تازہ ترین

بھارت کی میزبانی میں سارک کی ویڈیوکانفرنس میں پاکستان کی عدم شرکت

سرینگر// پا کستانی دفتر خارجہ نے بتایا ہے کہ پاکستان نے بھارت کی میزبانی میں ہونے والے کووِڈ 19 وباء پر خطے کے تجارتی عہدیداروں کی ویڈیو کانفرنس میں اس لیے شرکت نہیں کی کیوں کہ اس کا انتظام جنوبی ایشیا ئی علاقائی تعاون تنظیم (سارک) نے نہیں کیا تھا۔دفتر خارجہ نے پاکستان کی عدم موجودگی کی وضاحت دیتے ہوئے کہا کہ ایسی سرگرمیاں مثلاً آج کی تجارتی عہدیداروں کی ویڈیو کانفرنس صرف اس صورت میں موثر ہوسکتی ہے کہ اس کی سربراہی سارک سیکریٹریٹ کرے۔دفتر خارجہ کے بیان کے مطابق ،’’چونکہ آج کی اس ویڈیو کانفرنس میں سارک سیکریٹریٹ شریک نہیں تھا، اس لیے پاکستان نے شرکت نہ کرنے کا فیصلہ کیا‘‘۔خیال رہے کہ عالمی وبا کووِڈ19 کے بین الاعلاقائی تجارت اور سفری پابندیوں پر پڑنے والے اثرات پر بات چیت کے لیے پاکستان کے سوا تمام سارک ممالک کے تجارتی عہدیداروں کی ایک ویڈیو کانفرنس  منعقد

پاکستان کا بھارت کاکواڈکاپٹر گرانے کادعویٰ

سرینگر//فضائی حدود کی خلاف وزری کیلئے پاکستان نے حدمتارکہ کے نزدیک بھارتی کواڈ کاپٹر کو مار گرایا ۔ سی این آئی کے مطابق پاکستانی فوج کے شعبہ تعلقاتِ عامہ (آئی ایس پی آر)کے مطابق حدمتارکہ کے ساتھ سنکھ سیکٹر میں بھارتی کواڈ کاپٹر نے فضائی حدود کی خلاف ورزی کی اور پاکستانی فوج نے فوری جوابی کارروائی کرتے ہوئے بھارتی جاسوسی ڈرون کو مار گرایا۔ آئی ایس پی آر کا کہنا ہے کہ بھارت کا ڈرون فضائی حدود کی خلاف ورزی کرتے ہوئے پاکستانی حدود میں 600 میٹر تک اندر آ گیا تھاجوپاکستان اور بھارت کے درمیان جنگ بندی سے متعلق 2003 کے معاہدے کی خلاف ورزی ہے۔گزشتہ سال پاک فوج نے بھارت کے تین ڈرون مار گرائے ۔جس میںپہلا کواڈ کاپٹر سال کے پہلے دن یعنی یکم جنوری کو باغ سیکٹر میں گرایا گیا تھا۔بعدازاں ایک روز بعد ہی بھارت نے دوبارہ پاکستانی حدود کی خلاف ورزی کی جسے پاک فوج نے ناکام بناتے ہوئے ستوال سیکٹر

کرونا وائرس | ملک میں181ہلاکتیں،5689متاثر

نئی دہلی// ملک میں کوروناوائرس (کووڈ 19) متاثرین کی تعداد میں اضافہ کے ساتھ ہی یہ5689تک پہنچ گئی ہے اوروائرس سے اب تک 181افراد ہلاک ہوچکے ہیں۔وزارت صحت کی جانب سے بدھ کوجاری تازہ اعداد وشمارکے مطابق کوروناوائرس ملک کی 31 ریاستوں اورمرکزکے زیرانتظام علاقوں میں پھیل چکا ہے ۔ گزشتہ 24 گھنٹوں کے دوران کورونا وائرس کے 773 نئے کیسز سامنے آنے کے ساتھ ہی اب تک اس کے 5689 کیسز کی تصدیق ہو چکی ہے ۔ ان میں 65غیرملکی مریض بھی شامل ہیں۔ کوروناوائرس سے گزشتہ 24 گھنٹے کے دوران 35 مزیدافرادکی موت کے ساتھ ہی مرنے والوں کی تعداد 181ہو چکی ہے ۔ ابھی تک کورونا متاثرین میں سے 411 لوگ صحت مند ہو چکے ہیں۔منگل کے مقابلے بدھ کومتاثرین اورمرنے والوں کی تعداد میں نمایاں اضافہ ہوا ہے ۔وزارت صحت کی جانب سے جاری تازہ فہرست کے مطابق ملک میں کورونا وائرس سے سب سے شدید متاثرمہاراشٹرہے ،جہاں متاثرین کی تعداد 1135ہو چک

