عالمی برادری نوٹس لے:بار

سرینگر// کشمیر ہائی کورٹ بار ایسوسی ایشن نے ڈلی پورہ پلوامہ میں فورسز کی بے تحاشہ فائرنگ سے ایک غیرمسلح شہری کی ہلاکت اور ایک کوزخمی کئے جانے کی مذمت کرتے ہوئے مطالبہ کیا ہے کہ عالمی برادری اورحقوق انسانی اداروں کو ان واقعات کا نوٹس لے کر بھارت کو کشمیری لوگوں کے انسانی حقوق پامال کرنے سے روکے۔ ایک بیان میں بار نے میرگنڈ پٹن کے ارشدحسین ڈار کی موت پر بھی افسوس کااظہار کیا ،جوسوموار کو پیلٹ سے زخمی ہوا تھا۔بار نے اپنے اس موقف کو دہرایا ہے کہ لوگوں کی آوازدبانے یاریاست میں الیکشن منعقدکرانے سے مسئلہ کشمیر حل نہیں ہوگا ۔بیان کے مطابق بھارت کے رہنمائوں کو زمینی حقائق کاادراک کرنا چاہئے اور مسئلہ کشمیرکا حل اقوام متحدہ کی سلامتی کونسل کی قراردادوں کے مطابق ڈھونڈنا چاہئے ۔بار نے گاندربل میںایک سولہ سالہ لڑکی کی عصمت ریزی کے معاملے کی مذمت کرتے ہوئے ملزم کے خلاف فاسٹ ٹریک عدالت میں کارروائی کرنے کا مطالبہ کیا۔ بار نے میرواعظ مولوی محمدفاروق کو اُن کی 29ویں برسی پر خراج عقیدت ادا کیا۔بار نے حالیہ ہلاکتوں کیخلاف مزاحمتی قیادت کی طرف سے 17مئی کو ہڑتال کی کال کی بھی حمایت کی۔