مزید خبریں

نیوز ڈیسک
رنجن پرکاش کاچارج فائنانشل کمشنرصحت وطبی تعلیم کو تفویض

بلال فرقانی

سرینگر// سرکار نے محکمہ صنعت و حرفت کے پرنسپل سیکریٹری کے مرکز میں آئل اینڈ نیچرل گیس کارپوریشن میں چیف ویجی لنس آفسر کے طور پر تعیناتی کے بعد انہیں فارغ کرکے صحت و طبی تعلیم کے فائنانشل سیکریٹری کو اضافی چارج تفویض کیاہے۔انتظامیہ نے سال2020بیچ کے جونیئر سکیل کشمیر انتظامی سروس افسراں کو انسٹی چیوٹ آف منیجمنٹ،پبلک ایڈمنسٹریشن و رورل ڈیولپمنٹ میں باقی تربیت حاصل کرنے کیلئے رپورٹ کرنے کی ہدایت دی ہے۔ سرکاری حکم نامہ کے مطابق محکمہ صنعت و حرفت کے پرنسپل سیکریٹری رنجن پرکاش ٹھاکر کے مرکز میں آئل اینڈ نیچرل گیس کارپوریشن میں چیف ویجی لنس آفسر کے طور پر تعیناتی کے تناظر میں انہیں  اپنی موجودہ جگہ سے فوری طور پر فارغ کیا گیا تاکہ وہ نئی دہلی میں نئے عہدے کو سنبھال سکیں۔ آرڈر کے مطابق اس تناظر میں فاینانشل کمشنر(ایڈیشنل چیف سیکریٹری) محکمہ صحت و طبی تعلیم وویک بھردواج کو تا حکم ثانی اپنی ذمہ داریوں کے علاو ہ محکمہ صنعت و حرفت کے انتظامی سیکریٹری کا اضافی چارج بھی سونپا گیا۔عمومی انتظامی محکمہ کے پرنسپل سیکریٹری منوج کمار دیویدی کی جانب سے جاری آرڈر میں کہا گیا ہے کہ سال2020بیچ کے جونیئر سکیل جموں کشمیر انتظامی سروس افسراں جو فی الوقت محکمہ دیہی ترقی و پنچایتی راج میں تعینات ہے کو واپس طلب کیا گیا ہے،جبکہ انہیں ہدایت دی گئی ہے کہ وہ2مئی کو انسٹی چیوٹ آف منیجمنٹ،پبلک ایڈمنسٹریشن و رورل ڈیولپمنٹ میں باقی تربیت حاصل کرنے کیلئے رپورٹ کریں۔

 

 

 

ملک میںمزید 50 کی موت | کورونا کے 3688نئے کیسز

یو این آئی

نئی دہلی// ملک میں کورونا وائرس سے نئے معاملات کے مقابلے میں اس سے نجات پانے والوں کی تعداد کم رہنے کی وجہ سے گزشتہ 24 گھنٹے میں 883 فعال کیسز بڑھ کر 18684 ہو گئے۔گزشتہ 24 گھنٹے کے دوران ملک میں انفیکشن کے 3688 نئے معاملے سامنے آئے، جبکہ 2755 مریضوں نے وبا کو شکست دی۔ اب تک کل چار کروڑ 25 لاکھ 33 ہزار 337 مریض کووڈ سے صحت یاب ہو چکے ہیں۔ اس دوران ملک میں کووڈسے 50 مریضوں کی موت ہوئی، جس کے بعد اس مہلک وائرس کی وجہ سے جان گنوانے والوں کی تعداد بڑھ کر 523803 ہو گئی۔

 

 

 

 