کورونا وائرس سے لڑنے والے صحت اہلکار جنگی سپاہی ہیں

نئی دہلی// سپریم کورٹ نے بدھ کو جہاں کورورنا وائرس ‘کووڈ 19'’ کی وبا سے لڑنے والے صحت اہلکاروں سے کو ‘جنگ باز’ کہہ کر انہیں تحفظ کئے جانے کی ضرورت ظاہر کی، وہیں مرکز نے واضح کیا کہ کسی بھی صحت اہلکاروں کی تنخواہ بھتے کاٹنے کی کوئی ہدایت نہیں دی گئی ہے ۔جسٹس اشوک بھوشن اور جسٹس ایس رویندر بھٹ کی بینچ نے ناگپور کے ڈاکٹر جیریل بنیت، ڈاکٹر آروشی جین اور وکیل امت ساہنی کی ایک ہی طرح کی درخواستوں پر مشترکہ طور پر سماعت کرتے ہوئے کورونا وبا سے بہادری سے نمٹنے والے صحت اہلکاروں کو جنگ باز (واریرس) قرار دیا۔جسٹس بھوشن نے کہاکہ کورورنا عالمی وبا سے مقابلہ کرنے والے ڈاکٹر، پیرا میڈیکل عملے اور دیگر متعلقہ اہلکار ‘جنگ باز’ہیں، جن کی حفاظت کی جانی چاہئے۔سالیسٹر جنرل تشار مہتہ نے بینچ کو یقین دلایا کہ صحت ملازمین اور دیگر ملازمین کی حفاظت کو یقینی بنانے کے لئ

ہنومان جینتی | وزیراعظم اور وزیر داخلہ کی عوام کو مبارک باد

نئی دہلی// وزیراعظم نریندر مودی، وزیر داخلہ امت شاہ اور وزیر دفاع راج ناتھ سنگھ نے ہنومان جینتی کے موقع پر ملک کے عوام کو مبارکباد اور نیک خواہشات پیش کیں۔مسٹر مودی نے ٹوئیٹ کرکے کہا ‘‘ہنومان جینتی کے مبارک موقع پر ملک کے عوام کو دلی مباک باد۔ عقیدت، طاقت، خود کو وقف کرنے اور ڈسپلن کی علامت پون پتر کی زندگی ہمیں ہر بحران کا سامنا کرنے اور اس پر قابو پانے کی تحریک دیتی ہے ’’۔مسٹر امت شاہ نے ٹوئٹ کیا ‘‘پورے ملک کو ہنومان جینتی کہ دلی مبارکباد’’۔   

سکم میں زلزلے کے جھٹکے

گنگٹوک//سکم کے مشرقی حصے میں نیم شب کے بعد زلزلے کے جھٹکے محسوس کئے گئے ۔ریختر پیمانے پر زلزلے کی شدت3.2 درج کی گئی ہے ۔ہندوستانی محکمہ موسمیات کے ڈائریکٹر جی این راہا نے کہا کہ مشرقی سکم میں آئے زلزلے کا مرکز 27.3ڈگری شمالی عرض البلد اور 88.6ڈگری مشرقی طول البلد پانچ کلومیٹر کی گہرائی میں واقع تھا۔زلزلے کے جھٹکے نیم شب کے بعد محسوایک بج کر 33منٹ پر محسوس کئے گئے ۔زلزلے کی وجہ سے کسی قسم کے جان و مال کا نقصان نہیں ہوا۔یواین آئی  

