۔ 1931شہد ائے کشمیر13جولائی| تاریخ کشمیر میں قربانیاں ناقابل فراموش : مین سٹریم

سرینگر//مین سٹریم جماعتوں نے13جولائی 1931کے شہداء کی قربانیاں ناقابل فراموش ہیں اور انہیں سنہرے حروف میں لکھاجاتا رہے گا۔۔  پی ڈی ایف چیئرمین حکیم محمدیاسین نے کہا ہے کہ ریاست کے ان جیالے شہدا نے عوامی حقوق کی پامالیوں اور عوام پر جبرو استحصال کے خلاف اپنی آواز بلند کر کے قوم کیلئے قیمتی جانوں کا نذرانہ پیش کیا۔ انہوں نے کہا کہ کشمیری قوم کے عزت و ناموس کی بالادستی کیلئے شہداء کی قربانی کو ریاست کی تاریخ میں سنہرے حروف سے لکھا جاتا رہے گا۔عوامی اتحاد پارٹی سربراہ انجینئر رشید نے شہداء کو خراج عقیدت ادا کرتے ہوئے یہ بات دہرائی 13جولائی کے شہدا کے خواب کو تب تک پورا نہیں کیا جا سکتا جب تک نہ کہ کشمیر کا مسئلہ انصاف کی بنیادوں پر حل ہو ۔انجینئر رشید نے مین اسٹریم جماعتوں کے دوغلے پن کی مذمت کرتے ہوئے کہا ــ’’کیا یہ حقیقت نہیں کہ 13جولائی 1931کے دن جب نہ ہندوستان خود مختا

لنگیٹ ہندوارہ میں پانی کی عدم دستیابی کیخلاف احتجاج

کپوارہ// یاورلنگیٹ ہندوارہ میں پینے کے پانی کی عدم دستیابی کیخلاف لوگوں نے احتجاجی مظاہرے کئے۔جمعہ کی صبح یاروکے مردوزن گھرو ں سے باہر آئے اور احتجاج کیا ۔خواتین کے ہاتھو ں میں خالی مٹکے تھے اور لنگیٹ میں محکمہ آب رسانی کے خلاف احتجاج کیا ۔لوگو ں نے الزام عائد کیا کہ یارومیں عرصہ دراز سے پانی کی سخت قلت ہے اور مذکورہ محکمہ ہاتھ پر ہاتھ دھرے بیٹھے ہیں ۔لوگو ں نے کہا کہ انہو ں نے پانی کی قلت کو لیکر محکمہ کے اعلیٰ حکام کے ساتھ رابطہ کیا لیکن آ ج تک مشکلات کا ازالہ نہیں کیا گیا اور لوگ پینے کے پانی کی ایک ایک بوند کے لئے تر س رہے ہیں ۔احتجاجیوں نے کہاکہ یارومیں ایک پرانی واٹر سپلائی سکیم ہے لیکن ا س سے پورے علاقہ کو پینے کا صاف پانی فراہم نہیں کیا جاتا ہے جس کے بعد محکمہ آب رسانی نے کئی سال قبل ایک نئی سکیم کو منظوری دی تاہم ابھی تک سکیم پایہ تکمیل نہیں پہنچ گئی ہے اور نتیجے کے طور پو