17اضلاع میں کوئی مثبت نہیں | 3اضلاع میں 11متاثرین

پرویز احمد

سرینگر // جموں و کشمیر کے 17اضلاع میں کسی کی رپورٹ مثبت نہیں آئی ہے جبکہ دیگر 3اضلاع میں 11افراد کو مثبت قرار دیا گیا ہے۔ متاثرین کی مجموعی تعداد 4لاکھ 54ہزار 43ہوگئی ہے۔ اس دوران جموں و کشمیر میں مسلسل 15ویں دن بھی کورونا وائرس سے کسی کی موت نہیں ہوئی ہے۔ متوفین کی مجموعی تعداد 4751بنی ہوئی ہے۔ محکمہ صحت کی جانب سے فراہم کئے گئے اعداد و شمار کے مطابق جموں و کشمیر میں کورونا وائرس کی تشخیص کیلئے 16ہزار 94ٹیسٹ کئے گئے جن میں 11افراد کی رپورٹیں مثبت آئی ہیں۔ مثبت قرار دئے گئے 11افراد میں جموں صوبے میں7جبکہ کشمیر صوبے سے 4افراد تعلق رکھتے ہیں۔ کشمیر صوبے کے 8اضلاع جن میں بڈگام، پلوامہ، اننت ناگ، کپوارہ، بانڈی پورہ، گاندربل، کولگام اور شوپیان میں کسی کی رپورٹ مثبت نہیں آئی ہے جبکہ دیگر 2اضلاع میں4افراد کو مثبت قرار دیا گیا ہے۔ کشمیر میں مثبت قرار دئے گئے سبھی افراد مقامی سطح پر رابطے میں آنے کی وجہ سے متاثر ہوئے ہیں۔ وادی میں متاثر ہونے والے 4افراد میں سرینگر میں2اور بڈگام سے 2افراد تعلق رکھتے ہیں۔ کشمیر صوبے میں متاثرین کی مجموعی تعداد 2لاکھ 87ہزار 704ہوگئی ہے۔ اس دوران وادی میں مسلسل 56ویں دن بھی کورونا وائرس سے کسی کی موت نہیں ہوئی ہے۔ متوفین کی مجموعی تعداد 2423بنی ہوئی ہے۔ جموں صوبے کے 9اضلاع میں جن میں ادھمپور، راجوری، ڈوڈہ ، پونچھ کٹھوعہ، کشتواڑ، ریاسی، سانبہ اور رام بن میں کسی کی رپورٹ مثبت نہیں آئی ہے جبکہ جموں ضلع میں 7افراد کو مثبت قرار دیا گیا ہے جو سبھی مقامی سطح پر رابطے میں آنے کی وجہ سے متاثر ہوئے ہیں۔ کشمیر میں متاثرین کی مجموعی تعداد 1لاکھ 66ہزار 339ہوگئی ہے۔ اس دوران جموں صوبے میں مسلسل 15ویں دن بھی کورونا وائرس سے کسی کی موت نہیں ہوئی ہے۔ متوفین کی مجموعی تعداد 2328بنی ہوئی ہے۔ 

 

 

 

 

258پولیس اہلکاروں کے حق میں2.58کروڑ روپے کاسبکدوشی تحفہ منظور

جموں//پولیس سربراہ دلباغ سنگھ نے یہاں آج سبکدوش ہونے والے258 پولیس افسروں واہلکاروں کے حق میں 2کروڑ58لاکھ روپے کاسبکدوشی تحفہ منظور کیا۔ایک حکم کے مطابق 11گزیٹیڈافسروں ، 209 نان گزیٹیڈ اہلکاروں اور31نچلے درجے کے اہلکاروں کے حق میں فی کس ایک لاکھ روپے منظور کئے۔یہ اہلکاروافسرپولیس کے مختلف شعبوں سے وابستہ تھے  اوریہ رقم انہیں پولیس کنٹری بیوٹری ویلفیئرفنڈ سے محکمہ میں ان کی قابل سراہناخدمات کے اعتراف میں دی گئی۔

 

 

 