مرکزکا عوام کے نام پیغام

سرینگر//مرکزنے ایڈوائزری جاری کرکے  ملک بھر کے لوگوں سے کہا ہے کہ وہ کوروناوائرس کے پھیلائوکیلئے کسی فرقے یاعلاقے کو ذمہ دار قرار نہ دیں اور نہ ہی اس سے متاثرہ یاقرنطین میں رکھے گئے افرادکی شناخت اور نہ ہی ان کے رہائشی علاقے کانام سماجی رابطے کی سائٹوں پرظاہر کریں۔ایڈوائزری میں کہا گیا ہے کہ سماج میں پھیلی متعدی بیماریوں کے دوران خوف اور پریشانی پھیل جاتی ہے لیکن اس دوران لوگوں یا فرقوں کوذمہ دارقراردینے سے سماج میں تعصب،تنائو ،دشمنی اورغیرضروری سماجی انتشار پیداہوتا ہے۔ایڈوائزری میں بتایاگیا ہے کہ خوف اور غلط اطلاعات کی وجہ سے کوروناوائرس کاشکار افراد،اوراس وبائی بیماری کاتدارک کرنے میں صف اول پرکام کررہے طبی عملے کے ساتھ بھی امتیازی سلوک کیاجاتا ہے ،حتی کہ کورونا کی بیماری سے روبہ صحت ہوئے افراد کے ساتھ بھی ایسا ہی سلوک کیاجاتا ہے ۔اس کے علاوہ سماجی رابطے کی سائٹوں پرغلط اطلاعات

ملک میں کورونا وائرس متاثرین کی تعداد 3577 ،اموات 83

نئی دہلی// (یواین آئی) ملک کی مختلف ریاستوں میں ہفتے کے روز سے اتوار کی دیر شام تک کورونا وائرس کے 675 نئے کیسز سامنے ا?نے کے ساتھ ہی متاثرین کی تعداد بڑھ کر 3577 پہنچ گئی ہے جبکہ مزید 15 اموات کے ساتھ ہلاکتوں کی تعداد 83 ہو چکی ہے۔وزارت صحت کی جانب سے جاری رات کو جاری رپوررٹ کے مطابق کورونا وائرس کا قہر ملک کے 29 ریاستوں اور مرکز کے زیر انتظام علاقوں میں پھیل چکا ہے اور اب اس کے 3577 کیسز کی تصدیق ہوچکی ہے۔ ان میں 65 غیر ملکی مریض بھی شامل ہیں۔ کورونا وائرس سے پورے ملک میں اب تک 83 افراد کی موت ہوئی ہے جبکہ 275 افراد صحت مند ہوچکے ہیں۔ ملک میں کورونا سے دہلی میں سب سے زیادہ 501 افراد متاثرہیں اور سات افراد کی موت ہوچکی ہے۔ دوسرے مقام پر مہاراشٹر ہے جہاں 490  افراد متاثر ہیں اور 24 افراد کی موت ہوچکی ہے۔ تیسرے مقام پر جنوبی ریاست تمل ناڈو ہے جہاں 485 افراد متاثر ہیں اور تین افراد

پاکستان میں کورونا سے اب تک 42کی موت،2835 متاثر

اسلام آباد//پاکستان میں کورونا وائرس کا خطرہ مسلسل بڑھتا جارہا ہے اور اتوار کو یہاں متاثرین کی تعداد 2835 اور مرنے والوں کی تعداد 42کو پہنچ گئی ہے ۔پاکستان کا پنجاب صوبہ کوویڈ 19 سے سب سے زیادہ متاثر ہے ۔یہاں 1134 متاثرین ہیں اور 11کی موت ہوئی ہے ۔سندھ صوبے میں کورونا وائرس سے سب سے زیادہ 14لوگوں کی موت ہوئی ہے ۔یہاں متاثرین کی تعداد 840 ہے ۔خیبر پختونخوا میں 372 متاثرین ہیں اور 13کی موت ہوئی ہے ۔بلوچستان میں 186 متاثرین ہیں اور ایک کی جان گئی ہے ۔گلگٹ بلتستان میں 206متاثرین ہیں اور تین کی موت ہوئی ہے ۔وہیں دارالحکومت اسلام آباد میں 75متاثرین ہیں اور پاک مقبوضہ کشمیر میں 12ہیں۔یواین آئی۔  