زم زم پورہ بارہمولہ میں پانی کی شدید قلت

بارہمولہ //زم زم پورہ زنڈفرن نارواو میں گزشتہ کئی ہفتوں سے پینے کی کی شدید قلت ہے جس کے نتیجے میں عوام کو سخت مشکلات کا سامنا کرنا پڑرہا ہے۔ لوگوں کا کہنا ہے کہ پانی کی عدم دستیابی سے وہ گونا گوں مشکلات جھیل رہے ہیں۔لوگوں نے محکمہ پی ایچ ای پر غفلت شعاری اور لاپرواہی کا الزام عائد کرتے ہوئے کہاکہ محکمہ کے پانی کی سپلائی کرنے میں ناکام ہے ۔لوگوںنے کہاکہ محکمہ پی ایچ ای کی طرف سے اگرچہ علاقے میں لاکھوں روپے کی لاگت سے ایک واٹر سپلائی اسکیم پرکام شروع کیا گیا لیکن فلٹریشن فلانٹ پر سست رفتاری سے کام جاری ہے اور دس برس گزر چکے ہیں تاہم ابھی بھی وہ نامکمل ہے جس سے ہزاروں نفوس پر مشتمل آبادی کو 21 ویں صدی میں بھی پینے کا پانی میسر نہیں ہے ۔ انہوں نے کہا کہ اگر چہ لوگوں نے کئی مرتبہ متعلقہ محکمہ کے آفسران کو اس معاملے میں مطلع کیا تھا تاہم اس کی طرف کوئی توجہ نہیں دی گئی ۔ لوگوں نے سرکار اور

شاہراہ پرٹریفک قدغن،سوپور میں میوہ تاجروں کا احتجاجی دھرنا

سرینگر//سوپور میں میوہ تاجروں نے انتظامیہ کی جانب سے سرینگر جموں شاہراہ پرعام ٹریفک کی نقل وحرکت پر پابندی کے خلاف احتجاجی دھرنا دیکرپابندیوں کو فوری طور ہٹانے کا مطالبہ کیا ہے ۔احتجاج میں شامل لوگوں نے ہاتھوں پر پلے کارڑ اٹھائے تھے جن پر یاتریوں کے حق میں اور پابندیوں کے خلاف نعرے درج تھے ۔ شمالی کشمیر کے سوپور میں جمعہ کے روز فروٹ گروئورس نے مقامی فروٹ منڈی میں سرینگر۔جموں قومی شاہراہ پر عام گاڑیوں کی نقل وحرکت پر پابندیوں کیخلاف احتجاجی دھرنا دیا۔احتجاج کے دوران مظاہرین نے پلے کارڈ اور بینر اٹھارڑ ہاتھوں میں اٹھائے تھے جن پر امر ناتھ یاتریوں کے حق میں استقبالی نعرے اور شاہراہ پر پابندیوں کیخلاف احتجاجی نعرے درج تھے۔مظاہرین کا کہنا تھا کہ شاہراہ پر پابندیوں سے میوہ تاجروں کو شدید نقصان کا سامنا کرنا پڑ رہا ہے کیونکہ وادی سے باہر جانے والا اکثر میوہ وقت ضائع ہونے کی بنا پر راستے میں ہ

کپوارہ میں محکمہ دیہی ترقی کا انتظامی ڈھانچہ ٹھپ | 14بلاک افسران سے خالی

کپوارہ//سرحدی قصبہ ترہگام میں لوگو ں نے بلاک ڈیولپمنٹ آفیسر کی عدم موجودگی کے خلاف محکمہ دیہی ترقی کے خلاف زور دار احتجاجی مظاہرے کرتے ہوئے دفتر کو مقفل کیا ہے ۔جمعہ کو لوگو ں کی ایک بڑی تعداد جن میں سر پنچ اور پنج بھی شامل تھے اپنے گھرو ں سے باہر آئے اور ترہگام چوک میں جمع ہوتے ہوئے بلاک ڈیو لپمنٹ آفس پہنچ گئے اور وہا ں بی ڈی او کی عدم موجودگی کے خلاف احتجاج کیا جبکہ ان کے دفتر کو مقفل کیا ۔لوگو ں کا کہنا ہے کہ ترہگام میں گزشتہ6مہینو ں سے بلاک ڈیو لپمنٹ آفیسر کی کرسی خالی پڑی ہے ۔لوگو ں کا مزید کہنا ہے کہ بلاک ڈیو لپمنٹ کی کر سی خالی ہونے کے بعد بی ڈی او قادر آ باد کو ایڈیشنل چارج دیا گیا لیکن وہ بھی نہیں آتے ہیں جس کی وجہ سے ترقیاتی کام بری طر ح متا ثر ہے ۔سرپنجو ں اور پنچو ں کا کہنا ہے کہ وہ ترقیاتی کامو ں کے معاملہ کے حوالہ سے روز بلاک دفتر ترہگام کا چکر کا ٹتے ہیں لیکن آفیس

