اگر ہماچل میں حقوق کی حفاظت مقدس ہے تو جموں میں کیوں نہیں: رانا

 نگروٹہ//نیشنل کانفرنس کے صوبائی صدر دیویندر سنگھ رانا نے بی جے پی رہنماؤں کو ہماچل پردیش میں زمینوں اور ملازمتوں کے تحفظات کے بارے میں یاد دلاتے ہوئے کہا کہ جموں میں جاری ضلعی ترقیاتی کونسل کے انتخابات کے لئے انتخابی مہم چلاتے وقت وہ یہاں کے پشتینی باشندوں کوحقوق سے محروم رکھنے کا جواز پیدا کرنے کیلئے ان حقائق کو آسانی سے چھپا رہے ہیں۔رانا نے نگروٹہ اورڈنسال سے نیشنل کانفرنس کے امیدواروں کی حمایت میں انتخابی جلسوں سے خطاب کرتے ہوئے کہا "بی جے پی کی یہ مخصوص منافقت ہے کہ وہ اپنے چھوٹے چھوٹے سیاسی ایجنڈے کو آگے بڑھانے کے لئے  رائے رعامہ کو گمراہ کرتی ہے۔"تاہم صوبائی صدر نے بی جے پی کو مشورہ دیا کہ وہ جموں کے سیاسی طور پر فکرمند افراد کی بے چینی کی جانچ نہ کریں جو سب سے بڑی ڈوگرہ ریاست کے لوگوں کی شناخت کو پامال کرنے کے ان کے کھیل منصوبے کو سمجھ چکے ہیں ، جسے انہوں نے دو مرکزی خطوں کی حیثیت سے تقسیم کیا ہے۔ جموں کے دم بخودلوگ اپنے آپ کو محروم اور پسماندہ محسوس کررہے ہیں اور ان کی نفسیات اور فخر کو پہنچنے والے نقصان ناقابل تلافی ہے۔ انہوں نے مزید کہا کہ حالیہ اقدامات جموں کو سب سے زیادہ متاثر کرنے والے ہیں۔ رانا نے بی جے پی قائدین سے کہا کہ وہ جموں کے لوگوں کو ہماچل پردیش اور متعدد دیگر ریاستوں میں دستیاب چیک اور بیلنس کو مدنظر رکھتے ہوئے ڈومیسائل جیسے ناجائز فیصلوں کے بارے میں راضی کریں۔ان کا کہناتھا کہ اگر ہماچل میں لوگوں کے حقوق کی حفاظت مقدس ہے تو جموں میں ان کا کوئی ثمر کیسے نہیںہوگا؟ یہ سراسر منافقت ہے جو بی جے پی کے ارادے کو بے نقاب کرتی ہے ، جس نے اپنے آپ کو جموں کے مسیحا کے طور پر پیش کیا ہے‘‘۔رانا کے مطابق جموں کے جائز مفادات کو جو نقصان پہنچا ہے وہ بے مثال ہے اور ہائپر نیشنل ازم کی لپیٹ میں ایسا کرنا جموں کی حب الوطنی کی توہین ہے ، جو غیر مقبول سیاسی فیصلوں کی وجہ سے سب سے زیادہ نقصان اٹھا رہے ہیں۔ انہوں نے بی جے پی کو لمبے لمبے وعدے کرنے پر یہ کہہ کر لتاڑا کہ وہ اچھی طرح جانتے  ہیں کہ ان پر عمل نہیں کیا جائے گا۔ انہوں نے مزید کہا کہ پچھلے چھ برسوں میں پارٹی کا ٹریک ریکارڈ خاصا مایوس کن رہا ہے کیونکہ جموں کو دیوار کی طرف دھکیل دیا ہے اور ترقی کا عمل رک چکا ہے جبکہ معاشی سرگرمیاں سب سے کم نکتہ پر ہیں۔صوبائی صدر نے کہا کہ بی جے پی کے غلط فیصلوں اور غلط پالیسیوں پر جموں کے لوگوں میں غم و غصہ بڑھتا جارہا ہے۔ یہ یقینی طور پر موجودہ انتخابات میں انکے امیدواروں کی سب سے بڑی شکست کی صورت میں سامنے آئے گا۔ انہوں نے کہا کہ نیشنل کانفرنس کے امیدواروں کی عوام کی حمایت کے ساتھ بڑے مارجن سے کامیابی حاصل ہوگی