پاکستان میں اپریل کے آخر تک کورونا مریضوں کی تعداد بڑنے کا خدشہ

اسلام آباد//پاکستان میں اپریل کے مہینے میں کورونا وائرس کے متاثرین کی تعداد 50ہزار کو پار کرسکتی ہے ۔یہ خدشہ پاکستان کی قومی صحت خدمات ریگولیشن اور کوآرڈینیشن کی وزارت نے سپریم کورٹ میں سونپی گئی رپورٹ میں اس کا اظہار کیا ہے ۔پاکستان میڈیا کے مطابق رپورٹ میں بتایا گیا ہے کہ اپریل کے آخر تک کورونا انفیکشن کے متاثرین کی تعداد 50ہزار کے پار جار سکتی ہے ۔رپورٹ میں بتایا گیا ہے کہ 2392 مریضوں کے لئے سخت دیکھ بھال کی ضرورت ہوگی جبکہ 7024 شدید طور پر بیمار ہوسکتے ہیں۔اس کے علاوہ 41482 مریض ایسے ہوں گے جو معمولی انفیکشن اور انہیں گھر میں قرنطینہ کی ضرورت ہوگی۔رپورٹ میں کہاگیا ہے کہ یہ جائزہ دیگر ملکوں اور یورپی ممالک کی 35دنوں کی صورت حال کی بنیاد پر کیاگیاہے ۔موجودہ وقت میں پاکستان میں 2835 لوگ کورونا سے متاثر ہیں،جبکہ 42لوگوں کی اس سے موت ہوچکی ہے ۔یواین آئی  

مودی کاسیاسی جماعتوں کی قیادت کے ساتھ تبادلہ خیال

نئی دہلی//کورونا کی وبا سے نمٹنے کے لئے حکومت کی جانب سے جنگی سطح پر کی جانے والی کوششوں کے درمیان آج وزیراعظم نریندرمودی نے سابق صدر پرنب مکھرجی اور پرتیبھا پاٹل کے ساتھ ساتھ سابق وزیراعظم من موہن سنگھ اور ایچ ڈی دیویگوڑا سے بھی بات چیت کی ہے ۔سرکاری ذرائع نے آج یہاں بتایا کہ مسٹر مودی نے ان لیڈروں کے علاوہ مختلف سیاسی پارٹیوں کے اعلی لیڈروں کے ساتھ بھی کورونا وائرس سے پیدا ہوئے حالات پر تفصیل سے غورو خوض کیا۔وزیراعظم نے دونوں سابق صدور اور سابق وزرائے اعظم کے ساتھ ٹیلی فون پر اس غیر معمولی بحران کے بارے میں بات کی اور ملک میں کورونا کے انفیکشن سے متعلق مختلف مسئلوں پر بحث کی۔اس دوران کورونا کے انفیکشن کی حلات اور اس سے نمٹنے کے لئے حکومت کے ذریعہ کی جانے والی کوششوں پر خاص طورپر بات ہوئی۔مسٹر مودی نے مختلف سیاسی پارٹیوں کے لیڈروں کو بھی فون کیا اور ان کے ساتھ بھی کورونا کی وجہ سے پ

