شیخ احمد تاربلیؒ کا عرس عقیدت واحترام سے منایا گیا

 سرینگر// بلند پایہ ولی حضرت شیخ المشایخ حضرت شیخ احمد تاربلی ؒ کے 239ویں عرس کی اختتامی تقریب عقیدت و احترام کیساتھ منائی گئی۔ اس سلسلے میں اُن کے آستانِ عالیہ واقعہ تارہ بل میں14ایام کے دوران خطمات المعظمات، دور و ازاکار اور عرس کے آخری دن مولود خوانی کی روح پرور مجلس کا انعقاد ہوا۔بقعہ عالیہ کے سجادہ نشین الحاج پیرزادہ محمد شفیع عاسمی نے تقریب کی صدارت کی جبکہ مولود خوانی کی پیشوائی حاجی میر بشارت احمد نے کی اور عالم دین علامہ مولانا شوکت حسین کینگ نے حضرت شیخ احمد تاربلیؒ کی سیرت ، روحانی اور عملی کمالات پر روشنی ڈالی۔انہوں نے کہا ’’ اولیائے کرام کی درگاہیں ہمارے دلوں کے سکون اور اسلامی تہذیب و تمدن کے گہوارے ہیں اور ان اولیائے کرام کی عظیم کوششوں کی بدولت ملک کشمیر دین اسلام سے سرسبز اور شاداب بن گیا‘‘۔ اس موقعے پر دنیا بھر میں پھیل رہی وبائی بیماری، کرونا وائرس سے نجات کیلئے خصوصی دعامانگی گئی اور توبہ و استغفار کی مجلس آراستہ ہوئی۔ تقریب پر سجادہ نشین دربارِ اکملیہ ڈاکٹر مقتدر کاملی، پیرزادہ محمد اشرف عنایتی، جمعیت کے حاجی فاروق احمد گانی، حاجی  شفاعت احمد کاملی، ترجما ن جمعیت ہمدانیہ جی ایم ساقی حاجی مسعود احمد، فاتح خواں اور دیگر بقعہ جات کے خدمان بھی موجود تھے۔ اِس موقعہ پر عالم اسلام کی سربلندی ، عالم انسانیت کی بقا ، امن وامان اور لوگوں کی خوشحالی کیلئے دعا کی گئی ۔