میں اضافہ کے ساتھ ساتھ مخصوص رکھنے کی بھی مانگ کی ہے ۔
 
 
 

۔8مویشی بازیاب، 1 گاڑی ضبط،سگلر گرفتار

عاصف بٹ
کشتواڑ//کشتواڑ پولیس کی پولیس تھانہ اٹھولی نے کشتواڑ کے لیی پاڈر علاقے سے 8 مویشنوںکو بچا کر انکی سمگلنگ کی کوشش کو ناکام بنا دیا۔مخصوص اطلاع پرپولیس ٹیم نے علاقہ لائی پاڈر میں ایک ناکہ لگایا جس دوران ایک گاڑی زیرنمبر JK17-7675 کی چیکنگ کی گئی۔مذکورہ گاڑی پر بغیر اجازت کے 8  جانور لدے ہوئے پائے گئے۔ پولیس نے گاڑی کو  قبضے میں لے کر 1سمگلر کو موقع سے گرفتار کر لیا۔
 
 
 
 

پولیس کے زیراہتمام دچھن میموریل کرکٹ ٹورنامنٹ اختتام پذیر

عاصف بٹ 
کشتواڑ//ضلع پولیس نے کشتواڑ کے علاقے دچھن میں پولیس شہداء کی یاد میں T20 کرکٹ ٹورنامنٹ کا انعقاد کیا جس میں مختلف مقامی ٹیموں نے حصہ لیا۔ایس ڈی پی او مڑواہ نثار خواجہ و ایس ایچ او دچھن انسپکٹر وکرم پریہار نے ولز لوپارہ و پنچایت لوپارہ کے درمیان کھیلے گئے پولیس شہداء T20 کرکٹ ٹورنامنٹ کے فائنل میچ کو دیکھا اور وہاں کھلاڑیوں میں انعامات تقسیم کئے۔ ٹیم پنچایت لوہارنانے اس ٹورنامنٹ کا خطاب جیتا۔ ایس ڈی پی او مڑواہ نے جیتنے والی ٹیم کو مبارکباد دی اور شرکاء کو مناسب نقد انعامات، تمغے اور میومنٹوز کے ساتھ سراہا ۔ انھوں نے شرکاء اور عوام سے اپیل کی کہ وہ قوم کے مقصد کے لیے کام کریں اور اتحاد اور بھائی چارے کو برقرار رکھیں۔
 
 
 
 

محکمہ پشوپالن نے ڈیری کسانوںکیلئے پونے دورے کا اہتمام کیا

جموں//ڈیری فارمرز کو دودھ اور ڈیری مصنوعات کی پروسیسنگ کم مارکیٹنگ میں شامل جدید ترین رجحانات اور مشینری سے واقف کرانے کے لیے محکمہ پشوپالن جموں نے پونے (مہاراشٹر) میں پانچ روزہ بین ریاستی ڈیری فارمرز ٹریننگ کم ایکسپوزردورے کا انعقاد کیا۔مذکورہ ٹور پروگرام کا انعقاد ڈائرکٹر اپشوپالن جموں ڈاکٹر ساگر ڈی ڈویفوڈ کی رہنمائی میں کیا گیا اور جموں ڈویژن کے مختلف اضلاع کی نمائندگی کرنے والے ڈیری فارمرز شرکت کریں گے۔دورے کے دوران ڈیری فارمرز کو ریاست مہاراشٹر میں ماہرین اور ان کے ہم منصبوں کے ساتھ بات چیت کرنے کا موقع ملے گا تاکہ ڈیری پروسیسنگ اور مارکیٹنگ میں ایجادات کے بارے میں تازہ ترین معلومات حاصل کی جاسکیں۔ ٹور پروگرام ڈیری فارمرز کو دودھ کی پیداوار کو بڑھانے کے لیے جدید ترین ہنر، علم اور تکنیک سے اچھی طرح لیس ہونے کا موقع فراہم کرے گا۔یوٹی کے اندر کوآپریٹیو کے کلچر کو مقبول بنانے کے لیے انتظامیہ کے مشن کے مطابق ٹور پروگرام میں پونے ضلع اور اس کے آس پاس کی کچھ مشہور کوآپریٹو تنظیموں کے دورے بھی شامل ہیں جس سے دورہ کرنے والے کسانوں کو کام کے بارے میں عملی تجربات حاصل کرنے کے قابل بنایا جا سکتا ہے ۔
 