کورونا سے مقابلہ کیلئے سماجی دوریاں لازمی

نئی دہلی// سینئرمسلمان نوکر شاہوں اور پولیس حکام جوزمینی سطح پر کروناوائرس کی عالمگیر وباء کے پھیلائوکی روکتھام اور اس مرض میں مبتلاء مریضوں کے علاج کیلئے انتھک کام کررہے ہیں ،نے ملک کے مسلمانوں سے اپیل کی ہے کہ وہ حکا م کے ساتھ تعاون کرکے اس بیماری کو روکنے میں مددکریں۔ملک کی مختلف ریاستوں میں مختلف عہدوں پر فائز 60  نوکرشاہوں نے ایک اپیل جاری کرکے کہا کہ گزشتہ کچھ دنوں سے سماج میں ایک پیغام جا رہا ہے کہ ہندوستان میں مسلمان گروپ سماجی فاصلے اور وبا کے پھیلاؤ کا مقابلہ کرنے کے لئے عمومی اقدامات پرعمل نہیں کر رہے ہیں۔ کچھ بے چین کر دینے والے ویڈیو سامنے آ رہے ہے جس میں مسلم فرقہ کے مرد صحت کے کارکنوں پر پتھراؤ کرتے ہوئے اور قانون نافذ کرنے والے پولیس اہلکاروں کے ساتھ بھی محاذ آرائی کرتے ہوئے دکھائی دے رہے ہیں. کچھ ویڈیو میں پولیس اہلکار مسجد میں نماز پڑھنے پر بضد لوگوں پر لاٹھی

’ہیمال ناگرائے‘کا مطالعہ | لاک ڈائون کی اکتاہٹ کاعلاج

نئی دہلی//کروناوائرس لاک ڈائون کے دوران اکتاہٹ کودور کرنے کیلئے ایک اشاعتی ادارے نے لوگوں کو 15کتابوں کا مطالعہ کرنے کی  صلاح دی ہے جن میں ایک کشمیری تصنیف بھی شامل ہے۔ایک بیان میں ’اسپیکنگ ٹائیگر‘نامی اشاعتی ادارے نے کہاکہ اُن کی کتابوں کی فہرست الگ تھلگ دن گزارنے کا ایک بہترین طریقہ ہے۔انہوں نے اس پہل کانام ’نئی دنیاکی پہچان‘رکھا ہے اور اس فہرست میں رسکن بانڈ،جیری پنٹو اوراپمنیوچٹرجی کی تصانیف بھی شامل ہیں ۔اس فہرست میں اونیزا درابو کی تصنیف ’ہیمال ناگرائے ،کشمیرکی عظیم لوک کہانیاں‘ بھی شامل ہے جبکہ فہرست میں بچوں کیلئے بھی پانچ کتابیں ہیں۔دیگرتصانیف میں رسکن بانڈ کی کتاب،’’اے بک آف سمپل لیونگ،بریف نوٹس فرام ہلز‘‘ ،جیری پنٹوکی’’مرڈراِن ماہم‘‘،سیدمجتبیٰ علی کی تصنیف ،’’اِن اے لینڈ فار

کورونا کا پھیلائو جاری | ملک بھر میں75 اموات ، 3072 افراد متاثر

نئی دہلی //  ملک میں کورونا وائرس (کووِڈ-19) سے متاثرین کی تعداد تین ہزار سے تجاوز کر گئی ہے جبکہ اس کی زد میں آکراب تک 75 افراد ہلاک ہو چکے ہیں۔ہفتے کی رات وزارت صحت کی جانب سے جاری رپورٹ کے مطابق کورونا وائرس کی وبا ملک کی 29 ریاستوں اور مرکز کے زیر انتظام علاقوں میں پھیل چکی ہے۔ اس سے متاثرہ افراد کی تعداد 3072 تک پہنچ گئی ہے۔ ان میں 57 غیر ملکی شامل ہیں۔ کورونا وائرس کی وبا سے پورے ملک میں اب تک 75 افراد کی موت ہوگئی ہے حالانکہ 213  افراد صحتمند ہوچکے ہیں۔ ملک میں کورونا وائرس سے سب سے زیادہ متاثر 490 افراد مہاراشٹر میں ہیں، یہاں 24 افراد ہلاک ہوچکے ہیں۔ مہاراشٹر کے بعد قومی دار الحکومت نئی دہلی میں ہیں جہاں 445 افراد اب تک اس سے متاثر ہوئے ہیں، یہاں چھ افراد کی موت ہو چکی ہے۔ اس معاملے میں تیسرا مقام تملناڈو کا ہے جہاں اب تک 411 افراد کورونا وائرس سے متاثر ہوئے ہیں اور

