ماہ صیام کے دوران تفسیر قرآن کا اہتمام

 جموں//اب جب کہ ماہ صیام کی آمد آمد ہے ، مختلف دینی اداروں کی جانب سے عوام الناس کو قرآن کریم اور ارشاداتِ نبویؐ سے جوڑنے کے لئے پروگراموں کا اہتمام کیا جارہا ہے ۔ ہر برس کی طرح اس سال بھی شہر کے معروف دارالعلوم ’مرکز المعارف ‘ کے زیر اہتمام تفسیر قرآن کا ہتمام کیا جا رہا ہے ۔انتظامیہ کمیٹی جامع مسجد مدینہ ہلز بٹھنڈی کی جانب سے مشتہر نوٹ میں کہا گیا ہے کہ مفسر قرآن مفتی فیض الوحید ماہ صیام کے دوران ہر روز ایک پارے کی تفسیر کی جائے گی۔ باہر سے آنے والے حضرات کے قیام و طعام کا انتظام منجانب انتظامیہ ہوگا تاہم اس کے لئے مکمل اعتکاف کی نیت سے مسجد میں رہنا لازم ہوگا۔ شرکاء کے لئے کوئی معیار تعلیم نہیں، ہر شخص شریک ہوسکتا ہے تاہم بنیادی عربی زبان آتی ہو تو فائدہ زیادہ ہوگا۔ مستورات کیلئے بھی مذکورہ وقت پر ہی دار ارقم میں نظم کیا گیا ہے ۔ باہر سے آنے والے حضرات کو بستر ساتھ لانا ہوگا۔ نظام الاوقات دورۂ تفسیر میں بعد نماز فجر تا 11بجے انفرادی اعمال و آرام ہوگا۔ 11سے 12بجے تیاری درس، 12بجے سے آدھا گھنٹہ اصلاحی بیان اور 15منٹ دعا۔ 12:45پر اذان ظہر اور ایک بجے نماز ظہر۔ 1:30سے 5:30بجے تک مسلسل درس تفسیر۔ بعد نماز عصر متصلا تراویح میں پڑھے ہوئے ایک پارہ کا خلاصہ و دعا۔ نماز مغرب تک انفرادی اعمال وقبل نماز مغرب ذکر و دعا، بعد نماز عشاء سنتوں کی تعلیم ۔چونکہ وہ قرآن جو رحمت عالم ؐ کا سب سے بڑا معجز ہ ہے ، وہ قرآن جس نے اونٹ بکریاں چرانے والوں کو انسانیت کی امامت کا مقام عطا کیا، وہ قرآن جس کے لئے صبح قیامت تک یہ وعدہ ہے کہ اس سے جڑنے والا کبھی محروم نہ ہوگا بلکہ عزت ہی عزت پائے گا۔ اس کا حق ہے کہ ہم ماہ رمضان میں کثرت سے تلاوت کریں اور یہ سمجھنے کی کوشش کریں کہ قرآن کریم ہم سے کیا کہہ رہا ہے ۔ منتظمین نے استدعا کی ہے کہ زیادہ سے زیادہ تعداد میں اس دورۂ تفسیر میں شرکت کریں۔