کانسپورہ بارہمولہ میں گندگی اور غلاظت کے ڈھیر

بارہمولہ // کانسپورہ بارہمولہ میں کئی اہم مقامات پر گندگی اور غلاظت کے ڈھیرجمع ہونے کے خلاف لوگوں نے جمعہ کو سرینگر مظفرآباد شاہراہ پر جمع ہوکر احتجاجی دھرنا دیا جس کی وجہ سے ٹریفک کی نقل و حمل متاثر ہوئی ۔احتجاجی لوگوں کا کہنا ہے کہ کانسپورہ کے کئی اہم مقامات پر غلاظت کے ڈھیرجمع ہیں اور ان مقامات کو باضابطہ طو پرڈمپنگ ائریا میں تبدیل کیا گیا ہے۔ لوگوں نے کہا کہ اگر چہ یہ شکا یات کئی بار انتظامیہ اور میونسپل کمیٹی کے افسران کی نوٹس میں لائی گئیں تاہم کوئی دھیان نہیں دیاگیا ۔ لوگوں کاکہنا ہے کہ گندگی کی وجہ سے قصبے کے ہرسوعفونت پھیل گئی ہے جس کے نتیجے میں لوگوں اور دوکانداروں کے ساتھ ساتھ طلاب کو سخت مشکلات درپیش ہیں ۔ لوگوں نے انتظامیہ اور میونسپل کمیٹی کے افسران سے مطالبہ کرہے تھے کہ کہ وہ ترجیحی بنیادوں پر صفائی عمل میں لائیں بصورت دیگر انہیں دوبارہ احتجاج کرنا پڑے گا ۔  

بھنگ کے خلاف عوامی جنگ | پلوامہ میں مقامی نوجوان سرگرم، 50کنال اراضی پربھنگ تباہ

پلوامہ//منشیات کے خلاف جہاں ایک طرف سرکاری اور غیر سرکاری سطح پرمہم جاری ہے وہیں اب عوامی سطح پر بھی اس مہم میں نوجوان آگے آرہے ہیں ۔ایک طرف جہاں غیر سرکاری انجمنوں کی طرف سے سمینار اور مباحثے ہورہے ہیں وہیں جنوبی کشمیر کے پلوامہ کے ایک گائوں میں نواجوانوں نے رضا کاررانہ طور پر بھنگ کی فصل کو تباہ کرنے کے ساتھ ساتھ صفائی مہم چلائی ۔ پلوامہ ضلع کے تملہ ہال علاقے کے نوجوانوں اور معزز شہریوں نے علاقے میں قریب 50کنال اراضی پر پھیلی بھنگ کو ضائع کیا۔مقامی لوگوں نے بتایا کہ اگرچہ سرکاری اور غیر سرکاری اداروں کی طرف سے لوگوں کو منشیات سے ہورہی تباہی کی جانکاری سیمنار اور جانکاری کیمپ کا انعقاد کرکے دی جارہی ہے لیکن اس کیلئے زمینی سطح پر کام کرنے کی ضرورت ہے۔اسی بات کو مد نظر رکھ کرتملہ ہال میں مقامی اوقاف کمیٹی اور شاہورہ ویلفیئر فورم نے مہم چلائی اور نہ صرف قبرستان بلکہ سڑکوں اور دیگر جگہو

