سڈورہ اننت ناگ میں نالہ برنگی پرپُل کی تعمیرعرصہ دراز سے تشنہ تکمیل

عارف بلوچ
اننت ناگ//سڈورہ اننت ناگ میں نالہ برنگی پرمحکمہ تعمیرات عامہ کی طرف سے تعمیرکیاجارہا پل کئی برسوں سے تشنہ تکمیل ہے جس کے نتیجے میں ہزاروں کی آبادی کو شدیدمشکلات کاسامنا ہے۔ سال 2014 کے تباہ کن سیلاب کے باعث نالہ برنگی پر سڈورہ کے نزدیک بنا پل ڈھ گیا تھا، جس کے بعد نالہ پر عارضی پل تعمیر کیا گیا ۔5 سال قبل محکمہ تعمیرات عامہ نے نالہ پر نیا پل تعمیر کرنے کا کام ایک نجی کمپنی کو سونپا جس پر 6 کر ورڈ 31 لاکھ روپے خرچ کئے جارہے ہیں تاہم سست رفتاری کے باعث نئے پل کا تعمیری کام اب تک مکمل نہیں ہو پایا ہے اور سڈورہ ،کامڈ  دیگر ملحقہ علاقوں کے لوگوں کو خراب اور دشوار گزار راستہ سے نالہ کو پار کرنا پڑتا ہے،جس سے گاڑی مالکان کو وقتا فوقتا نقصان سے دوچار ہونا پڑتا ہے۔مقامی آبادی کا کہنا ہے کہ پل کا تعمیری کام سست رفتاری سے چل رہا ہے اور امسال بھی پل مکمل ہونے کی امید کم نظر آرہی ہے۔انہوں نے کہا کہ پل کئی علاقوں کو آپس میں جوڑتا ہے ۔اس کے علاوہ ضلع ہیڈکوارٹر جانے کے لئے بھی اسی پل کواستعمال کیاجاتا ہے۔ایگزیکٹو انجینئر آر اینڈ بی قاضی گنڈ کا کہنا ہے کہ پل کا کام 90 فیصد مکمل ہوچکا ہے اور اب پل کی مزید تعمیر میں کچھ لوگ رکاوٹ بن رہے ہیں ۔تاہم انکا کہنا تھا کہ ایجنسی کو پہلے ہی پل کا تعمیری کام امسال جون تک مکمل کرنے کی ہدایت دی گئی ہے ۔