لوگ پولنگ عمل سے عدم دلچسپی کااظہار کریں:گیلانی

سرینگر// حریت(گ)کے چیرمین سید علی گیلانی نے ضلع پلوامہ اور شوپیان کے عوام سے ایک بار پھر مکمل الیکشن بائیکاٹ کی اپیل دہراتے ہوئے اس اُمید کا اظہار کیا کہ لوگ پولنک کے روز اپنے گھروں کے اندر محدود رہیں گے اور حکومت کی سینہ زوری اور دروغ گوئی کو مسترد کریں گے۔ حریت رہنما نے  انتخابات کے موقعہ پر 6مئی کو پلوامہ اور شوپیان اضلاع میں مکمل ہڑتال اور سول کرفیو کا نفاذ عمل میں لائے جانے کی اپیل کرتے ہوئے کہا کہ پچھلے تین برسوں سے بالخصوص جنوبی کشمیر کے عوام کو آئے روز قتل وغارت، ظلم وجبر، اندھا دھند گرفتاریوں اور تشدد آمیز تلاشی کارروائیوں کاایک آپریشن کا مقابلہ کا سامنا کرنا پڑا ہے۔ حریت راہنما نے ان مظالم کے ہوتے ہوئے الیکشن انعقاد کوعالمی رائے عامہ کو گمراہ کرنے کے لیے حکومت کی سازش قرار دیتے ہوئے اس امر کا اعادہ کیا کہ ریاست جموں کشمیر کے عوام نے حقِ خود ارادیت کی تحریک کے لیے جو بیش بہا قربانیاں پیش کی ہیں ان کا لازمی تقاضا یہ ہے کہ ہم  استبدادی ہتھکنڈوں کو کسی خاطر میں نہ لاتے ہوئے اپنے مقدس منزل کی طرف پوری یکسوئی اور دلجوئی کے ساتھ رواں دواں رہیں۔ حریت رہنما نے یہاں کی سبھی مین اسٹریم سیاسی جماعتوں کے  رویے کی سخت ترین الفاظ میں مذمت کرتے ہوئے کہا کہ ہر الیکشن کے موقعے پر ان سبھی جماعتوں کو ریاستی عوام کے آئینی حقوق کے علاوہ معاشی اور سیاسی حقوق یاد آتے ہیں، جبکہ مسند اقتدار پر براجمان ہوکر ان حقوق کا استحصال کرنے میں کسی بھی حد تک جانے میں شرم بھی محسوس نہیں کرتے ہیں۔