جے کے پی سی سی پروجیکٹوں میں تاخیر | خرچہ میں اضافہ کا باعث::شرما

سرینگر //جموں وکشمیر پروجیکٹس کنسٹرکشن کارپوریشن کو ایک متحرک ادارہ بنانے کی غرض سے گورنر کے مشیر کے کے شرما نے التواء میں پڑے تمام پروجیکٹوں کو جلد از جلد پایہ تکمیل تک پہنچانے کی ہدایت دی ہے تا کہ عام لوگ ان سے استفادہ کرسکیں۔مشیر موصوف نے یہ ہدایات ایک میٹنگ کے دوران دیں جو تعمیرات عامہ، صحت عامہ، آبپاشی و فلڈ کنٹرول، تعلیم اور صحت محکموں کی کارکردگی اور ان محکموں کی وساطت سے عملائے جارہے پروجیکٹوں کی صورتحال کا جائیزہ لینے کے لئے طلب کی گئی تھی۔میٹنگ میں پروجیکٹوں کو عملانے کیلئے جے کے پی سی سی کے اقدامات کا بھی جائیزہ لیا گیا۔مشیر موصوف نے کہا کہ پروجیکٹوں کی تکمیل میں تاخیر سے ان پر آنے والا خرچہ بڑھنے کا احتمال رہتا ہے۔ انہوں نے جے کے پی سی سی کی وساطت سے عملائے جارہے اُن پروجیکٹوں جو التواء میں پڑے ہیں، کی تکمیل کے لئے نگرانی عمل کو مزید موثر بنانے پر زو دیا۔میٹنگ میں چیف سیکرٹری بی وی آر سبھرامنیم، کمشنر سیکرٹری تعمیرات عامہ، منیجنگ ڈائریکٹر جے کے پی سی سی،ڈیولپمنٹ کمشنر تعمیرات عامہ، ڈائریکٹر پلاننگ تعمیرات عامہ، ڈائریکٹر فائنانس تعمیرات عامہ، چیف انجنیئرکشمیر تعمیرات عامہ، چیف انجنئیر تعمیرات عامہ جموں( ویڈیو کانفرنسنگ کے ذریعے) اور دیگر افسران نے شرکت کی۔کے کے شرما نے التواء میں پڑے پروجیکٹوں کے بارے میں تفصیلات طلب کرتے ہوئے افسروں کو ہدایت دی کہ وہ ٹینڈرنگ کا عمل جلد از جلد شروع کریں۔ انہوں نے متعلقہ افسروں کو اس سلسلے میں ضروری تفصیلات تیار کرنے کی ہدایت دی۔چیف سیکرٹری نے افسروں کو ہدایت دی کہ وہ اگلی میٹنگ کے لئے آڈٹ اکاؤنٹ تیار کریں۔انہوں نے جے کے پی سی سی کے منیجنگ ڈائریکٹر کو سال2019-20 کے لئے تفویض کئے گئے کاموں کے لئے مناسب منصوبہ تیار کرنے کیلئے کہا۔اس سے قبل جے کے پی سی سی کے منیجنگ ڈائریکٹر نے میٹنگ میں بتایا کہ کارپوریشن نے سال2018-19 کے دوران371کام دردست لئے ہیں۔