مودی کی ٹرمپ کے ساتھ ٹیلی فون پر بات

نئی دلی // وزیر اعظم نریندر مودی نے کل امریکی صدر ڈونالڈ ٹرمپ کے ساتھ ٹیلی فون پر بات چیت کی اور کرونائوائرس کی وجہ سے پیدا شدہ صورتحال پر تبادلہ خیال کیا۔دونوں رہنمائوں نے کورونا وائرس کے پھیلاؤ کی شدت پر تشویش کا اظہار کیا اور قریبی تعاون پر بات چیت کی۔انہوں نے کوویڈ ۔19 عالمی وبائی کے خلاف لڑنے کے لئے تمام ممالک کوآپس میں مل جل کر ایک دوسرے کے باہمی تعاون کے ساتھ ساتھ کام کرنے پر زور دیا ۔مودی نے ٹویٹ کرتے ہوئے کہا’’ہمارے مابین اچھی گفتگو ہوئی اور اس عالمی وباء کے خلاف پورے طاقت کے ساتھ لڑنے پر بھارت اور امریکہ کی شراکت داری پر بات کی ‘‘۔ دونوں رہنمائوں کے مابین اس وقت بات چیت ہوئی جب دنیا میں کرونا کے قہر سے لوگ خوف زدہ ہیں ۔  

آسمان کو روشنی دکھانا علاج نہیں: راہل

نئی دہلی// کانگریس کے سابق صدر راہل گاندھی نے وزیر اعظم نریندر مودی پر حملہ کرتے ہوئے کہا ہے کہ کورونا کے خلاف جنگ کوتھالی بجا کر یا آسمان کو اجالا دکھا کر نہیں جیتا جا سکتا بلکہ اس کے لئے کافی ٹیسٹنگ سہولت دستیاب کرانازیادہ ضروری ہے۔مسٹر گاندھی نے ہفتہ کو ٹوئیٹ کرکے کہا کہ ہندوستان میں کورونا کی ٹیسٹنگ سہولت پاکستان اور سری لنکا سے بھی کم ہے۔ کورونا ٹیسٹ کی صلاحیت پاکستان میں 10 لاکھ لوگوں پر 67 اور سری لنکا کے پاس 97 جبکہ ہندوستان کے پاس 29 ہے۔ جنوبی کوریا کے پاس یہ صلاحیت 7622، اٹلی کے پاس 7122 ہے اور امریکہ کے پاس 2732 ہے۔انہوں نے کہا،’’ہندوستان کے پاس کووڈ -19 وائرس سے لڑنے کے لئے مناسب ٹیسٹ نظام تک نہیں ہے۔ لوگو ں سے تالی بجواکر یا آسمان کو روشنی دکھانے میں مسئلہ کا حل نہیں ہے۔‘‘یو این آئی  

چین سے آج لازمی طبی سامان آئے گا

نئی دہلی // چین سے لازمی طبی سامان لے کر سرکاری طیارہ خدمات کمپنی ایئر انڈیا کا طیارہ اتوار کو دہلی آئے گا۔شہری ہوا بازی کی وزارت نے ہفتہ کو بتایا کہ چین کے ساتھ ایئر انڈیا کے ذریعے قائم ایروبریج کے تحت شنگھائی سے طبی سامان لے کر پہلی پرواز اتوار کو دہلی آئے گی۔ لاک ڈاؤن کے بعد یہ پہلا موقع ہو گا جب کوئی مسافر یا کارگو طیارہ چین سے ہندوستان آئے گا۔ ہندوستان نے شنگھائی کے علاوہ ہانگ کانگ سے بھی دہلی کے لئے کارگو پرواز کی درخواست کی تھی جس کی اجازت مل گئی ہے۔ ملک کے مختلف حصوں میں طبی اور دیگر ضروری سامان کی فراہمی کے لئے شروع کی گئی ’ لائف لا ئن پرواز‘ کے تحت ایئر انڈیا اور ہندوستانی فضائیہ کے طیاروں نے جمعہ کو 10 پروازیں کیں اور ملک کے مختلف حصوں میں 19 ٹن سے زیادہ ضروری سامان پہنچایا۔ وزارت نے بتایا کہ جمعہ کے روز لازی طبی اور دیگر سامان کے ساتھ ایئر انڈیا نے آٹھ اور