مئی میں بھی گرمی کے تیور سخت ہوں گے:محکمہ موسمیات

اشفاق سعید 

سرینگر// اپریل میںجموں وکشمیر سمیت ملک کی کچھ اور ریاستیں شدید گرمی کی لپیٹ میں ہیں اور درجہ حرارت میں بھی کئی ڈگری کا اضافہ دیکھا گیا ہے ۔محکمہ موسمیات کے مطابق موسم کے سازگار ہونے کے بعد جموں وکشمیر میں اپریل کے مہینے میں گذشتہ برسوں کے مقابلے میں درجہ حرارت میں 2سے3ڈگری کا اضافہ دیکھنے کو ملا ہے اور جب یہاں بارشیں ہوتی ہیں تو درجہ حررات میں گراوٹ آتی ہے۔19اپریل کو سرینگر میں دن کا زیادہ سے زیادہ درجہ حرارت 28.4ڈگری ریکارڈ کیا گیا جبکہ اپریل کے مہینے میں زیادہ تر درجہ حرارت 27ڈگری کے آس پاس ہی رہا ،جبکہ بارشوں کے دنوں میں اس میں 5ڈگری کی کمی دیکھنے کو ملی ۔معلوم رہے کہ وادی میں امسال سرما کے دوران کم برف باری ہونے اور بعد ازاں بارشیں نہ ہونے اور درجہ حرارت معمول سے زیادہ درج ہونے سے خشک سالی کی صورتحال پیدا ہوگئی ہے۔متعلقہ حکام نے شمالی کشمیر کے متعدد دیہات کو امسال دھان کی فصل کاشت کرنے سے اجتناب کرنے کی صلاح دی ہے۔ماہرین موسمیات کے مطابق جموں وکشمیر میں امسال ماہ مارچ میں بارش کی 80 فیصد کمی درج ہوئی ہے۔ سرینگر میں ماہ مارچ میں مجموعی طور پر 21.3 بارش ریکارڈ کی گئی جو معمول کے مطابق 117.6 ملی میٹر ریکارڈ ہونی چاہئے تھی۔اسی طرح جموں میں ماہ مارچ میں مجموعی طور پر ملی میٹر بارش ریکارڈ ہوئی جو معمول کے مطابق 68 ملی میٹر درج ہونی چاہئے تھی۔ادھر شمال مغربی اور وسطی ہندوستان میں 122سال بعد شدید گرمی کی لہر دیکھی گئی ہے جس میں اوسط زیادہ سے زیادہ درجہ حرارت بالترتیب 35.9 اور 37.78 ڈگری سیلسیس تک پہنچ گیا۔ایک پریس کانفرنس سے خطاب کرتے ہوئے ہندوستان کے محکمہ موسمیات کے ڈائریکٹر جنرل مرتیونجے موہاپاترا نے کہا کہ ملک کے شمال مغربی اور مغربی وسطی حصے گجرات، راجستھان، پنجاب ،ہریانہ میں مئی میں بھی معمول سے زیادہ درجہ حرارت کا تجربہ کرتے رہیں گے۔موہا پاترا نے کہا کہ ملک کے بیشتر حصوں میں مئی میں راتیں زیادہ گرم ہوں گی، سوائے جنوبی جزیرہ نما ہندوستان کے کچھ علاقوں کے۔انہوں نے کہا کہ اپریل میں پورے ہندوستان میں اوسط درجہ حرارت 35.05 ڈگری تھا، جو 122 سالوں میں چوتھا سب سے زیادہ گرم تھا۔ انہوں نے کہا کہ مئی 2022 میں ملک بھر میں اوسط بارش کے معمول سے زیادہ ہونے کا امکان ہے ،تاہم، شمال مغربی اور شمال مشرقی ہندوستان کے ساتھ ساتھ جنوب مشرقی جزیرہ نما میں مئی میں معمول سے کم بارش ہونے کی توقع ہے۔انہوں نے کہا کہ مارچ اور اپریل میں زیادہ درجہ حرارت کی وجہ بارشیں بہت کم ہوئی ہیں ۔مارچ میںشمال مغربی ہندوستان میں تقریباً 89 فیصد بارش کی کمی ریکارڈ کی گئی، جب کہ اپریل میں یہ خسارہ تقریباً 83 فیصد رہا ۔

 

 

 