 
 
 

 ڈوڈہ کے پنچایتی نمائندے تربیتی دورہ کیلئے روانہ

 ڈوڈہ//ضلع ترقیاتی کونسل کے چیئرمین دھنتر سنگھ نے ڈاک بنگلو سے 40 سرپنچوں اور پنچوں کے ایک گروپ کو جموں و کشمیر سے باہر کے 4 روزہ تربیتی اور نمائشی دورے کے لئے ہری جھنڈی دکھائی۔ڈی ڈی سی چیئرمین کے ہمراہ اسسٹنٹ کمشنر ڈیولپمنٹ محمد ادریس لون بھی تھے۔
پنچایتی نمائندے چار روزہ دورے کے دوران فیروز پور اور امرتسر کا دورہ کریں گے جس کا اہتمام جموں و کشمیر حکومت کے ایک خصوصی اقدام کے تحت کیا گیا ہے جس کا مقصدبین ریاستی نمائش کے دوروں کے ذریعے منتخب نمائندوں کے تربیتی اور نمائشی دوروں کا انعقاد کرنا ہے۔اس موقع پر خطاب کرتے ہوئے، چیئرمین نے دورہ کرنے والے پنچایتی نمائندوں سے اپیل کی کہ وہ جموں و کشمیر سے باہرپنچایتی نمائندوں کی طرف سے دیہی بنیادی ڈھانچے اور معیشت کی مجموعی ترقی کے لیے گھر پر لاگو کی گئی مثبت چیزوں کو سیکھیں۔چیئرمین نے پنچایتی نمائندوں سے کہا کہ وہ ایک پرامید ذہن کے ساتھ چلیں جو انہیں دوسری ریاستوں میں مختلف پنچایتوں کی طرف سے اپنائے جانے والے طریقوں کو سمجھنے میں مدد کرے گا اور پنچایتی اداروں کو گھر پر ترقی اور مضبوط کرنے کے لیے ان کی تقلید کرے گا۔اے سی ڈی نے کہا کہ نمائشی دوروں سے جموں و کشمیر صوبوں کے پی آر آئی ممبران کو دوسری ریاستوں سے سیکھنے میں مدد ملے گی اور انہیں بااختیار بنانے میں بھی مدد ملے گی۔ یہ جموں و کشمیر کی ترقی کی کہانی کے لیے ایک سنگ میل ثابت ہوگا کیونکہ کوئی بھی ریاست/ مرکز کے زیر انتظام علاقے گرامین وکاس کے بغیر ترقی نہیں کر سکتے۔ انہوں نے زور دے کر کہا کہ ہماری یوٹی خاص طور پر ہمارے ضلع میں پنچایتی راج اداروں کی صلاحیت سازی کے لیے نمائش کے دورے بہت اہم ہیں۔
 
 
 
 

زنانہ کالج ادھم پورکی جانب سے صفائی مہم کا اہتمام 

ادھم پور//نیشنل سروس سکیم (NSS) یونٹ گورنمنٹ زنانہ کالج ادھم پور نے ہفتہ بھر جاری رہنے والے سالانہ سرمائی خصوصی کیمپ کے چوتھے دن گاؤں میںاومیکرون کی مختلف قسم کے بارے میں کووڈمناسب برتاؤ اور واقفیت کے موضوع پر رتھیان ادھم پور صفائی مہم کا انعقاد کیا۔تقریباً 40 این ایس ایس رضاکاروں کے ساتھ سرپنچ پنچایت حلقہ رتھیان، دیوان چند اور این ایس ایس پروگرام آفیسر پروفیسر سنجے کمار نے صفائی مہم میں حصہ لیا اور بولی اور اس کے آس پاس کے علاقوں کی صفائی کی۔صفائی مہم کے دوران ایچ او ڈی فلاسفی (این ایس ایس پروگرام آفیسر) پروفیسر سنجے کمار نے رضاکاروں کو بتایا کہ گاؤں راتھیان کو کالج کی این ایس ایس یونٹ نے این ایس ایس کے کمیونٹی مصروفیت کے پروگرام کے ایک حصے کے طور پراپنالیا ہے جو نوجوانوں کی خدمات اور کھیل کی وزارت (جی او آئی) کی چھتری میں آتا ہے۔ انہوں نے یہ بھی کہا کہ اس مہم کے پیچھے بنیادی مقصد صفائی اور آبی ذخائر کی بحالی سے متعلق بیداری پھیلانا تھا جو کہ سوچھ بھارت پروگرام کے مقاصد میں سے ایک ہے۔
 
