مزید خبریں

یٰسین انگلش سکول میں ’فسٹ فلائی ‘کلاسوں کا آغاز

عشرت حسین بٹ
منڈی// تحصیل منڈی کے صدر مقام آعلیٰ پیر منڈی میں یٰسین انگلش سکول میں جمعرات کو فسٹ فلائی کے تحت ننھے بچوں کی تعلیم کا آغاز کیا گیا۔ اس دوران سکول کی جانب سے ایک پرْ وقار تقریب کا بھی اہتمام کیا گیا تھا جس میں بچوں کے ساتھ ساتھ ان کے والدین نے بھی شرکت کی۔ اس موقہ پر سکول انتظامیہ کی جانب سے والدین کو بچوں کی تعلیمی معیار کے حوالے سے اہم نکات بتائے گئے اور ان کو بچوں سے منسلک ذمہ داریوں کے بارے میں بھی جانکاری فراہم کی گئی ۔سکول کے پرنسپل محمد جابر نے کہا کہ سکول سٹاف کے ساتھ ساتھ والدین بھی اپنے بچوں کی بہتر نشونما اور تعلیمی معیار میں اپنا کردار ادا کریں ۔ان کا کہنا تھا کہ گزشتہ دو برسوں میں بچوں کی تعلیم کووڈ کی وجہ سے کافی حد تک متاثر رہی مگر اس کے باوجود بھی سکول انتظامیہ آن لاین طریقے سے بچوں کو اعتماد میں لیتی رہی ہے ۔اس موقہ پر تعلیم کے حوالے سے بچوں کے والدین سے تعاون طلب کیا گیااور انہوں نے بھی والدین کو یقین دلایا کہ آنے والے وقت میں سکول کی طرف سے بچوں کی تعلیم کیلئے بہتر سے بہتر اقدامات اٹھائے جائینگے ۔
 
 

حاجی وزیر حسین کی سبکدوشی پر الوداعی تقریب 

عظمیٰ یاسمین
 تھنہ منڈی // تھنہ منڈی کے ہسپلوٹ وارڈ نمبر 1 علاقے کے رہائشی حاجی وزیر حسین کٹاریہ محکمہ بجلی میں 40 سال اپنی سروس پوری کرنے کے بعد سبکدوش ہو گئے۔ محکمہ بجلی کی جانب سے انکے اعزاز میں بہترین الوداعی پارٹی کا اہتمام کیا گیا جس میں محکمہ بجلی کے آفیسران کے علاوہ علاقہ کے نمائندگان اور قریبی رشتہ داروں نے شرکت کی۔ مقررین نے بولتے ہوئے کہاکہ اس زمانے میں کسی بھی محکمہ سے باعزت سبکدوشی انتہائی خوش قسمتی کی بات ہے۔ انھوں نے کہا کہ محکمہ میں اس طرح کا تجربہ کار کارکن ملنا نہایت ہی دشوار ہے۔انہوں نے کہا حاجی وزیر حسین نے ملازمت کے دوران عوام کا درد سمجھتے ہوئے محکمہ کی پوری ذمہ داری نبھائی ہے اور دیانت داری سے کام کیا ہے جس کی وجہ سے اس تقریب میں محکمہ کے آفیسران ملازمین عوامی نمائندوںنے شرکت کی۔ رشتہ داروں و عام لوگوں نے کہا کہ موصوف کئی بار محکمہ کے خلاف اٹھنے والی آوازوں کو بھرپور انداز میں سن کر محکمہ کے آفیسران کے ساتھ مل کر حل کروا دیتے تھے۔ انھوں نے کہا کہ موصوف نے اپنی پوری ملازمت کے دوران جس طرح عوام کا تعاون حاصل کیا ہے وہ قابلِ تحسین ہے جہاں انہوں نے محکمہ میں ایک معمولی ملازم سے لیکر میٹر ریڈر تک اپنی ذمہ داری نبھائی ہے وہ قابل ستائش ہے۔مقررین نے موصوف کی خدمات کی سرہانہ کرتے ہوئے مبارک باد پیش کی۔ وہیں حاجی وزیر حسین کو محکمہ بجلی کے سب ڈویژن سیکنڈ راجوری میں محکمہ کے اعلیٰ حکام نے ایک شاندار الوداعی تقریب کے دوران رخصت کیا۔ اس کے بعد دیگر ملازمین اور رشتے داروں کے ہمراہ سبکدوش ملازم کو ان کے گھر واقع موضع ہسپلوٹ وارڈ نمبر 1 لایا گیا جہاں پر ان کا والہانہ استقبال کیا گیا۔اس موقع پر اے ای اشتیاق احمد، جے ای شوکت چوہدری ،آصف چوہدری، جے ای محمد یونس مرزا، انسپکٹر شبیر احمد خان، میٹر ریڈر محمد عارف سمیال، میٹر ریڈر مدو خان میٹر ریڈر خورشید احمد، لائن ایکٹر شبیر احمد خان، لائن مین محمد اقبال چوہدری، لائن مین کبیر احمد کے علاوہ پی ڈی ایل ورکرز ارشد محمود رینہ، منشی خان، پرویز احمد خان، تنویر احمد خان، محمد افضل، لال حسین چوہدری، محمد اشرف، ذاکر حسین، ذاکر خان، اعجاز احمد اور قاضی شہباز سمیت کئی دیگر احباب نے شرکت کی۔
 