سستے زرعی آلات خریدنے کیلئے قرضوں کی فراہمی 

جے کے بینک اورمہندرااینڈ مہندرا کے درمیان مفاہمت نامے پردستخط

سرینگر//جموں و کشمیر اور لداخ پر خصوصی توجہ کے ساتھ ملک بھر میں اس کے پسندیدہ فنانسر کے طور پرجے اینڈ کے بینک نے ہندوستان کی سرکردہ ٹریکٹر بنانے والی کمپنی مہندرا اینڈ مہندرا کے فارم ایکوپمنٹ سیکٹر ( ایف ای ایس ) کے ساتھ ایک مفاہمت کی یاداشت پر دستخط کئے ہیں ۔معاہدے کے مطابق جے اینڈ کے بینک ممکنہ صارفین کو مہندرا برانڈز ٹریکٹرز اور فارم مشینری پر اپنے کاروباری یونٹوں میں خاص طور پر جموں ، کشمیر اور لداخ میں سستی اور پریشانی سے پاک فنانسنگ سہولیات فراہم کرے گا ۔ نائب صدر امتیاز احمد بٹ نے جے اینڈ کے بینک کی جانب سے معاہدے پر دستخط کئے جبکہ بطور نیشنل سیلز ہیڈ سنیل جانسن نے ایم اینڈ ایم ایف ای ایس کی نمائندگی کرتے ہوئے اپنے دستخط کئے ۔ دستخط کی تقریب گذشتہ ہفتے بینک کے صدر سید رئیس مقبول ، اے وی پی سہیل احمد لون ، ایم اینڈ ایم ایف ای ایس کے ہیڈ ڈیلر ورکنگ کیپیٹل منیجمنٹ تنمائی سکسینہ ، زونل ریٹیل فنانس منیجر راجن اروڑہ اور بینک کے دیگر عہدیداروں کی موجودگی میں منعقد ہوئی ۔ تعاون پر تبصرہ کرتے ہوئے صدر رئیس مقبول نے کہا ’’ اپنی گاہک پر مبنی حکمت عملی کے مطابق ہم نے ملک کے معروف ٹریکٹر اور فارم آلات بنانے والی کمپنی کے ساتھ یہ معاہدہ کیا ہے تا کہ زرعی شعبے سے وابستہ لوگوں کیلئے کاشتکاری  زرعی آلات کے شعبے میں قرضے کو بڑھایا جا سکے ۔ معاہدہ ہمارے صارفین کو بینک کی مسابقتی شرح سود کے ساتھ ایم اینڈ ایم سے مناسب رعایت کا حقدار بنائے گا ۔ ‘‘ انہوں نے مزید کہا ’’ میں امید کرتا ہوں کہ یہ معاہدہ بینک اور ایم اینڈ ایم دونوں کو ایک دوسرے کے برانڈ اور آؤٹ لیٹس کے نیٹ ورک کی موروثی طاقتوں کو ہندوستان بھر میں جے اینڈ کے اور لداخ پر فوکس کرنے کے قابل بنائے گا جہاں ہمارے 851 کاروباری یونٹ ہیں ‘‘ ۔ معاہدے کے بارے میں اپنے تبصرے میں ایم اینڈ ایم کے صدر فارم آلات کے شعبے ہیمنت سگا نے کہا ’’ کسانوں کیلئے ان کی زمینوں پر میکانائیزیشن کا استعمال کرنے کیلئے ایک بڑے بلاک کے طور پر قرض تک رسائی کے ساتھ ہم نے جے اینڈ کے بینک کے ساتھ معاہدہ کیا تا کہ مدد کی جا سکے ۔ کسان خطے میں مہندرا فارم کے جدید آلات خریدتے ہیں ۔ جے اینڈ کے بینک کے وسیع نیٹ ورک کے ذریعے ہم جدید اور پرکشش مالیاتی حل کے ذریعے سستی کریڈٹ تک بہتر رسائی کی پیش کش کرنے کی بھی امید کرتے ہیں جو کسانوں کو ان کی پیداوار کو بڑھانے کیلئے جدید ترین فارمی آلات حاصل کرنے میں مدد فراہم کرے گا ۔

 

 

 

عید کی آمد آمد اورجے کے بینک کے ATMاورM Payناکارہ

لوگوں کومشکلات کاسامنا ،متعدد لوگ خریداری ہی نہ کرسکے

ارشاداحمد

سرینگر//عید کی آمد کے موقعہ پروادی میں لوگوں نے شکایت کی ہے کہ جموں کشمیربینک کے ATMکے علاوہ ایم پے صبح سے ہی ناکارہ ہونے سے لوگوں کو خریداری کرنے میں مشکلات کاسامنا کرناپڑا۔لوگوں نے الزام لگایا کہ یہ ایک نیا معمول بن گیا ہے کہ عیدالفطر جیسے موقعوں سے قبل ایم پے جیسی ایپلی کیشنز اکثر ناکارہ ہو جاتی ہیں جس سے لوگوں کو شدید دقتوں کا سامنا کرنا پڑتا ہیں۔سرینگر کے علاقہ نٹی پورہ، چھانہ پورہ ،ٹینگہ پورہ ،حیدر پورہ، سمیت دیگر علاقوں میں ہفتہ کی صبح سے ہی علاقوں میں قائم اے ٹی ایم مکمل طور پر ناکارہ ہوگئے تھے جس وجہ سے اپنی ہی رقومات نکالنے میں لوگوں کو مسائل کا سامنا کرنا پڑا، جبکہ جن علاقوں میں اے ٹی ایم مشین چل رہی تھی وہاں پر لوگوں کی قطاریں لگ چکی تھیں۔بڈشاہ.نگر سے تعلق رکھنے والے  محمد اشرف نے اے ٹی ایم کے کام نہ کرنے پر افسوس کا اظہار کرتے ہوئے کہا کہ وہ ملحقہ علاقوں میں گئے تھے لیکن انہیں ناکارہ اے ٹی ایمز نظر آئے جسے انہوں نے جموں کشمیر بنک انتظامیہ کی ناکامی قرار دیا۔.ادھر گاندربل کی مقامی آبادی بھی ہفتہ کے روز ایم پے موبائل فون ایپلیکیشن کے ناکارہ ہونے سے عید کی خریداری کرنے سے قاصر رہے۔ گاندربل کے مقامی شہری اعجاز احمد ملک ساکنہ دودرہامہ نے اس ضمن میں بتایا کہ میں اپنے اہل خانہ سمیت عیدالفطر کی خریداری کرنے کے لئے سرینگر گیا ہوا تھا ۔جیب میں پانچ سات سو روپے تھے جن کا میں نے گاڑی میں پٹرول ڈالا اور  بچوں کے لئے کپڑے اور جوتے اور بیکری وغیرہ کی خریداری کرنے  سرینگر پہنچ گیا،لیکن یقین کیجئے کہ میں نے پانچ سو روپے کا پٹرول پھونکا لیکن ایک بچے کا جوتا بھی نہیں لاسکا،کیونکہ نہ ہی اے ٹی ایم کام کر رہے تھے اور نہ ہی ایم پے اپلیکیشن سے ہی میں کسی کو رقومات دے سکا جس وجہ سے غصہ بھی آیا اور افسوس سے ہاتھ ملتے ہوئے نامراد لوٹنا پڑا کیونکہ آج کل جیب میں رقوم نہیں ہوتی سب کچھ موبائل فون سے ہی کرنے کی عادت بن گئی تھی۔انہوں نے کہا کہ ان کے بچے بھی ناخوش اور دیگر اہل خانہ بھی مایوس ہوگئے۔ 

