مزید خبرں

سکولوں میں اساتذہ کی کمی

کسکوٹ، بانہال میں محکمہ تعلیم کے خلاف احتجاجی مظاہرہ 

 ایم ایم پرویز
رام بن//گورنمنٹ ہائی سکول کسکوٹ، بانہال کے طلاب نے سکول میں اسٹاف کی کمی کو لیکر محکمہ تعلیم کے خلاف ایک احتجاجی مظاہرہ کیا۔مظاہرین میں شامل طلاب کے والدین نے ایس ڈی ایم کو سکول میں محکمہ تعلیم کی جانب سے کئے گئے اٹیچمنٹ ساز و باز کے متعلق جانکاری دی،جسکی وجہ سے سرکاری سکولوں میں دور دراز کے غریب طلاب کامستقبل مخدوش ہو رہا ہے۔بعض والدین کا یہ بھی الزام تھا کہ  کئی اساتذہ، ماسٹرس اور رہبر تعلیم اساتذہ نے ملی بھگت کر کے قصبہ کے سکولوں اور قومی شاہراہ کے قریب قائم سکولوں میںپوسٹنگ حاصل کر رکھی ہے جب کہ دور افتادہ مقامات کے اسکولوں میں ٹیچر نہ ہونے کی وجہ سے درس و تدریس متاثر ہو رہا ہے۔یہ بات قابل ذکر ہے کہ ضلع کے بیشتر سرکاری سکولوں میںسٹاف اور تدریسی عملہ کی قلت ہے۔لوگوں کی یہ بھی شکایت ہے کہ یہ اساتذہ د یہی سطح کے میرٹ کے بنیاد پر اپنے اپنے دیہی سکولوں میں خدمات انجام دینے کے لئے تعینات کئے جاتے ہیں لیکن یہ اپنا اثر و رسوخ استعمال کرکے قصبہ و قومی شاہراہ کے سکولوںمیں اپنی اٹیچمنٹ حاصل کرنے میں کامیاب ہوجاتے ہیں اور دیہی علاقوں کے اسکولوں میں اساتذہ کی عدم دستیابی کا مسئلہ مسلسل بر قرار رہتا ہے۔لوگوں نے انتظامیہ سے فوری طور سکول کے لئے سٹاف مہیا کرنے کامطالبہ کیا ہے۔
 
 
 

 ناخیز افراد کی انتخابی عمل میں شمولیت 

 ڈی سی نے قومی مشاورت کا جائزہ لیا 

ڈوڈہ //ضلع ترقیاتی کمشنر بھوانی سنگھ رکوال کی قیادت میں منعقدہ ایک اجلاس میں ’’انتخابی عمل میں پی ڈبلیو ڈئیز(ناخیزی افراد)کے شامل ہونے پر قومی مشاورت کا جائزہ لیا۔اجلاس میں اے سی آر طار۱ق حُسین نائیک ،تعمیرات عامہ کے ا یگزیکٹو انجینئروں ،ڈی ای پی او، سوشل ویلفئیر افسر،نائب تحصیلدار ،الیکشن و دیگر ضلع افسروں نے شرکت کی۔اجلاس کے دوران ڈی سی نے متعلقین کے ساتھ مشاورت کرنے کے بعد ’’انتخابی عمل میں ناخیز افراد کو شامل کرنے‘‘ کے لئے ایک جامع طریقہ کار تیار کرنے کی ہدایت دی۔انہوںنے مشاورت 15اپریل تک مکمل کرنے اور اسکا مکمل رپورٹ25اپریل تک پیش کرنے کی ہدایت دی۔
 
 

۔JKEDI کی جانب سے تربیتی پروگرام کا انعقاد

ریاسی//جموں و کشمیر اینٹر پیرینور شپ ڈیولپمنٹ انسٹیچوٹ (JKEDI)کی جانب سے سیئڈ کیپٹل فنڈ سکیم/یوتھ سٹارٹ اپ لون سکیم کے تحت تین ہفتہ تک چلنے والا طویل تربیتی کیمپ منعقد کر رہا ہے ۔یہ تربیتی کیمپ ماہ اپریل2018 کے تیسرے ہفتہ سے شروع ہوگا۔18سے37 سال کی عمر کے نوجوان ،جن کی کم سے کم تعلیمی قابلیت 12 ویں پاس ہو جے کے ای ڈی آئی کے ضلع دفتر کے ساتھ اس سلسلہ میںرابطہ کر سکتے ہیں، جو کہ ڈی ای سی سی آفس گرائونڈ فلور سیلا ،ریاسی میں کام کر رہا ہے۔ اس سلسلہ میں خواہشمند اُمید واراں ضلع کارڈی نیٹر جے کے ای ڈی آئی سے بھی رابطہ کر سکتے ہیں۔
 
