غیر قانونی تجاوزات ناقابل قبول:صوبائی کمشنر

سرینگر//صوبائی کمشنر کشمیر بصیر احمد خان نے وادی کے تمام ضلع ترقیاتی کمشنروں کو غیر قانونی تجاوزات اورسرکاری وکاہچرائی اراضی پر ناجائز قبضہ کرنے والے افراد کے خلاف سخت قانونی کارروائی کرنے کی ہدایت دی ہے۔انہوںنے ایسے افرادکے خلاف کارروائی کے لئے تمام تحصیلوں میںروزانہ بنیادوں پر ایک وسیع مہم شروع کرنے پر زوردیا ہے تاکہ سڑکوں،قومی شاہرائوں اورسرکاری وکاہچرائی اراضی کو غیر قانونی تجاوزات سے چھڑالیاجائے۔یہ امر قابل ذکر ہے کہ سرکار نے 78937کاہچرائی اور48896کنال اراضی کو غیر قبضے سے چھڑالیا ہے۔سرکاری ذرائع نے کہا کہ غیر قانونی تجاوزات سے خالی کرائی جارہی اراضی رپ سرکاری سکول عمارتیں،صحت مراکز ،کیمونٹی ہال،کھیل میدان ،پنچایت گھر ،فائر ٹینڈر اسٹیشن اوردیگر عوامی لازمی خدمات  کے لئے مراکز قائم کئے جائیں گے۔
 
 
سولڈ ویسٹ منیجمنٹ کو عوامی تحریک بنانے پر زور
سرینگر//صوبائی کمشنر کشمیر بصیر احمدخان نے سولڈ ویسٹ منیجمنٹ کو عوامی تحریک بنانے کیلئے متعلقہ آفیسران اورضلع ترقیاتی کمشنروں پر زوردیتے ہوئے کہا ہے کہ اس مہم کو بنیادی سطح پر شہریوں کے ساتھ جوڑاجانا چاہیے۔صوبائی کمشنر نے یہ ہدایات وزارتِ ماحولیات،جنگلات وموسمی تبدیلی کے ضوابط سے متعلق ایس ایم ڈبلیو کی عمل آوری کا جائزہ لینے کے دوران دیں۔میٹنگ میں بتایا گیا کہ ان ضوابط پر اب میونسپل علاقون سے باہر بھی عملدر آمدکیاجارہا ہے۔صوبائی کمشنر نے تمام ضلع ترقیاتی کمشنروں کو موزون مقامات پر زمین کی نشاندہی کرنے کی ہدایت دی ہے تاکہ میونسپل کمیٹیوں کے حدود میں سائینسی بنیادوں پر سولڈ ویسٹ منیجمنٹ کے لئے اقدامات کئے جاسکیں۔صوبائی کمشنر نے مطبوعہ پروفارما پر فوری طور صوبائی کمشنر کے دفتر میں رپورٹ پیش کرنے کی ہدایت دی ہے تاکہ اس سلسلے میں آگے کی کارروائی عمل میں لائی جاسکے۔صوبائی کمشنر نے یہ بات دہرائی کہ سرکار سولڈ ویسٹ منیجمنٹ کے لئے سائینسی بنیادوں پر اقدامات کررہی ہے تاکہ شہروں،قصبوں اوردیہات میںلوگوں کی مشکلات کا ازالہ کیا جاسکے اور یہ علاقے ماحولیاتی کثافت سے پاک رہ سکیں۔