دریائے جہلم فلڈ منیجمنٹ پروگرام پروجیکٹ، دوسرے مرحلے کا ڈی پی آر متعلقہ ایجنسی کے سپرد

سرینگر//صحت عامہ ، آبپاشی و فلڈ کنٹرول کے وزیر شام لال چودھری نے کل کمپرہینسو منیجمنٹ پروگرام آف ریور جہلم اینڈ اِٹس ٹریبوٹریز ۔ مرحلہ دوم کے حتمی ڈی پی آر میسرز ویپکاس لمٹیڈ کو باقاعدہ طور پر عمل درآمد کیلئے سپرد کئے ۔ صحت عامہ ، آبپاشی و فلڈ کنٹرول کے وزیر مملکت میر ظہور احمد میٹنگ میں موجود تھے ۔ سال 2014 کے تباہ کُن سیلاب سے ہوئے بھاری نقصان کے بعد ریاستی حکومت دریائے جہلم و اس سے منسلک ٹریبوٹریز پر ایک جامع فلڈ منیجمنٹ پروگرام ترتیب دینے پر غور کر رہی تھی ۔ تکنیکی و پیشہ وارانہ تعمیراتی کاوشیں جسے معروف انجینئروں اور کنسلٹینٹوں نے انجام دیا کی بدولت حتمی تفصیلی پروجیکٹ رپورٹ تیار ہوئی اور انہیں متعلقہ ایجنسی کو عمل درآمد کیلئے سپرد کیا گیا ۔ یہاں یہ بات قابلِ ذکر ہے کہ پروجیکٹ کا پہلا مرحلہ پہلے ہی مکمل کیا گیا ہے اور اس کے بہتر نتایج بھی سامنے آئے ہیں ۔ میتھا میٹیکل ماڈل سٹڈیز کا تفصیلی رپورٹ پاور پوائینٹ پرذنٹیشن کے ذریعے پیش کرتے ہوئے وزراء کو  سنٹرل واٹر اینڈ پاور ریسرچ سٹیشن پونے کی طرف سے منعقد کئے گئے ایم ایم ایس کیس کے تمام پہلو کے بارے میں جانکاری دی گئی ۔ پروجیکٹ سے متعلق دیگر کیسوں کے بارے میں بھی سیر حاصل بحث ہوئی ۔