 
 
 
 

پوگل پرستان میں بجلی کی آنکھ مچولی سے لوگ پریشان

 جموں//علاقہ پوگل پرستان میں بجلی کی آنکھ مچولی سے عوام لوگ پریشان ہیں کیونکہ نہ تو بجلی آنے کا کوئی شیڈول ہے اور نہ بند کرنے کا ، یہ سب محکمہ کے اہلکاروں کی مرضی پر منحصر ہے اور جب بجلی آتی ہے تو ساتھ میں متبادل انتظام بھی رکھنا پڑتا ہے کیونکہ کوئی بھروسہ نہیں کہ کس وقت بند ہوجائے گی۔ماضی میں ٹرانسفروں کی تقسیم کاری میں امتیاز سے کام لیا گیا ۔ کئی محلوں میں دس سے پندرہ گھروںکو ٹرانسفارمر دئیے گئے تو کسی جگہ 80سے بھی زائد گھروں کو ایک ہی ٹرانسفارمر ہے ۔اوچھرا، لون پورہ،باس،برنہال،برتھیال وغیرہ دیہاتوں کے 80سے زائد گھروں کو 63کے وی کا صرف ایک ہی ٹرانسفارمر ہے جس کی وجہ سے لوڈ شیڈنگ کی وجہ سے ان دیہاتوں میں اکثر بجلی بند رہتی ہے۔اس سلسلے میں ان علاقوں نے لوگوں نے محکمہ بجلی کے اعلیٰ حکام سے کئی بار استدعا کی مگر آج تک کوئی شنوائی نہیں ہوئی ۔
 
 
 

 ’جموں بار ایسوسی ایشن‘ جموں تک محدود

 آصفہ کے قاتلوں کو بچانے کیلئے ہڑتال ذہنی دیوالیہ پن : بار ایسوسی ایشن ڈوڈہ

ڈوڈہ//بار ایسوسی ایشن جموں کی طرف سے کٹھوعہ کی آٹھ سالہ معصوم آصفہ کے بیمانہ قتل و عصمت دری کے ملزمان کو قانونی کاروائی سے بچانے کے لئے دی گئی ہڑتال کی کال کی پْر زور الفاظ میں مذمت کرتے ہوئے ڈسٹرکٹ بار ایسوسی ایشن ڈوڈہ کے سابق نائب صدر ایڈوکیٹ شبریز امان خان نے کہا کہ وکلاء کو سماج میں اعلیٰ تعلیم یافتہ مہذب دور اندیش طبقہ مانا جاتا ہے اس لئے ایسے سنگین جْرم میں ملوث ملزمان کے حق میں احتجاجی ہڑتال کرنا قابل مذمت اور ذہنی دیوالیہ پن ہے۔ ایڈوکیٹ امان خان نے گزشتہ روز جموں میں معصوم آصفہ کو انصاف دلانے کے لئے قانونی لڑائی لڑنے والی ایڈوکیٹ دپیکا سنگھ راجپوت کے ساتھ بار ایسوسی ایشن کے صدر بوپیندر سنگھ سلاتھیہ کی طرف سے ناشائستہ حرکات اور توہین کرنے کی بھی مذمت کرتے ہوئے کہا ہے کہ یہ صرف اور صرف معصوم ننھی آصفہ کے قاتلوں کو قانونی کارروائی سے بچانے کی کوشش ہے اور آصفہ کو انصاف نہ ملے اور قاتلوں کو سزا نہ ملے۔ انہوں نے مزید کہا کہ بی ایس سلاتھیہ صرف جموں توی بار ایسوسی ایشن کے صدر ہیں اور وہ ایک بار پھر سماج کو ذات پات، مذہب علاقائیت کے نام پر تقسیم کرنا چاہتے ہیں مگر ہم ہر اْس کوشش کا منہ توڑ جواب دیں گے جو انسانیت کے دشمنوں کی حمایت میں ہو۔اور نیک شریف لوگوں کے خلاف ہو اور ایک ذمہ دار شخص کی حثیت سے ہم ضمیر کہ آواز پر لبیک کہیں گے چاہے اس کے لئے ہم کو کوئی بھی قربانی دینی پڑے۔
 
 

