ایک دن کی راحت کے بعد پٹرول اور ڈیزل کی قیمتوں میں اضافہ کا سلسلہ پھر شروع

نئی دہلی// مالی سال 2022-23 کے پہلے دن راحت کے بعد ملک میں آئل مارکیٹنگ کمپنیوں نے ہفتہ کو پٹرول اور ڈیزل کی قیمتوں میں اضافہ کا سلسلہ پھر شرورع کیا۔ تیل کمپنیوں نے گزشتہ 12 دنوں میں ایندھن کی قیمتوں میں 10 بار اضافہ کیا ہے۔
 
قومی راجدھانی دہلی میں آج پٹرول اور ڈیزل کی قیمتوں میں 80-80 پیسے فی لیٹر کا اضافہ کیا گیا۔ اس اضافے کے بعد دہلی میں پٹرول 102.61 روپے فی لیٹر اور ڈیزل 93.87 روپے فی لیٹر فروخت ہو رہا ہے۔
 
اس کے ساتھ ہی ممبئی میں پٹرول اور ڈیزل کی قیمت 85-85 پیسے بڑھ کر بالترتیب 117.57 روپے اور 101.79 روپے فی لیٹر ہو گئی ہے۔
 
پٹرول اور ڈیزل کی قیمتوں میں 137 دنوں کے استحکام کے بعد اضافہ ہونا شروع ہو گیا ہے۔
 
عالمی منڈی میں خام تیل کی قیمتوں میں مسلسل اتار چڑھاؤ آرہا ہے۔ لندن برینٹ کروڈ آج 104.39 ڈالر فی بیرل پر ٹریڈ کر رہا ہے اور یو ایس کروڈ 0.86 فیصد گھٹ کر 99.42 ڈالر فی بیرل پر ہے۔
 
قابل ذکر ہے کہ پٹرول اور ڈیزل کی قیمتوں کا روزانہ جائزہ لیا جاتا ہے اور اسی کی بنیاد پر نئی قیمتیں روزانہ صبح 6 بجے سے لاگو ہوتی ہیں۔
 
آج ملک کے چار بڑے میٹرو میں پٹرول اور ڈیزل کی قیمتیں اس طرح ہیں:
 
میٹرو….پٹرول….ڈیزل (روپے فی لیٹر)
دہلی…………102.61..93.87
کولکتہ ……112.19…….97.02
ممبئی …………117.57……101.79
چنئی …………… 108.21……….98.28