 

 

 

حد متارکہ کے نزدیکی جنگلات آگ کی لپیٹ میں 

مقامی لوگ محکمہ جنگلات کی لاپرواہی سے ناراض 

پرویز خان 

منجا کوٹ //منجا کوٹ تحصیل کے سرحدی جنگلا ت میں گزشتہ شام لگی آگ کی وجہ سے ایک وسیع جنگلات کے تباہ ہو نے کا خدشہ پیدا ہو گیا ہے جبکہ مقامی لوگوں نے محکمہ جنگلات کے فیلڈ ملازمین و آفیسران پر لاپرواہی برتنے کا الزام عائد کرتے ہوئے کہا کہ آگ نمو دار ہونے کیساتھ ہی محکمہ سے رابطہ کر دیا گیا تھا تاکہ اس پر جلدازجلد قابو پا لیا جائے لیکن محکمہ کے ملازمین و آفیسران نے مبینہ لاپرواہی کی وجہ سے حد متارکہ کی نزدیکی پنچایت راجدھانی اپر کے کھوڑی ناڑ اور چور گلی علاقوں میں وسیع جنگلا ت کیساتھ ساتھ فوجی پوسٹیں اور رہائشی مکانات کے آگ کی زد میں آنے کا خدشہ پیدا ہو گیا ہے ۔مقامی ذرائع نے بتایا کہ آگ کی وجہ سے آخری اطلاع موصول ہونے تک کئی سبز درختوں کو نقصان پہنچ چکا تھا تاہم دوسری جانب محکمہ کے ایک آفیسر نے بتایا کہ آگ پر قابو پانے کیلئے ٹیم روانہ کردی گئی ہے لیکن مقامی لوگوں نے محکمہ پر لاپرواہ رہنے کا الزام عائد کرتے ہوئے کہاکہ ملازمین اپنی ڈیوٹی کو لے کر سنجیدہ ہی نہیں ہیں جس کی وجہ سے مذکورہ نوعیت کے معاملات پر قابو پانے کیلئے ہمیشہ تاخیر سے قدم اٹھائے جاتے ہیں ۔

 

 

 

