رام بن دلدوز سڑک حادثہ: ڈاکٹر فاروق ، عمر عبداللہ ، الطاف بخاری اورکے کے شرما کا اظہارِ رنج

سرینگر//نیشنل کانفرنس صدرڈاکٹر فاروق عبداللہ اور نائب صدر عمر عبداللہ نے رام بن المناک سڑک حادثے میں 11افراد کے لقمہ اجل بن جانے پر زبردست رنج و الم کا اظہار کیا ہے۔ دونوں لیڈران نے لقمہ اجل بنے افراد کے لواحقین کے ساتھ تعزیت کا اظہار کیا ہے۔ انہوں نے حکومت سے اپیل کی کہ وہ زخمی ہوئے افراد کا بہترعلاج و معالجہ یقینی بنائے اور لقمہ اجل بنے افراد کے پسماندگان کے حق میں ایکس گریشیا ریلیف فراہم کی جائے۔ پارٹی کے ضلع صدر رام بن سجاد شاہین نے بھی اس دلدوز سڑک حادثے گہرے صدمے کا اظہار کیا ہے اور لقمہ اجل بنے افراد کے پسماندگان کیساتھ دلی تعزیت کا اظہار کیا ہے۔سابق وزیرخزانہ سیدالطاف بخاری نے چندرکوٹ رام بن سڑک حادثے میں انسانی جانوں کے اتلاف پر گہرے دکھ اورصدمے کااظہار کیا ہے۔ انہوں نے گورنر انتظامیہ پرزوردیاکہ وہ خطے میں ایسے دلدوزحادثات کے بار بار پیش آنے کی روکتھام کیلئے مؤثر اقدام کریں۔انہوں نے ٹریفک قوانین کی خلاف ورزی کرنے والوں جواکثر ان حوادث کاباعث ہوتے ہیں ،کیخلاف کڑی کارروائی کرنے کابھی مطالبہ کیا۔سابق وزیرخزانہ نے مرکزی وزارت ٹرانسپورٹ وشاہراہیںکی  جموں کشمیر میں سڑک حادثات سے متعلق ایک تحقیقی رپورٹ کا بھی حوالہ دیا جس میں کہا گیا ہے کہ تعلیم کی کمی،قانون کی عمل آوری،انجینئرنگ و عمل آوری سروسزکافقدان ریاست میںان حادثات کا موجب ہے ۔ انہوں نے کہا کہ اکثر گاڑیوں کے ڈرائیور پہاڑی علاقوں میں گاڑی چلانے کے قواعدوضوابط کو بالائے طاق رکھ کر ڈرائیونگ سیٹ سنبھالتے ہیں ۔انہوں نے گورنرانتظامیہ پرزوردیا کہ وہ گاڑیوں کی چیکنگ کیلئے پہاڑی خطوں میں مزیداسکارڈ تشکیل دیں تاکہ حادثات کی بڑھتی تعداد پرقابو پایا جائے ۔ گورنر کے مشیر کیول کمار شرما نے رام بن میں رونما ہوئے سڑک حادثہ  پرگہرے رنج و غم کا اظہار کیا ہے۔مشیر موصوف نے غمزدہ کنبوں کے ساتھ ہمدردی کا اظہار کرتے ہوئے ضلع انتظامیہ کو ہدایت دی کہ زخمیوں کو بہتر سے بہتر طبی سہولیات دستیاب رکھی جائیں۔ انہوں نے مرحومین کی ارواح کے ابدی سکون کے لئے دُعا کی۔