سنٹرل گارنٹی ہیلتھ سکیم یا آیوشمان بھارت صحت کارڈ | ملازمین پنشنروں کوصرف ایک کا فائدہ ملے گا

عظمیٰ نیوز سروس

سرینگر //جموں و کشمیر سرکار نے تمام سبکدوش ملازمین کو ہدایت دی ہے کہ سنٹرل گارنٹی ہیلتھ سکیم کا فائدہ اٹھانے کیلئے انہیں آیوشمان بھارت اور دیگر سرکاری سکیموں کو چھوڑ نا ہوگا۔ سبکدوش ملازمین سے کہا گیا ہے کہ سنٹرل گارنٹی سکیم میں درخواست دائر کرنے سے قبل آیوشمان بھارت کارڈ کو رد کرکے سٹیٹ ہیلتھ ایجنسی یا متعلقہ ایجنسی سے این او سی حاصل کریں۔ جموں و کشمیر سرکار کی جانب سے رواں ماہ کی 13تاریخ کو جاری کئے گئے حکم نامہ زیر نمبر -FD-Code/43/2022-02-Part(1)/558 میں بتایا گیا ہے کہ مرکزی سرکار نے دلی اور چندی گڑھ کے پینشروں کو سنٹرل گارنٹی ہیلتھ سکیم میں شامل کرلیے ہیں۔ حکم نامہ میں کہا گیا ہے کہ ایڈیشنل ڈائریکٹر سی جی ایس ایچ چندی گڑھ نے مذکورہ سکیم کو مرکزی زیر انتظام جموں و کشمیر تک توسیع دی ہے اور 31اکتوبر 2019تک سرکاری نوکری سے سبکدوش ہونے والے ملازمین کو شامل کیا ہے۔ حکم نامہ میں کہا گیا ہے کہ جموں و کشمیر میں عام شہریوں کے علاوہ سبکدوش ملازمین کیلئے کئی صحت سکیمیں موجود ہیں لیکن کسی بھی سبکدوش ملازم کو صرف ایک ہی صحت سکیم سے فائدہ فراہم کیا جاسکتا ہے، اسلئے سبکدوش ملازمین کو سی جی ایچ ایس میں اندراج کیلئے گولڈن کارڈ واپس کرنا ہوگا اور متعلقہ ایجنسی سے این او سی حاصل کرنا ہوگی۔