 سکولوں میں خالی پڑی اسامیوں کو پُر کرنے کی اپیل 

حسین محتشم
پونچھ//اپنی پارٹی کے ضلع صدر پونچھ اور سابق ایم ایل اے پونچھ شاہ محمد تانترے نے ضلع انتظامیہ سے اپیل کی ہے کہ وہ سرحدی ضلع پونچھ کے اسکولوں میں عرصہ دراز سے خالی پڑی اساتذہ کی اسامیوں کو فوری پُر کریں۔انہوں نے گورنمنٹ ہائی سکول گگڑیاں چھول کی مثال پیش کرتے ہوئے کہا کہ اس اسکول میں صرف تین ٹیچر ہیں جو دس کلاسوں کے سینکڑوں طلبا ء کی درس و تدریس کرنے پر مجبور ہیں۔انھوں نے کہا کہ یہی ایک اسکول نہیں ہے بلکہ ضلع پونچھ کے دیگرا سکولوں میں بھی یہی حال ہے۔انھوں نے ضلع ترقیاتی کمشنر پونچھ اندر جیت سے درخواست کی ہے کہ وہ محکمہ تعلیم کے اعلیٰ افسران کی ایک میٹنگ بلائیں اور معاملات کو درست سمت میں طے کریں۔ اس موقع پر موجود اپنی پارٹی کے سینئر لیڈر بشیر خاکی نے بھی افسوس کا اظہار کرتے ہوئے کہا کہ محکمہ تعلیم پستی کی جانب جا رہا ہے۔انھوں نے کہا کہ پہلے ہی طلبہ کا کوڈ 19کی وجہ سے از حد تعلیمی نقصان ہوا ہے اور اب اگر اسکولوں میں اساتذہ کی کمی ہو گی تو ان کا مزید نقصان ہو گا ۔انھوں نے بھی اعلیٰ حکام سے اساتذہ کی خالی اسامیوں کو پُر کرنے کے لئے کڑے اقدامات اٹھانے کی اپیل کی۔
 
 
 

 میراں پبلک ہائی اسکول میںسالانہ جلسہ کیا گیا 

حسین محتشم
پونچھ//میران پبلک ہائی اسکول ڈینگلہ جانیاڑ پونچھ میں سالانہ جلسہ منعقد کیا گیا جس میں ایس ایس پی پونچھ روہت باسکوترا (آئی پی ایس) پونچھ مہمان خصوصی کی حیثیت سے شریک ہوئے ۔ اس سالانہ جلسے میں بچوں نے اپنی تعلیمی اور فنی صلاحیت کا شاندار مظاہرہ کیا۔ ادارہ کی سربراہ مولانا بشارت ثقافی نے بتایا کہ اس دیہی علاقے میں بچوں کو جدید تعلیم کی بے حد ضرورت تھی۔ اسی مقصد کے پیش نظر یہاں پر یہ تعلیمی ادارہ قائم کیا گیا ہے اور اس پروگرام کا مقصد لوگوں میں تعلیم کے لئے بیداری پیدا کرنا ہے۔انھوں نے مزید کہا کہ ہرر دور میں اور ہر زمانے میں تعلیم کی اہمیت تسلیم کی جاتی رہی ہے اور موجودہ وقت میں تو ہر بچے کو تعلیم دینا بے حد ضروری ہے۔ اسی مقصد کے پیش نظر  پونچھ کے گائوں جنیاڑ میں یہ ادارہ قائم کیا گیا۔ ا انھوں نے کہا کہ ادارے میں بچوں کو انگلش میڈیم کی تعلیم بھی دی جاتی ہے۔ علاقہ میں متعدد ایسے تعلیمی ادارے ہیں جن کی فیس بہت مہنگی ہے اور غریب بچے مہنگی فیس ادا کرنے سے قاصر ہیں اس ادارے میں مناسب فی لی جاتی ہے۔ 
 
