اردو افسانہ:روایت اور ماہیت

 سرینگر// نظامت فاصلاتی تعلیم کشمیر یونیورسٹی کے زیر اہتمام ساتواں حامدی کاشمیری یاد گاری سالانہ اردو خطبہ بعنوان’’اردو افسانہ:روایت اور ماہیت‘‘منعقد کیا گیا ۔یہ یاد گاری سالانہ خطبہ قومی کونسل فروغ برائے اردو زبان کے اشتراک سے نظامتِ فاصلاتی تعلیم کے کانفرنس ہال میں عمل میں لایا گیا ۔ پروگرام کے مقررپروفیسر قدوس جاوید (سابق صدر شعبہ اردو ،جامعہ کشمیر )نے اپنا آن لائن توسیعی خطبہ پیش کیا۔ پروفیسر موصوف نے اردو افسانے کے حوالے سے کانفرنس ہال میں بیٹھے سامعین و حاضرین کو اپنے بصیرت افروز خطبے سے نوازا۔پروگرام کی صدارت پروفیسر غیاث الدین (صدر شعبہ ،اردو مرکزی جامعہ کشمیر )نے کی۔ ان کے ہمراہ پروفیسر طارق احمد چستی(ناظمِ اعلیٰ نظامت ِ فاصلاتی تعلیم ،جامعہ کشمیر ) بھی شاملِ محفل رہے۔پروفیسر طارق احمد چستی نے تمام مہمانان اور طلبہ و طالبات کا شکریہ ادا کرتے ہوئے کہا کہ ایسے پروگرام صرف طلبہ و طالبات کی صلاحیت سازی کے لیے عمل میں لائے جاتے ہیں۔اس توسیعی خطبے کو سننے کے لیے مختلف شعبہ جات سے اساتذہ تشریف لائے تھے جن میں میں پروفیسر ناصر مرزا (شعبہ صحافت)ڈاکٹر نصرت جبین(مرکزی جامعہ، کشمیر) پروفیسر ارشاد ضیا ء (چیف لابرئرین، جامعہ کشمیر ، فروفیسر صلاح الدین ٹاک (شعبہ عربی )پروفیسر محفوزہ جان (صدر شعبہ ،کشمیری )توسیعی خطبے کے بعد فاضل مقرر سے طلبہ و طالبات اور ریسرچ اسکالرس نے سوال بھی کیے ۔جن کو اطمینان بخش جوابات بھی سننے کو ملے ۔اس پروگرام میں بیٹھے مہمانان نے اپنے حیالات کا اظہار بھی کیا۔