بانہال میں تودا گرنے سے2مزدور لقمۂ اجل

بانہال+اوڑی //ضلع رام بن میں تحصیل کھڑی کے آڑمرگ علاقے میں اتوار کی صبح کھڑی مہو رابطہ سڑک پر ایک پسی کے گر آنے کی وجہ سے 2 راہ چلتے مزدور لقمہ اجل بنے جبکہ تین دیگر زخمی ہوئے ۔ادھر ادہمپور اور اوڑی میں سڑک حادثات کے دوران مزید 2افراد لقمہ اجل بن گئے۔مقامی لوگوں نے کشمیر عظمیٰ کو بتایا کہ اتوار کی صبح گوجر بستی آڑمرگ کے 5 مزدور راشن خریدنے کی غرض سے کھڑی قصبہ کی طرف نکلے تھے، لیکن تھوڑی دور جانے کے بعد ایک پسی کی زد میں آکر 2افراد ہلاک جبکہ تین دیگر زخمی ہوئے ۔ انہوں نے کہا کہ پسی کی زد میں آئے دو افراد  نیچے بہہ رہے مہو نالے میں جا گرے جس کی وجہ سے  33 سالہ محمد قاسم گوجر ولد غلام حسین بنتھ کی موت موقع پرہی واقع ہوئی جبکہ چار زخمیوں میں سے ایک شدید زخمی61 سالہ محمد عبداللہ گوجر ولد نور عالم بنتھ  نے سرینگر ہسپتال پہنچانے پر دم توڑ دیا ۔ زخمیوں کی شناخت محمد اقبال ولد عطا محمد ، شبیرا حمد ولد بشیر احمد اور نظیرا حمد ولد شبیر احمد گوجر ساکنان آڑمرگ کھڑی کے طور کی گئی ہے۔ مقامی لوگوں نے کشمیر عظمی کو بتایا کہ سب ڈویژن بانہال کی تحصیل کھڑی کے مہو منگِت اور ترنہ ترگام بزلہ کے درجنوں دیہات  بھاری برفباری کی وجہ سے پچھلے دو مہینے سے بجلی ، سڑک اور رسل و رسائل کے دیگر رابطوں سے مسلسل منقطع ہیں جس کی وجہ سے لوگوں کی زندگی دشوار بنی ہوئی ہے۔ادھر جموں سے سرینگر کی طرف آر ہی ایک تویرا گاڑی زیر نمبر JK11/6419ٹکری ادھم پور میں حادثے کاشکار ہوئی جس دوران گاڑی میں سوار3افرادبری طرح زخمی ہوئے۔ ان میں سے بعد میں ایک مسافر36سالہ فیصل رشید ولد عبد الرشید ساکن بارہمولہ زخموں کی تاب نہ لا کر دم توڑ بیٹھا ۔ ادھر شمالی کشمیر کے اوڑی سے پیر لا کی طرف آرہی ایک ماروتی کارسڑک سے لڑھک کر حادثے کی شکار ہو ئی جس  دوران گاڑی میں سوار 3افرادزخمی ہوئے۔ بعد میں ان میں سے ایک زخمی چل بسا۔