رام بن میں ہائی سیکورٹی رجسٹریشن پلیٹ کے بغیر 29 گاڑیاں ضبط

محمد تسکین
بانہال// گاڑیوں میں ہائی سیکورٹی رجسٹریشن پلیٹ لگانے کیلئے 15 جون کی تاریخ آخری تھی اور اس کے بعد اس نمبر پلیٹ کے بغیر محکمہ موٹر وہیکلز ڈیپارٹمنٹ نے ایسی گاڑیوں کے خلاف کاروائی کا انتباہ دیا تھا۔جمعرات کے روز موٹر وہیکلز ڈیپارٹمنٹ رام بن اور ڈی ایس پی ٹریفک نیشنل ہائے وے بانہال نے ایچ ایس آر پی نمبر پلیٹ کے بغیر 29 گاڑیوں کی ضبطی عمل میں لائی ہے۔ ڈی ایس پی ٹریفک نیشنل ہائے وے بانہال اصغر ملک نے کشمیر عظمیٰ کو بتایا کہ جمعرات کے روز بانہال اور رامسو کے علاقے میں ایسی 22 گاڑیوں کو ضبط کیا گیا ہے جنہوں نے ہائی سیکورٹی رجسٹریشن پلیٹ نصب نہیں کی تھی۔ انہوں نے کہا کہ ضبط شدہ گاڑیوں میں ٹرک ، موٹر بائیک اور ٹاٹا موبائیل شامل ہیں۔ انہوں نے لوگوں سے اپیل کی ہے کہ وہ فوری طور پر ایچ ایس پی آر لگوائیں۔ ادھر اسسٹنٹ ریجنل ٹرانسپورٹ افیسر رام بن شفقت مجید کی قیادت میں سات ایسی گاڑیوں کو ضبط کیا گیا ہے جن میں موٹر بائیک اور مسافر گاڑیاں شامل ہیں جنہوں نے یہ نمبر پلیٹ ابھی تک نصب نہیں کی ہیں۔ اے آر ٹی او رام بن شفقت مجید نے کشمیر عظمیٰ کو بتایا کہ اب تک صرف چالان کئے جاتے تھے لیکن جمعرات سے ہائی سیکورٹی رجسٹریشن پلیٹ کے بغیر گاڑیوں کی ضبطی کا عمل شروع کیا گیا ہے اور یہ سلسلہ روزانہ کی بنیادوں پر جاری رہے گا۔ انہوں نے کہا کہ لوگوں کو پہلے ہی مطلع کیا گیا تھا کہ وہ 15 جون تک نئی رجسٹریشن پلیٹ لگائیں لیکن اب تک بہت کم لوگوں نے عمل کیا تھا اور اب گاڑیوں کی ضبطی کے بعد زیادہ لوگایچ ایس آر پی کیلئے درخواست دے رہے ہیں۔ انہوں نے گاڑیوں کا استعمال کرنے والوں سے اپیل کی ہے کہ وہ ہائی سیکورٹی رجسٹریشن پلیٹ لگائیں ورنہ ان کی گاڑیوں کو ضبط کیا جائیگا۔