 

 وزیر اعظم کے خطاب کی ویب کاسٹنگ کی میزبانی

 محکمہ زراعت نے کسانوں کو سی ایس ایس کے بارے میں آگاہ کیا

ادھم پور// زراعت کی پیداوار اور کسانوں کی بہبود کے محکمے نے کلر ادھم پور کے سب ڈویژنل ایگریکلچر آفس کے کانفرنس ہال میں وزیر اعظم کے ذریعہ پی ایم کسان سمان ندھی یوجنا کے تحت 10ویں قسط کے فوائد کی منتقلی کی منظوری کی تقریب کو ویب کاسٹ کیا۔اس موقع پرکسانوں سے کہا گیا کہ وہ اپنے پی ایم کسان اکاؤنٹس کی ای کے وائی سی جلد از جلد کروا لیں تاکہ مستقبل میں اس اسکیم کے تحت فوائد حاصل کیے جاسکیں۔ اس کے علاوہ، موجود کسانوں کو کاشتکار برادری کی ترقی اور ترقی کے لیے لاگو کی گئی مختلف سی ایس ایس سکیموں اور سال 2022 تک کسانوں کی آمدنی کو دوگنا کرنے کے وزیر اعظم کے ویڑن کو حاصل کرنے کے لیے آگاہ کیا گیا۔کسانوں کو پہلے ہی مختلف مرکزی سپانسر شدہاسکیموں جیسے SMAM سے فائدہ پہنچایا جا رہا ہے ۔کسانوں کو ان کی سماجی مالی حیثیت کو بلند کرنے کے لیے جامع کاشتکاری کو اپنانے کے فوائد اور نامیاتی کاشتکاری کے فوائد سے آگاہ کیا گیا۔ انہیں کھمبی کی کاشت اور شہد کی مکھیوں کے پالنے کے بارے میں آگاہ کیا گیا۔
 
 
 

موسم سرما میں بجلی کی بلا خلل فراہمی یقینی بنائیں: سجاد شاہین

اکھرال میں ممتاز نوجوان کارکن نیشنل کا نفرنس میں شامل

بانہال//نیشنل کانفرنس لیڈر اور ضلع صدر رام بن سجاد شاہین نے اکھرال میں کارکنوں کا ایک اجلاس منعقد کیا جس میں پارٹی کے پوگل پارستان بلاک کے سرکردہ عہدیداروں اور عہدیداروں نے شرکت کی۔دن بھر کی میٹنگ میں خطاب کرتے ہوئے مقررین نے اپنے اپنے علاقوں میں رہنے والے لوگوں کو درپیش مختلف مسائل پر روشنی ڈالی ۔سجاد شاہین نے اجلاس سے خطاب کرتے ہوئے کہا کہ حلقہ بھر کے عوام کو بجلی کی شدید قلت کا سامنا ہے اور پینے کا صاف پانی میسر نہیں۔ ضلعی صدر نے ناکارہ یوٹیلیٹی سروسز اور سڑکوں کی خستہ حالی پر بھی تشویش کا اظہار کیا ۔ان کا مزید کہنا تھا کہ بجلی اور پینے کے پانی کی سپلائی بدستور خراب ہے جبکہ سی اے پی ڈی ڈیپوز میں غذائی اجناس کی قلت بدستور پریشان کن ہے۔انہوں نے مزید کہا کہ انتظامیہ زمینی سطح پر ناپید نظر آتی ہے جس کی وجہ سے عوام پریشان ہیں ۔پورے رام بن ضلع خاص طور پر بانہال اور اس سے دور علاقوں میں جاری سخت سردی کے دوران غیر اعلانیہ بجلی کٹوتیوں کا حوالہ دیتے ہوئے شاہین نے کہا کہ لوگوں کو طویل گھنٹوں تک غیر اعلانیہ بجلی کٹوتیوں کا سامنا کرنا پڑ رہا ہے جس سے لوگوں کی مشکلات میں اضافہ ہوا ہے۔شاہین نے اس معاملے پر اعلیٰ حکام سے فوری توجہ دینے اور بجلی کی بندش ختم کرنے کا مطالبہ کیا ہے۔ انہوں نے جموں و کشمیر کی انتظامیہ پر بھی زور دیا ہے کہ وہ سردیوں کے دوران ضروری اشیاء خاص طور پر راشن، چینی اور مٹی کے تیل، ایل پی جی سلنڈر کے علاوہ بلا خلل بجلی اور پینے کے پانی کی مناسب فراہمی کو یقینی بنائے۔اس موقع پر مختلف پارٹیوں سے تعلق رکھنے والے کئی سیاسی کارکنوں بالخصوص نوجوانوں کے علاوہ ممتاز شہریوں نے نیشنل کانفرنس میں شمولیت اختیار کی اور اس کی پالیسیوں اور پروگراموں پر اپنا اعتماد ظاہر کیا۔
 
