بی ڈی سی چیئرپرسنوں کا پنچائتی اراکین کے ہمراہ احتجاج

اشتیاق ملک
ڈوڈہ //بجلی کی غیر اعلانیہ کٹوتی کے خلاف بی ڈی سی چیئرپرسن و پنچائتی اراکین نے ڈپٹی کمشنر ڈوڈہ کے دفتر کے باہر احتجاج کرتے ہوئے ضلع و ایل جی انتظامیہ کے خلاف نعرہ بازی کی۔ بی ڈی سی چیئرمین گندنہ سرشاد نٹنو کی قیادت میں مظاہرین نے کہا کہ رمضان المبارک کے مہینے میں بجلی کا کوئی بھی شیڈول نہیں رہا جس کے نتیجے میں عام لوگوں کے ساتھ ساتھ سرکاری و نجی اداروں کا کام کاج بھی ٹھپ رہا۔ نٹنو نے بی جے پی سرکار و انتظامیہ کو ہدف تنقید بناتے ہوئے کہا کہ 370 و 35اے کی منسوخی کے کے بعد یہ نوجوانوں کو روزگار و ترقی کے بلند بانگ دعوے کئے گئے تھے لیکن اسکے بعد مہنگائی آسمان پر پہنچ گئی اوربڑھتی ہوئی بے روزگاری نے تعلیم یافتہ نوجوانوں کو ذہنی پریشانی کا شکار بنایا ہے۔انہوں نے کہا وادی چناب میں سینکڑوں میگاواٹ بجلی پیدا ہوتی ہے لیکن بدقسمتی سے یہاں کی لوگوں کو گھپ اندھیرے میں رکھا جارہا ہے۔انہوں نے کہا حکام سے بہتر بجلی نظام بنانے کے لئے مؤثر اقدامات کرنے کا مطالبہ کیا ہے۔اس دوران انہوں نے ڈپٹی کمشنر کو بھی ایک یادداشت پیش کی اور متعلقہ محکمہ کو جوابدہ بنانے پر زور دیا۔اس موقع پر بی ڈی سی چیئرمین ڈالی اودھیان پور و دیگر کئی بلاکوں سے پنچائتی اراکین نے بھی شرکت کی۔