سکولی عمارت کی تعمیر کیلئے باورچی خانہ مسمار

راجوری //ضلع راجوری کے بدھل علا قہ میں محکمہ ایجوکیشن کی جانب سے سرکاری سکول کی عمارت کی تعمیر کیلئے پہلے سے تعمیر شدہ باورچی خانے کو مسمار کرنے کیخلاف مقامی لوگوںنے غم و غصہ کا اظہار کرتے ہوئے کہاکہ سرکاری املاک کا جان بوجھ کر نقصان کیا گیا ہے ۔اس معاملہ پر مقامی لوگوں نے چیف ایجوکیشن آفیسر راجوری محمود اشرف راتھر کی جانب سے بدھل کے دورے کے دوران تشویش کا اظہار کیا گیا ۔مقامی لوگوں نے الزام عائد کرتے ہو ئے کہاکہ 18ماہ قبل تعمیر کئے گئے باورچی خانہ کو ابھی تک پوری طرح سے استعمال بھی نہیں کیا گیا تھا تاہم متعلقہ محکمہ کی جانب سے باقی عمارت کی تعمیر کیلئے مسمار کر دیا گیا ۔ایک مقامی یوتھ لیڈر وقار لون نے کہا کہ منریگا اسکیم کے تحت لاکھوں روپے کی لاگت سے مذکورہ باورچی خانے کو تعمیر کیا گیا تھا جس کو نئی عمارت کی تعمیر کیلئے مسمار کر دیا گیا ۔انہوں نے مزیدکہاکہ اس عمارت کی تعمیر کے سلسلہ میں کھیل کے میدان کے ایک حصہ کو بھی استعمال کیا جارہاہے جس کی وجہ سے بچوں کے کھیل کود کیلئے میدان بہت کم بچ گیا ہے ۔انہوں نے محکمہ ایجوکیشن بالخصوص چیف ایجوکیشن آفیسر راجوری سے اپیل کرتے ہوئے کہاکہ وہ اس معاملہ کی انکوائری کریں ۔چیف ایجوکیشن آفیسر راجوری جوکہ مذکورہ علا قہ میں تعلیمی نظام کے معائینہ کیلئے دورے پر بھی ہیں ،نے لوگوں کو یقین دلاتے ہوئے کہاکہ اس سلسلہ میں تحقیقات کی جائے گی ۔