آنگن واڑی ورکروں کا احتجاج بدستورجاری

 
پونچھ//پونچھ میںآنگن واڑی کارکنوں اور ہیلپروں کا احتجاج بدستور جاری ہے۔اس دوران فوارہ گارڈن پونچھ میں پچھلے ایک ماہ سے دھرنا دے رہی خواتین نے ایک احتجاجی ریلی نکال کر کے حکومت سے مطالبات پورے کرنے کا مطالبہ کیا۔ان ورکروں نے حکومت مخالف نعرے لگا کر اپنی آواز حکمرانوں کے کانوں تک پہنچانے کی کوشش کی۔اس احتجاجی مظاہرے کے دوران مقررین نے خطاب کرتے ہوئے کہا کہ آنگن واڑی کارکنان اور ہیلپروں نے ہمیشہ لگن اور ایمانداری سے اپنے فرائض انجام دیئے ہیں لیکن حکومتوں نے ان کے ساتھ کبھی انصاف نہیں کیا۔انہوں نے ایک بار پھر اپنی مانگوں کو دہراتے ہوئے پینشن اسکیم لاگو کرنے، ریٹارمنٹ پر کارکنوں کو چار لاکھ اور ہیلپروں کو دو دو لاکھ روپے دینے اور سب سے اہم تنخواہوں میں اضافہ کی مانگ کی۔اس احتجاجی کے دوران پونچھ کی سیول سوسائٹی کے ممبران اور سماجی تنظیموں کے کارکنان نے بھی آنگن واڑی کارکنان کے مطالبات کو جائز ٹھہراتے ہوئے انھیں جلد از جلد پورا کرنے کی حکومت سے اپیل کی۔