محکمہ جنگلات میں13رینج افسراں کے تبادلے

بلال فرقانی

سرینگر// حکام نے محکمہ جنگلات میں13رینج و انچارج رینج افسراں کے تبادلے اور تقرریاں عمل میںلائیں جبکہ کچھ افسراں کو اضافی چارج بھی تفویض کیا گیا۔ سرکاری حکم نامہ میں کہا گیا کہ اعلیٰ عہدوں پر تعینات افسراں کی تعیناتی کا انتظام عارضی بنیادوں پر کیا گیا ہے اور ان افسراں کو اس تناظر میں ترقیوں کے دعوئے کرنے کا کوئی بھی حق نہیں ہوگا بلکہ وہ محکمانہ ترقیاتی کمیٹیوں کی سفارشات پر ضوابط کے تحت ہوںگی۔ پرنسپل چیف کنزرویٹر ڈاکٹر موہت گرا کی جانب سے ہفتے کو جاری آرڈر میں کہا گیا کہ انچارج رینج افسر پورہ منڈل رینج سامبا فارسٹ ڈویژن محمد سلیم ملک کو تبدیل کرکے انچارج رینج افسر مینڈھر رینج پونچھ، انچارج رینج افسر مینڈھر رینج عارف محمود مرزا کو تبدیل کرکے انچارج رینج افسر کالاکوٹ رینج پونچھ، انچارج رینج افسر کالکوٹ رینج پونچھ وید کمار کو تبدیل کرکے انچارج رینج افسر سوائل رینج ہیرہ نگر کھٹوعہ، انچارج رینج افسر سوائل رینج ہیرا نگر کھٹوعہ راج کمار کو تبدیل کرکے انکی خدمات کو’سی ڈبلیو ایل ڈبلیو‘‘ کے ماتحت رکھا گیا۔ حکم نامہ کے مطابق انچارج رینج افسر کھٹوعہ رینج منیش گپتا کو تبدیل کرکے انچارج رینج افسر پورہ منڈل فارسٹ رینج سامبا، انچارج رینج افسر ڈیمارکیشن رینج بھدرواہ شاپو اقبال کو تبدیل کرکے انچارج رینج افسر چاریلہ رینج بھدرواہ تبدیل کرکے افتخار احمد کو اضافی چارج سے فارغ کیا گیا جبکہ چیف کنزرویٹر فارسٹ جموں میں منسلک نریندر کمار کو انچارج رینج افسر کھٹوعہ رینج کے طور پر تعینات کیا گیا۔ سرکاری حکم نامہ کے مطابق انچارج رینج افسر سوائل رینج بانہال،رام بن تنویر احمد خان کو تبدیل کرکے انچارج رینج افسر اگرو سٹالوجی رینج رام بن،بانہال اور رینج افسر سوائل رینج  بھدرواہ فارسٹ ڈویژن گرداری لال کی خدمات کو ڈائریکٹر سوشیل فارسٹری جموں کشمیر کے ماتحت رکھا گیا۔ ڈی ایف او، اربن فارسٹری ڈویژن میں مسنلک سنیل شرما کو تبدیل کرکے انچارج رینج افسر گلاب گڑھ رینج،مہور فارسٹ ڈویژن، رینج افسر ریاسی رنیج سنجے کمار ورما کو تبدیل کرکے انچارج رینج افسر ریسورس سروے ڈویژن جموں اور انچارج رینج افسر سوائل رینج ریاسی نصیر احمد ملک کو ریاسی رینج،ریاسی فارسٹ ڈویژن کا اضافی چارج تفویض کیا گیا۔

 

 

 

سرینگر اورشارجہ کے درمیان ہفتے میں5پروازیں خوش آئند:شیخ عاشق

سرینگر//بلال فرقانی//کشمیر چیمبر آف کامرس اینڈ انڈسٹرئز کے صدر شیخ عاشق نے سرینگر اور شارجہ کے درمیان ہفتے میں5پروازیں شروع کرنے کو خوش آئندہ قرار دیتے ہوئے کہ کہا کہ انہیں امید ہے کہ جدہ کیلئے بھی جلد ی براہ راست پروازیں شروع کی جائے گی۔ شیخ عاش حسین نے ہفتے کو نامہ نگاروں سے بات کرتے ہوئے مرکز کے اس فیصلے کو اطمنان بخش قرار دیا جس میں سرینگر سے براہ راست شارجہ تک پروازیں شروع کی جا رہی ہے۔شیخ عاش حسین نے کہا کہ اس عمل سے جموں کشمیر میں سیاحت کے مزید دروزے کھل جائے گے،جبکہ کشمیری دست کاری کو بھی فروغ حاصل ہوگا۔ چیمبر کے صدر کا کہنا تھا کہ حساس  اور نازک میوے6گھنٹوں میں عالمی بازاروں میں پنچ جائے گی،جس سے وادی کے باغبانی شعبے کو فروغ حاصل ہوگا۔ انہوں نے امید ظاہر کی ک مرکزی شری وا بازی کی وزارت جلد ہی جدہ تک بھی اس طرح براہ راست پروازوں کو شروع کرنے کا فیصلہ لے گی،جس کی وجہ سے سفر حجاز کا سفر کرنے والے عازمین کو کافی راحت حاصل ہوگی۔

 

 

 

 

 

 

 

 

 

سیول سوساٹی بڈگام کا اظہار تعزیت

 