 
 

 ہالی میدان رام بن میں مصوری مقابلہ منعقد

رام بن// فوج نے ضلع رام بن کے ہالی میدان میں "پینٹنگ مقابلہ" منعقد کرنے کی پہل کی۔ تقریب میں کل 16 طلباء نے بڑھ چڑھ کر حصہ لیا۔ اس مقابلے کا مقصد طلباء کو اپنے آزاد خیالات کا اظہار کرنے کے قابل بنانا اور نوجوان آزاد ذہنوں کی غیر استعمال شدہ صلاحیت کو بڑھانا ہے۔ یہ پینٹنگز تخلیقی صلاحیتوں کے حوالے سے ایک بچے کے ذہن میں تخیل کے لامحدود کینواس کی عکاسی کرتی ہیں۔ بچوں کے جوش و خروش نے دلکشی میں اضافہ کر دیا۔مقامی لوگوں اور طلباء نے اس طرح کے اختراعی مقابلوں کی اہمیت کو محسوس کیا اور نوجوان ٹیلنٹ کو اجاگر کرتے ہوئے فوج کی کوششوں کی تعریف کی۔
 
 
 

ٹھکرائی میں والی بال ٹورنامنٹ منعقد

کشتواڑ،//یوتھ سروسز اینڈسپورٹس ڈیپارٹمنٹ کشتواڑ نے  بلاک ٹھکرائی میں والی بال ٹورنامنٹ کا انعقاد کیا۔سمن کانت انچارج بلاک ٹھکرائی نے اپنی افتتاحی تقریر میں کہا کہ کشتواڑ میں تقریبات تمام بلاکوں میں ضلع انتظامیہ کے تعاون سے اور ڈپٹی کمشنر اشوک کمار شرما کی نگرانی میں منعقد کی جا رہی ہیں۔ہائر سکینڈری سکول فلر ، جو کہ بین پنچایت بلاک سطح کے ٹورنامنٹ کے لیے مقرر کیا گیا ہے، میںسمن کانت نے شرکاء سے خطاب کرتے ہوئے کہا کہ نوجوانوں میں صحیح علم پیدا کرنے اور انہیں نظم و ضبط، بھائی چارہ، سمجھداری اور کچھ اچھا کرنے کی شدید خواہش سکھانے کی ضرورت پر زور دیا۔ مہمان خصوصی راجیش روشن سرپنچ دھربدھن اور مہمان خصوصی سنجیت شان نے کھلاڑیوں سے بات چیت کی اور انہیں نظم و ضبط کے ساتھ کھیل کھیلنے کا مشورہ دیا۔
  
 
 

