لداخ کے ملازمین کا کیڈر الگ ہوگا

سرینگر//لداخ میں تعینات ملازمین کو جموں کشمیر کی سنیارٹی اور پروموشن لسٹ میں شامل نہیں کیا جائے گا۔ عمومی انتظامی محکمہ کے پرنسپل سیکریٹری منوج کمار دویدی نے کہا ہے کہ معاملے کی جانچ کرنے کے بعد یہ واضح کیا گیا ہے کہ جو عہدے جموں و کشمیر میں ہیں، لداخ کے عہدے ان کی ترقی کے عمل میں شامل نہیں ہوں گے۔ یہ نیا نظام تمام ملازمین ما سوائے ان ملازمین کے، جنہیں ایس آر او 428 کے تحت جوائنٹ کیڈر قرار دیا گیا تھا،پر لاگو ہوگا۔ حکم نامہ میں کہا گیا ہے کہ نومبر 2021 کے وسط میں جاری کئے گئے حکم نامے کے مطابق دونوں علاقوں میں ملازمین کی تقسیم کا عمل مکمل ہو گیا تھا۔آرڈر کے مطابق لداخ میں تعینات ملازمین کی سنیارٹی لسٹ اور پروموشن کو لے کر انتظامی محکمے کے سامنے سوال آیا۔انہوں نے کہا کہ لداخ میں تعینات ملازمین کو جموں و کشمیر میں ترقی کے لیے سنیارٹی اور میرٹ لسٹ میں شامل نہیں کیا جائے گا۔ ملازمین کی تقسیم کا عمل مکمل ہونے کے بعد جنرل ایڈمنسٹریٹو ڈیپارٹمنٹ نے صورتحال کو واضح کرتے ہوئے کہا ہے کہ ایسے ملازمین کو جموں و کشمیر میں ترقی کی بنیاد نہیں سمجھا جائے گا۔تاہم یہ انتظام کمبائنڈ کیڈر (مشترکہ کیڈر)کے ملازمین پر لاگو نہیں ہوگا۔ آرڈر کے مطابق جے اینڈ کے ایڈمنسٹریٹو سروس، جے اینڈ کے پولیس (گزیٹیڈ) سروس اور جے اینڈ کے فاریسٹ (گزیٹیڈ) سروس کو 21 دسمبر 2021 کو ایس او 428 جاری کرکے ایک مشترکہ سروس/کیڈر کے طور پر قرار دیا گیا تھا۔انہوں نے کہا کہ دونوں خطوں میں فیڈر کیڈر کے بارے میں حتمی فیصلے تک ان کیڈروں کو مشترکہ بنایا گیا ہے۔
 
 

۔2انتظامی افسران   اضافی چارج تفویض

نیوز ڈیسک
 
سرینگر// جموں کشمیر انتظامیہ نے جموں کشمیر انتظامی سروس کے 2 افسران کو اضافی چارج تفویض کئے ہیں۔عمومی انتظامی محکمہ کی انڈر سیکریٹری روپالی آرورہ کی جانب سے جاری احکامات کے مطابق اسسٹنٹ کمشنر پنچایت بارہمولہ کو اپنی ذمہ داریوں کے علاوہ تاحکم ثانی ڈپٹی ڈسڑکٹ الیکشن افسر بارمولہ کا اضافی چارج دیا گیا جبکہ اسسٹنٹ کمشنر پنچایت ڈوڈہ محمد اشفاق کو ڈپٹی ضلع الیکشن افسر ڈوڈ کا اضافی چارج دیا گیا۔