دفعہ 35اے کا معاملہ

مینڈھر//آئین ہند کے دفعہ 35اے کے معاملے پر نیشنل کانفرنس اور پی ڈی پی کی جانب سے پنچایتی و بلدیاتی چنائو کابائیکاٹ کرنے کے بعداب پیر پنچال سرپنچ پنچ ایسو سی ایشن نے بھی اس الیکشن میں حصہ نہ لینے کا اعلان کیاہے ۔مینڈھر میں سرپنچ ایسو سی ایشن کے ارکان نے ایک پریس کانفرنس سے خطاب کرتے ہوئے دوٹوک الفاظ میں کہا کہ جب تک مرکزی سرکار کا موقف(35A) کے تئیں واضح نہیںہوتاتب تک پیر پنجال پنچ سرپنچ ایسوسی ایشن کسی بھی الیکشن میں حصہ نہیں لے گی۔اس موقعہ پر بولتے ہوئے شوکت چوہدری نے کہا کہ دفعہ 35Aریاستی عوام خصوصاً آنے والی نسلوں کے مستقبل کا ضامن ہے اور جب تک اس حوالے سے فیصلہ ریاستی عوام کے حق میں نہیں ہوتا تب تک خطہ پیر پنجال کی عوام پنچائتی اور بلدیاتی الیکشن سے مکمل طور پر بائیکاٹ کریں گے۔شوکت چوہدری نے کہا کہ گزشتہ ستر برسوں سے ریاستی عوام کے بنیادی حقوق پر مرکزی حکومت کی طرف سے کئی مرتبہ شب خون ماراگیااوربے جا مداخلت کا یہ سلسلہ ابھی بھی جاری ہے۔اُنہوں نے مرکزی سرکار کو خبردار کرتے ہوئے کہا کہ دفعہ 35Aکے ساتھ کسی قسم کی چھیڑ چھاڑ ریاستی عوام کیلئے ناقابلِ قبول ہوگی اوراس کے سنگین نتائج برآمد ہوں گے۔