کنگن میں کئی سڑک حادثات،متعدد زخمی

کنگن//گنہ ون گنڈ میں سڑک کے ایک حادثے میں ایک خاتون سمیت افراد ذخمی ہوگئے ۔کشمیر عظمیٰ کو ملی تفصیلات کے مطابق گڈری بل گنہ ون گنڈ میں ایک کار زیر نمبر اور مخالف سمیت سے آرہی سوفٹ کار زیر نمبرJK01H, 9053کے درمیان شدید ٹکر ہوئی جس کے نتیجے میں حکیم خان افیف احمد، جازم احمد خان، ساکن انت ناگ، منظور احمد ولد غلام محمد، تبسم زوجہ منظور احمد، ساکن الہی باغ صورہ، زخمی ہوگئے جن کو سب ڈسٹرک ہسپتال کنگن منتقل کیا گیا۔ادھرپاور ہاؤس کنگن کے نزدیک ایک تویرا گاڈی زیر نمبرJK03E, 2932 نے رائیس احمد میر ولد غلام محمد ساکن دربہ ٹینگ پرنگ کنگن کوزخمی ہوگیا ادھر کنگن مارکیٹ میں ایک تویرا زیر نمبر JK07, 3580نے ایک سکوٹی زیر نمبرJK01AG, 5433 کو ٹکر مار دی جس کے نتیجے میں سکوٹی پر سوار عادل احمد لون، سترینہ کنگن محمد شاکر لون ساکن کنگن ذخمی ہوگئے جن کو علاج ومعالجہ کے لئے سب ڈسٹرک ہسپتال کنگن منتقل کیا گیا

سلطان پورہ پٹن میں کمسن بچہ غرقآب

بارہمولہ+سوناواری //ضلع بارہمولہ کے سلطان پورہ پٹن علاقے میں جمعہ کو اُس وقت کہرام مچ گیا جب ایک سات سالہ لڑکا دریائے جہلم میں نہانے کے دوران غرقآب ہوا ۔ معلوم ہوا ہے کہ فیضان احمد مرزائی ولد محمد یوسف مرزائی ساکنہ سلطان پورہ اپنے ساتھیوں کے ساتھ نزدیکی دریاے جہلم میں نہا رہا تھا اس دوران پانی کے تیز بہا و سے وہ اپنے آپ کو بچا نہ سکا اور ڈوب گیا ۔اگر چہ اس کے ہمراہ ساتھوں نے چیخ و پکار کی تاہم جب تک لوگ جائے وقوعہ پر پہنچے تب تک مذکورہ لڑکا دریا کے تیز بہا و میںبہہ گیا ۔یہ خبر پھیلتے سینکڑوں کے تعداد میں مرد و زن بشمول اس کے گھر والے سینہ کوبی کرتے ہوئے وہاں پر پہنچے اور ڈوبنے والے لڑکے کو دریائے جہلم سے برآمد کیا ۔جس کے بعد اگر چہ فیضان کو سب ضلع اسپتال سمبل پہنچا یا گیا تھا تاہم ڈاکٹروں نے اُسے مردہ قرار دیا ۔اس دوران جونہی سات سالہ فیضان کی لاش کو اُن کے آبائی گائوں پہنچائی گئی

مزید خبریں

پالی تکنیک کالجوں کی تعمیر |  کالج عمارتوں کی تکمیل کیلئے نومبر 2019ء کی ڈیڈ لائن مقرر سر ینگر//گورنر کے مشیر خورشید احمد گنائی نے یہاں ایک میٹنگ طلب کر کے ریاست میں پالی تکنیک کالجوں کے تعمیراتی کام کا جائزہ لیا اور عمل آوری ایجنسیوں کو یہ پروجیکٹ نومبر 2019ء تک مکمل کرنے کی ہدایت دی۔میٹنگ میں جے کے پی سی سی کے منیجنگ ڈائریکٹر ایم راجو ، تکنیکی تعلیم کے سیکرٹری زبیر احمد ،محکمہ ایڈیشنل سیکرٹری نیرج کمار ، ڈائریکٹر ٹیکنیکل ایجوکیشن ڈاکٹر روی شنکر شرما، چیف انجینئر تعمیرات عامہ سمیع عارف ، چیف انجینئر تعمیر ات عامہ جموں ناصر گونی اور جنرل منیجر جے کے پی سی سی ہر کیول سنگھ کے علاوہ دیگر افسران بھی موجود تھے۔میٹنگ کے دوران مشیر موصوف نے ریاست میں تعمیر کئے جارہے ہر پالی تکنیک کالج پر جاری کام کی پیش رفت کے بارے میں تفصیلات طلب کیں۔ انہیں بتایا گیا کہ 18کالجوں میں سے 10کا کام جمو

تازہ ترین