کروناکا بڑھتاپھیلائو :بھارت میں 328 نئے کیس سامنے

 نئی دہلی//ملک کی مختلف ریاستوں میں گزشتہ 24 گھنٹوں کے دوران کورونا وائرس (کووڈ 19) کے 328 کیسز کے ساتھ ہی اس سے متاثرین کی تعداد بڑھ کر 1965 ہو گئی ہے اور12 افراد کی موت کے ساتھ ہی مرنے والوں کی تعداد بڑھ کر 50 ہو گئی ہے ۔کورونا وائرس سے اب تک کل 151 افراد شفا یاب ہوئے ہیں جن میں سے ایک شخص بیرون ملک جاچکا ہے ۔وزارت صحت کی بدھ کے روز جاری رپورٹ کے مطابق کورونا وائرس ملک کی 29 ریاستوں اور مرکز کے زیر انتظام علاقوں میں پھیل چکا ہے اور اب تک اس کے 1965 کیسز کی تصدیق ہو چکی ہے ۔ان میں 49 غیر ملکی مریض بھی شامل ہیں۔ کورونا وائرس کے انفیکشن سے ملک بھر میں اب تک 50 افراد کی موت ہوئی ہے جبکہ 151 لوگ صحت مند ہو چکے ہیں۔مہاراشٹر، کیرالہ، کرناٹک، تلنگانہ، گجرات، راجستھان، اترپردیش اور دہلی میں انفیکشن کے سب سے زیادہ کیسز سامنے آئے ہیں. دہلی میں متاثرین کی تعداد بڑھ کر 152 ہو گئی ہے ۔ کورونا

مودی کا ویڈیوپیغام آج

نئی دہلی //کورونا کی وبا کے خلاف ملک گیر مہم کی قیادت کررہے وزیراعظم نریندرمودی جمعہ کی صبح ملک کے عوام کے نام ایک ویڈیوپیغام دیں گے۔مسٹر مودی نے ٹویٹ کے ذریعہ یہ اطلاع دی۔انھوں نے کہا، ’’ جمعہ صبح نو بجے ملک کے عوام کے نام ایک ویڈیو پیغام دونگا۔‘‘وزیراعظم نے کل ریاستوں اور مرکز کے زیرانتظام علاقوں کے وزرائے اعلی کے ساتھ ویڈیوکانفرنسنگ کے ذریعہ کورونا وائرس سے پیداہوئی صورت حال کا جائزہ لیا۔  

رسوئی سلنڈروں کی ریفلنگ میں اضافہ

متھرا// لاک ڈاؤن کے دوران ایل پی جی کے گھریلو سلنڈروں کی بازار میں بڑھتے مطالبے کو دیکھتے ہوئے انڈین آئل کی متھرا ریفائنری نے گیس ریفلنگ کو بڑھا دیا ہے ۔ریفائنری کے کارگذار ڈائرکٹر اورریفائنری سربراہ اروند کمار نے جمعرات کو بتایا کہ کورونا وائرس کے خطرے کے پیش نظر 21دنوں کے ملک گیر لاک ڈاؤن کے بعد لوگ گھروں تک ہی محدود ہیں ۔جس کی وجہ سے پٹرول اوردیزل کی طلب میں کافی کمی آئی ہے ۔ لیکن گھریلو سلنڈروں کی طلب میں اضافہ ہو اہے ۔انہوں نے کہا کہ بڑھتے مطالبے کو دیکھتے ہوئے متھرا ریفائنری نے ایل پی جی ریفلنگ میں اضافہ کردیا ہے ۔موجودہ وقت میں جہاں ایل پی جی کی پیداوار پر دھیان دیا جارہا ہے تووہیں ریفائنری پوری طرح سے بی ایس ۔6پٹرول اور ڈیزل بنا رہی ہے اور ریفائنری کے پاس ان دونوں کا بھی وافر ذخیرہ موجود ہے ۔انہوں نے کہا کہ ریفائنری کے افسران و ملازمین کووڈ۔19 وبا کی وجہ سے پیدا ہوئے اس خطرناک