 

منجا کوٹ میں گرام سبھا دفاتر تک محدود 

سرپنچوں و ملازمین پر من مرضی سے پلان بنانے کا الزام

پرویز خان 
منجا کوٹ //سرحدی تحصیل منجا کوٹ کی عوام نے محکمہ دیہی ترقی او ر سرپنچون پر الزام عائد کرتے ہوئے کہاکہ پنچایتوں میں گرام سبھا کرنے کے بجائے تعمیر اتی پلان ملازمین کے دفاتر اور سرپنچوں کے گھروں میں بیٹھ کر ہی بنائے گئے ہیں جبکہ علاقہ کی مشکلات و عوامی مانگوں کو یکسر نظر انداز کردیا گیا ہے ۔مقامی لوگوں نے بتایا کہ بلاک منجا کوٹ کی لگ بھگ سبھی پنچایتوں میں سرپنچوں نے ملازمین کیساتھ مل کر آپسی ملی بھگت ااور ذاتی مفاد کے تحت کاموں کی سلیکشن کی ہے جبکہ زمینی سطح پر کوئی بھی اجلاس منعقد ہی نہیں کیا گیا جس کی وجہ سے غریبوں کے مطالبات و مانگوں کو یوں ہی چھوڑ دیا گیا ہے ۔لوگوں نے الزام عائد کرتے ہوئے کہاکہ ملازمین ذاتی مفاد کی خاطر سرپنچوں کیساتھ مل کر تعمیر اتی کام پلان میں رکھ رہے ہیں ۔انہوں نے ضلع ترقیاتی کمشنر راجوری اور جموں وکشمیر کے لیفٹیننٹ گورنر سے مانگ کرتے ہوئے کہاکہ محکمہ دیہی ترقی منجا کوٹ کی جانب سے بنائے گئے سابقہ پلان منسوخ کئے جائیں جبکہ نئے پلان مرتب کرنے کیلئے متعلقہ پنچایتوں میں اجلاس منعقد کرنے کی ہدایت جاری کی جائیں ۔انہوں نے کہاکہ مذکورہ اجلاسوں کے سلسلہ میں ویڈیو اور فوٹو گرام بھی طلب کر کے جانچ کی جائے جبکہ آئندہ کیلئے ایک سرکاری پورٹل بنا کر گرام سبھا اجلاس کے فوٹو اور ویڈیو مذکورہ پورٹل پر عوامی اور انتظامیہ کی جانکاری کیلئے لوڈ کروائی جائیں تاکہ محکمہ دیہی ترقی کے کام میں شفافیت لائی جاسکے ۔
 
  