بٹوت میں ممنوعہ جڑی بوٹی ضبط، دو ملزم گرفتار 

ایم ایم پرویز
رام بن //ڈویژنل فارسٹ آفس بٹوت کی ایک ٹیم نے جموں جا رہی ایک مسافر بردار بس سے جنگلا تی پروڈکٹ Picorrhiza (Kurroa or Kaod) بر آمد کرنے کا دعویٰ کیا ہے۔ ایک پریس بیان کے مطابق ٹیم نے مسافر بس زیر نمبر JK02BK-5677  سے جنگلاتی جڑی بوٹی کے75 کلو گرام برآمد کرکے دو مبینہ سمگلروں کو گرفتار کیا۔اطلاعات کے مطابق اس جنگلاتی جڑی بوٹی کو کھلے بازارمیںفروخت کرنے پر پابندی عائد کی ہے اور اس کو لیجانے پر قانونی پاندی ہے۔اس جنگلاتی پروڈکٹ کو پاڈر،کشتواڑ سے جموں لایا جارہا تھا کہ محکمہ کے اہلکاروں نے سے ضبط کرکے ملزمان زھرنگ ٹنڈپ اور سونم دورجے کو گرفتار کیا جو یہ اشیاء 6 بیگوں میں بھر کر جموں لے جا رہے تھے، جسے انہوں نے بس کی ڈکی میں سیٹ کے نیچے چھُپا کر رکھا تھا ۔فارسٹ اہلکاروں کے ٹیم کی قیادت رینج آفیسر ایس ایس چب کر رہے تھے جبکہ فارسٹر ہرویر سنگھ نے اس میں تعاون دیا ،اہلکاروں نے یہ کاروائی ڈی ایف او بٹوت امریک سنگھ کی زیر نگرانی انجام دی ۔ یہ جڑی بوٹی بیش بہا قیمتی ہے جس کا استعمال ادویات بنانے میں کیا جا رہا ہے۔
 
 
 
 

سنگل ونڈو پروگرام 

اے ڈی سی بھدرواہ کا موثر ڈھنگ سے لاگو کرنے کی ہدایت 

بھدرواہ //ایڈشنل ڈپٹی کمشنر امام دین کی قیادت میں بھدرواہ میں ایک اجلاس کا اہتمام کیا گیا، جس میںسنگل ونڈو سسٹم(ایک باری) کے تحت موذوں استفادہ حاصل کرنے والوں کو سرکار سکیموں کے فوائد فراہم کرنے کے لئے طریقہ کار پر مباحثہ کیا گیا ۔اجلاس میں متعلقہ محکموں کے افسروں نے اے ڈی سی کو اپنے اپنے محکموں میں لاگو مختلف سکیموں کی جانکاری دی ۔اے ڈی سی نے استفادہ حاصل کرنے والوں تک اسکی رسائی کے لئے فوری طور سے سنگل ونڈو پروگرام کو فعال بنانے کے لئے کہا ۔یہ بات قابل ذکر ہے کہ اجلاس کا انعقاد ڈی سی ڈوڈہ کی ہدایت پر کیا گیا ،جو گُذشتہ ہفتہ ہائی کورٹ کے جسٹس کے دورہ بھدرواہ کے پس منظر میں جاری کئے تھے۔اجلاس میں سیکرٹری ڈسٹرکٹ لیگل سروسز مدثر فاروق ،سی اے ایچ او ڈاکٹر خورشید احمد میر ،وی اے ایس / ڈی ایس ایچ او ڈاکٹر انیل کمار و دیگران نے شرکت کی۔اس سلسلہ میں اگلا اجلاس رواں ماہ کی17 ویں تاریخ کو منعقد ہوگا۔
 

چنہنی ناشری ٹنل میں دو کاریں ٹکرائیں ،3 مضروب

رام بن /ایم ایم پرویز//جمعرات اور جمعہ کی درمیانی شب چنہنی۔ناشری ٹنل کے اند ر دو کاروں کے درمیان ہوئی ٹکر میں تین اشخاص زخمی ہوئے ہیں۔پولیس کے مطابق ٹنل میں جمعرات دیر رات گئے ایک آلٹو کار زیر نمبر  JK20-1313 کی ایک بولینو کار زیر نمبر JK19-4989  ،جو مخالف سمت سے آرہی تھی،کے ساتھ ٹکر ہوئی،جس کے نتیجہ میں تین اشخاص زخمی ہوئے ہیں۔زخمیوں کو فوری طور سے شیرکشمیر میموریل ہسپتال بٹوت منتقل کیا گیا ،جہاں سے انہیں طبی امداد فراہم کرنے کے بعد جی ایم سی جموں منتقل کیا گیا ۔زخمیوں کی پہچان انجم وانی ولد عبدلحق ساکنہ وارڈ نمبر 3,رام بن۔ کیول سنگھ  اور پریتم سنگھ ساکنان ریاسی کے طور پر کی گئی ہے۔