سرینگر//سیول سوساٹی بڈگام نے سینئر لیکچرارطاہر الحمید کے والد کے انتقال پر تعزیت کا اظہار کیا ہے ۔ سوساٹی نے مرحوم کی مغفرت اورپسماندگان کیلئے صبر جمیل کی دعا کی ہے ۔

 

 

جسمانی طورخاص افراد وظیفہ سے محروم 

 ہینڈی کپیڈایسوی ایشن کا اظہار برہمی

سرینگر //جسمانی طور خاص افراد کی انجمن جموں و کشمیر ہینڈی کپیڈایسوی ایشن کے صدر عبدالریشد بٹ نے بیوائوں،یتیموں اورجسمانی طور خاص افراد کو عید کے مقدس موقعہ پر فراہم کی جانے والی امداد سے محروم رکھنے پر تشویش کا اظہار کرتے ہوئے اس کمزور طبقے کو راحت پہنچانے کے لئے فوری طور پر اقدامات کرنے پر زور دیا ہے ۔ محکمہ سوشل ویلفیئر کی جانب سے عید کے اس مقدس موقعے پر بھی جسمانی طور خاص افراد ،بیوائوں اور یتیموں کو فراہم کی جانی والی امداد سے محروم رکھنے پر ایسوسی ایشن کے صدر عبدالرشید بٹ نے انتظامیہ کے خلاف  برہمی کا اظہار کرتے ہوئے کہا کہ عید کے اس موقع پر امداد فراہم نہ کرنے کی وجہ سے جسمانی طور خاص افراد ،بیوائوں اور یتیم زبردست مشکلات کا شکار ہو گئے ہیں ۔انہوں نے کہا کہ مختلف اضلاع میں قائم محکمہ کے دفاتر میں تعینات ملازمین قوانین کی دھجیاں اُڑا رہے ہیں اور جسمانی طورخاص افراد کو نظر انداز کرکے منظور نظر افراد کے حق میں وظیفہ فراہم کرتے ہیں جس کے نتیجے میں جسمانی طور خاص افراد در در کی ٹھوکریں کھانے پر مجبور ہو رہے ہیں ۔ بٹ نے کہا کہ اگرچہ محکمہ نے سیکرٹریٹ سے ہی مستحق افراد کے اکاوئنٹ نمبروں میں جمع کیا جائے گا تاہم آج تک کسی کے کھاتے میں کوئی بھی پیسہ جمع نہیں ہوا ہے ۔سی این آئی

 

عید الفطر کے پیش نظر مناسب انتظامات کئے جائیں:بخاری

 قیمتیں کو اعتدال پر رکھنے کیلئے مارکیٹ چیکنگ کی جائے

سرینگر//اپنی پارٹی کے صدر سید محمد الطاف بخاری نے ہفتہ کے روز انتظامیہ پر زور دیا کہ وہ عید الفطر کے پیش نظر مناسب انتظامات کو یقینی بنائے۔انہوں نے کہا کہ انتظامیہ اشیائے ضروریہ کے وافر ذخیرہ کو یقینی بنانے کے لیے کمر بستہ ہو جائے اور عید کے پیش نظر عوام کو تمام ضروری خدمات فراہم کی جائیں۔ انہوں نے کالا بازاری اور ذخیرہ اندوزوں پر لگام لگانے کے لیے پوری وادی میں بازار کی جانچ تیز کریں۔ایک بیان میں بخاری نے کہا کہ متعلقہ محکموں اور اہلکاروں کو اس بات کو یقینی بنانے کے لیے چوکنا رہنا چاہئے کہ لوگوں کو تمام ضروری خدمات اور اشیائے ضروریہ کی مناسب فراہمی بشمول گوشت، مچھلی، پولٹری، ڈیری، تازہ بیکری مصنوعات ، چاول، ایل پی جی، اور دیگر ضروری اشیاء ، پریشانی سے پاک طریقے سے حاصل ہوں۔اشیائے خوردونوش کے معیار کو برقرار رکھنے میں ناکامی، معیاد ختم ہونے والی اشیا فروخت کرنے یا اشیائے ضروریہ کی ریٹ لسٹ آویزاں نہ کرنے والے دکانداروں اور تاجروں کے خلاف قانون کے مطابق کارروائی کی جائے۔  اپنی پارٹی کے رہنما نے عید کی نماز کے لیے بڑے اجتماعی مقامات پر لوگوں کی پریشانی سے پاک نقل و حرکت کی سہولت کے لیے مناسب صفائی ستھرائی اور پبلک ٹرانسپورٹ کی دستیابی پر بھی زور دیا۔ انہوں نے کہا کہ ٹریفک پولیس حکام کو شہر اور وادی کے دیگر تمام بڑے قصبوں میں پبلک اور پرائیویٹ ٹرانسپورٹ کی آسانی سے چلانے کو یقینی بنانا چاہئے۔ان دنوں بجلی کی تعطل پر زور دیتے ہوئے اپنی پارٹی کے صدر نے کہا کہ انتظامیہ رمضان کے مقدس مہینے میں صارفین کو بلاتعطل بجلی فراہم کرنے میں بری طرح ناکام رہی ہے۔ عید کے آس پاس کے دنوں میں بجلی کا بار بار بریک ڈاؤن نہیں ہونا چاہئے۔

