ضلع ترقیاتی چنائو امیدوار کا الزام

سرینگر// ضلع ترقیاتی کونسل انتخابات میں جنوبی کشمیر کے بجبہاڑہ نشست پر میدان میں اترے امیدوار نے ریٹرنگ افسرپر ناجائز طریقہ کار اپناتے ہوئے اس کے کاغذات نامزدگی کو مسترد کرنے کا الزام عائد کیا ہے۔ ایوان صحافت کشمیر میں سنیچر کو نامہ نگاروں سے بات کرتے ہوئے بجبہاڑہ حلقے سے ضلع ترقیاتی کونسل انتخابات میں کاغذات نامزدگی داخل کرنے والے ایک امیدوار طارق احمد شاہ نے کہا کہ یکم دسمبر کو اس نے اپنے کاغذات نامزدگی داخل کئے تھے اور2 دسمبر کو سکرینگ کمیٹی کی میٹنگ کے دوران اسے فٹ بال کا انتخابی نشان دیاگیا۔ طارق احمد شاہ نے کہا کہ تاہم اسے4دسمبر کو مطلع کیا گیا کہ اس کے کاغذات نامزدگی کو مسترد کیا گیا ہے۔ اس نے کہا کہ اصل میں وہ محکمہ سوشل فاریسٹ اننت ناگ میں بطور سوشل فاریسٹری ورکر کے بطور کام کرتا ہے اور کاغذات نامزدگی داخل کرنے سے قبل ہی رضا کارانہ طور پر ریٹائرمنٹ کیلئے متعلقہ محکمہ کو درخواست بھی دی اور متعلقہ افسران نے اس کو علاقائی ڈائریکٹر کو بھی پیش کیا تھا۔طارق احمد شاہ نے مزید کہا کہ اس کے مقابلے میں گپکار الائنس کا جو امیدوار تھا، وہ سرکاری محکمہ میں اسسٹنٹ پروگرام افسر ہے اور اس نے اس کے کاغذات کو برقرار رکھاہے۔ طارق شاہ نے کہا کہ اس بارے میں جب اس نے ریٹرننگ افسر سے پوچھا تو انہوں نے تحریری طور پر یہ کہا کہ مذکورہ امیدوار نے کاغذات کے ساتھ کسی بھی قسم کے ایسے دستاویزات نہیں رکھے ہیں، جن سے یہ ثابت ہو کہ انہوں نے نوکری سے استعفیٰ دیا۔طارق شاہ نے الزام عائد کرتے ہوئے کہا کہ انتظامیہ اس کے ساتھ انصاف نہیں کر رہی ہے۔اس نے چیف الیکشن کمشنر کو اس معاملے میں مداخلت کی اپیل کی۔