جموں کے تین ادیبوں کو انجمن کا خراجِ تحسین

جموں//انجمن فروغِ اْردو جموں و کشمیر جموں نے اپنی ہفتہ وار ادبی نشست،جس کی صدارت انجمن کی صدر فوزیہ مغل ضیا نے کی،میں سر زمینِ  جموں کے اْن تین ادیبوں کو مبارک باد دی جنہیں ساہیتہ اکیڈیمی نے اْن کی ادبی خدمات کے پیشِ نظر اْن کی کتابوں پر2021میں انعامات سے نوازا۔جموں کے وہ سپوت ہیں خالد حسین ، اسیر کشتواڑی اورراج راہی۔خالد حسین انڈو پاک کے ایک مْنفرد اور مشہور پنجابی ادیب ہیں اور اْردو میں بھی اپنی افسانوی صلاحیتیوں کا لوہا منوا چکے ہیں اور  اس وقت تک تقریباً ایک درجن سے زائید کتابیں منطرِ عام پر آچکی ہیں۔
  
 

انیل دھرکا ویشنودیوی سانحہ پر دکھ کا اظہار

 جمو//سینئر کشمیری پنڈت رہنما انیل دھر نے شری ماتا ویشنو دیوی کے مندر پر بھگدڑ کے المناک واقعہ پر گہرے رنج و غم کا اظہار کیا جس کے نتیجے میں 12 متاثرین کی المناک موت اور 13 دیگر زخمی ہوئے۔ دھر نے کہا، "یہ ایک دل دہلا دینے والا واقعہ ہے، جس کے بارے میں شری ماتا ویشنو دیوی جی کے بھون میں کبھی نہیں سنا گیا اور ہمارے دل ان خاندانوں کے ساتھ جاتے ہیں جنہوں نے اس سانحے میں اپنے عزیزوں کو کھو دیا۔"انہوں نے سوگوار خاندانوں کے ساتھ ہمدردی کا اظہار کرتے ہوئے جاں بحق ہونے والوں کے لیے صبر جمیل کی دعا کی اور زخمیوں کی جلد صحت یابی کی دعا کی۔دھر نے امید ظاہر کی کہ شری ماتا ویشنو دیوی جی شرائن بورڈ مستقبل میں ایسے دردناک واقعات کی تکرار کو روکنے کے لیے تمام ضروری اقدامات کرے گا۔
 
 
 

 چوہدری بشیر کامران کاپونچھ میں والہانہ استقبال

پونچھ //اپنی پارٹی ایس ٹی ونگ ضلع صدر پونچھ تعینات کئے جانے کے بعد چودھری بشیر کامران کا ورکروں نے والہانہ استقبال کیا۔ اُن کے استقبال میں حاجی یار محمد گیگی کی قیادت میں شاندار تقریب منعقد ہوئی جس سے خاکی، بلال مخدومی، شاہ محمد چاند، چودھری منیر، چودھری محمد اعظم، بشیر نائیک، سیف الدین زرگر، سرپنچ اجبر تانترے، مشتاق تانترے، حاجی اکبر دیا، منظور سیٹھ، قیوم، غلام رسول، ڈاکٹر بشیر ملک، چودھری سفیر وغیرہ نے خطاب کیا۔ اپنے خطاب میں چودھری کامران نے اُنہیں ایس ٹی ونگ ضلع صدر پونچھ کی ذمہ داری دینے پرپارٹی صدر سید محمد الطاف بخاری، صوبائی صدر منجیت سنگھ کا شکریہ اداکیا ۔انہوں نے پارٹی کیڈر کی مضبوطی کے لئے کام کرنے کا یقین دلایا۔ اس موقع پر سابقہ ایم ایل اے اور ضلع صدر شاہ محمد تانترے نے کہاکہ اپنی پارٹی لوگوں کی فلاح وبہبودی کے لئے کام کر رہی ہے جس وجہ سے کثیر تعدادمیں لوگ اِس جماعت میں شامل ہورہے ہیں۔ انہوں نے کہاکہ الطاف بخاری ایک مقبول سیاسی رہنما کے طور ابھر کر سامنے آئے ہیں جنہوں نے لوگوں کے روز مرہ مسائل کو اُجاگر کرنے پر توجہ دی، دونوں خطوں کے لوگوں کی خواہشات کی ترجمانی کر رہے ہیں۔ انہوں نے مزید کہاکہ اپنی پارٹی بلاامتیاز سبھی خطوں کی یکساں ترقی کی وعدہ بند ہے۔