مینڈھر میں گوجر مہا سبھا کا اجلاس منعقد 

جاوید اقبال 
مینڈھر //مینڈھر میں انٹر نیشنل گوجر مہا سبھا کا اجلاس سابقہ سی ایم او اور گوجر مہا سبھا کے ریاستی صدر ڈاکٹر محمد یونس چوہدری کی قیادت میں منعقد ہوا جس میں مہا سبھا کے اراکین کی ایک بڑی تعداد نے بھی شرکت کی ۔اجلاس کے دوران قبائلیوں کو درپیش مسائل پر تفصیلی گفت و شنید کی گئی جس کے دوران مقررین نے انتظامیہ کو تنقید کا نشانہ بناتے ہوئے کہاکہ مرکزی حکومت کی جانب سے لاگو کردہ فارسٹ رائٹ ایکٹ کو ابھی تک مینڈھر میں لاگو ہی نہیں کیا گیا ہے ۔ ڈاکٹر محمد یونس چوہدری نے کہاکہ فائلیں دفاتر میں پڑی ہوئی ہیں جبکہ آفیسران لوگوں کو بول رہے ہیں کہ انفرادی طورپر کسی کی فائل شامل نہیں کی جائے گی ۔انہوں نے کہاکہ قاعدہ کے تحت آفیسران کیسے غریبوں کا حق روک سکتے ہیں جبکہ کئی آفیسران کو بھی اس سلسلہ میں مکمل جانکاری ہی نہیں ہے ۔انہوں نے محکمہ جنگلات کے آفیسران کو تنقید کا نشانہ بناتے ہوئے کہاکہ وہ مستحقین کو ان کے حق سے محروم رکھنے کی کوششیں کررہے ہیں ۔اس دوران سوپنچ ایسوسی ایشن کے صدر شوکت چوہدری نے کہاکہ ابھی تک مذکورہ قانون کو لاگو نہ کرنا افسوس ناک ہے ۔انہوں نے مانگ کرتے ہوئے کہاکہ قبائلیوں کو ان کا حق دینے کیساتھ ساتھ پہاڑیوں کو ایس ٹی کا درجہ دیا جائے تاکہ وہ بھی مذکورہ قانون کے زیر تحت آسکیں ۔
 
 
 

پنچایت ٹومی گرسائی میں کئی تعمیر اتی کام نہ ہو سکے 

لاپرواہی میں ملوث ٹھیکیداروں کے کارڈ منسوخ کرنے کی مانگ 

جاوید اقبال 
مینڈھر //مینڈھر سب ڈویژن کی پنچایت ٹومی گرسائی کے پنچایتی اراکین نے الزام عائد کرتے ہوئے کہاکہ پنچایت میں ابھی تک کوئی بھی تعمیر اتی کام نہیں ہوا ہے جبکہ مالی برس کے دوران پلان میں رکھے گئے درجنوں پروجیکٹوں کے فنڈز لیپس ہو گئے ہیں ۔سرپنچ پنچایت شوکت چوہدری نے بتایا کہ ٹھیکیداروں و متعلقہ محکمہ کی لاپرواہی کی وجہ سے پنچایت میں 3.50کروڑ کے تعمیر اتی کاموں کا پیسہ لیپس ہو گیا ہے جن میں ہینڈ پمپ ،سکولی عمارتیں اور کئی سڑکیں بھی شامل ہیں ۔موصوف نے بتایا کہ ان سڑکوں میں چور گلی ،مسوری والا ،درہ گرسائی ،کھیت گرسائی ،شاہستار سڑک ،پنج پیر سڑک اور ایک کھیل کا میدان ہیں ۔انہوں نے بتایا کہ مذکورہ پروجیکٹوں کے ٹینڈر ہوئے تھے لیکن ان کا کام نہیں کروایا گیا جس کی وجہ سے مقامی لوگوں کا بھاری نقصان ہو گیا ہے ۔پنچایتی اراکین نے ضلع ترقیاتی کمشنر پونچھ سے اپیل کرتے ہوئے کہاکہ تعمیر اتی کام نہ کرنے والے ٹھیکیداروں کے کارڈ جلدازجلد منسوخ کئے جائے کیونکہ مذکورہ ٹھیکیدار اب تعمیر اتی عمل میں بڑی رکائوٹ ثابت ہورہے ہیں ۔
 
 

آرمڈ پولیس کے 4آفیسران سبکدوش 

جاوید اقبال 
مینڈھر //مینڈھر کے بھیرہ علاقہ میں قائم کردہ آرمڈ پولیس کے ہیڈ کوارٹر کے زیر تحت تعینات 4پولیس آفیسران کی سبکدوشی کے سلسلہ میں ایک الوداعی تقریب کا اہتمام کیا گیا جس میں آرمڈ پولیس کے سنیئر آفیسران نے بھی شرکت کی ۔اس دوران مقررین نے سبکدوش ہونے والے آفیسران کی تعریف کرتے ہوئے کہاکہ انہوں نے محکمہ میں رہ کر ایمانداری کیساتھ اپنی خدمات انجام دی ہیں ۔سبکدوش ہونے والوں میں ڈی ایس پی سورج دین ،انسپکٹر مزمل حسین شاہ ،سب انسپکٹر شوکت علی اور اے ایس آئی لطیف حسین شامل ہیں ۔ان کیلئے آفیسران نے نیک خواہشات کا اظہار بھی کیا ہے ۔