 

 سعودی عرب سے نوجوان کی لاش واپس لانے میں مددکریں 

غلام حسن میر کی ایل جی سنہا سے اپیل

سرینگر// اپنی پارٹی کے سینئر نائب صدر غلام حسن میر نے ہفتہ کے روز لیفٹیننٹ گورنر منوج سنہا سے ملاقات کی اور بارہمولہ کے نوجوان کی آخری رسومات کے لیے سعودی عرب سے لاش واپس لانے میں ان کی مدد طلب کی۔ایک بیان میں میر نے کہا کہ کنزر بارہمولہ سے تعلق رکھنے والے یونس کی سعودی عرب میں اس وقت موت ہوگئی جب وہ تہجد ادا کرنے جارہے تھے۔ خاندان کو نوجوان کی لاش کو واپس لانے میں مدد کی ضرورت ہے۔ انہوں نے ایل جی منوج سنہا سے درخواست کی کہ وہ فوری طور پر اقدامات کریں اور وزارت خارجہ کے ساتھ اس معاملے کی پیروی کریں تاکہ لاش کو سعودی عرب سے ہندوستان واپس ان کے آبائی گاؤں گوئگام کنزر میں آخری رسومات کے لیے ایئر لفٹنگ میں مدد ملے۔

 

 

 عید الفطر پرحقانی ٹرسٹ اورسیول سوسائٹی فورم کی مبارکباد 

سرینگر//حقانی میموریل ٹرسٹ نے جموں کشمیر کے عوام کے عید الفطر کی مبارکباد پیش کی ہے ۔ ٹرسٹ کے سرپرست اعلیٰ سید حمیداللہ حقانی اور جنرل سکریٹری بشیر احمد ڈار نے اپنے بیان میں کہا ہے کہ اللہ تعالیٰ رمضان کی عبادات کو قبولیت بخشے اور یہ عید مسلمانوں کیلئے خوشیوں اور مسرتوں کی ڈھیر ساری سوغاتیں لے کر آئے اور مسلمان جن آلائم اور مصائب سے دوچار ہیں ان کا خاتمہ ہو۔ انہوں نے مسلمانوں سے درد مندانہ گزارش کی کہ وہ عید الفطر کی تقریب سادگی سے منائیں۔ادھر جموں و کشمیر سول سوسائٹی فورم کے چیئرمین عبدالقیوم وانی نے عید الفطر کے موقع پر جموں و کشمیر اور پوری مسلم دنیا کے لوگوں کو مبارکباد پیش کی ہے۔ایک بیان میں وانی نے کہا کہ یہ تہوار عقیدت، ایمان اور نیکی کی خوبیاں سکھاتا ہے اور بھائی چارے، ہمدردی اور اتحاد کے جذبات کو ابھارتا ہے۔وانی نے کہا کہ رمضان کے مقدس مہینے میں روزے رکھنے کے دوران لوگوں نے فرائض کی طرف اضافی عبادت کرکے مذہبی تنہائی اور اطمینان حاصل کیا ہے اور اپنے اعمال کا الہی پھل حاصل کرنے کا اندرونی عقیدہ رکھتے ہیں۔عید کے موقع پر وانی نے جموں و کشمیر کے لوگوں سے اپیل کی ہے کہ وہ ان تمام خاندانوں کو یاد رکھیں جو مختلف وجوہات کی بناء پر ایک بے سہارا اور مایوس زندگی گزار رہے ہیں۔وانی نے لوگوں سے اپیل کی کہ وہ بیواؤں، یتیموں اور ان لوگوں کو نہ بھولیں جنہیں مدد کی اشد ضرورت ہے۔ انہوں نے لوگوں سے اپیل کی کہ وہ اس عید پر ان کی ہر ممکن مدد کریں۔وانی نے مذہبی مبلغین سے بھی اپیل کی کہ وہ لوگوں کو اتحاد اور خود مدد کی اہمیت کو سمجھائیں۔