تازہ ترین

پونچھ علاقے میں مظاہرین پولیس کے ساتھ متصادم، گاڑیوں کی توڑ پھوڑ

سرینگر/ضلع پونچھ کے اعلیٰ پیر علاقے میں جمعہ کو پولیس نے تشدد پر آمادہ بھیڑ کیخلاف ٹیر گیس کا استعمال کیا۔ عینی شاہدین کے مطابق علاقے میں لیتہ پورہ حملے کیخلاف مظاہروں کے پیش نظر پولیس کی تعیناتی عمل میں لائی گئی تھی جس کے دوران تشدد بھڑک اُٹھا۔ انہوں نے کہا کہ لوگوں کی ایک بھیڑ نے جمع ہوکر کئی کاروں کے شیشے توڑ ڈالے جس کے بعد پولیس نے تشدد پر آمادہ بھیڑ کیخلاف کارروائی عمل میں لائی۔ مظاہرین نے اعلیٰ پیر میں ایک مسلمان شہری کے گھر کے شیشے بھی توڑ دئے اور مسلمان شہریوں کی دکانوں کو نقصان پہنچانے کی کوشش کی۔ سرکاری ذرائع نے کہا کہ صورتحال کو قابو میں لایا گیا ہے۔ اس سے قبل جموں کے گجر نگر علاقے میں بھی پُر تشدد مظاہروں کے دوران درجنوں گاڑیوں کی توڑ پھوڑ کی گئی اور کئی ایک کو آگ لگائی گئی۔ ان واقعات میں 12افراد زخمی ہوگئے جس کے بعد جموں میں کرفیو نافذ کردیا گیا۔

گجر نگر جموں میں پُر تشدد مظاہروں کے بعد کرفیو نافذ

سرینگر/جموں کے گجر نگر علاقے میں جمعہ کو حکام نے کرفیو نافذ کردیا۔ یہ اقدام علاقے میں پُر تشدد مظاہروں کے بعد اٹھایا گیا۔مظاہرین گذشتہ روز جنوبی کشمیر کے لیتہ پورہ علاقے میں عسکریت پسندوں کے فورسز پر ہلاکت خیز حملے کیخلاف مظاہرے کررہے تھے جس کے نتیجے میں کم سے کم 49فورسز اہلکار ہلاک ہوگئے۔ اطلاعات اور شاہدین کے مطابق گجر نگر علاقے میں ایک بھاری بھیڑ نے درجنوں گاڑیوں کو نقصان پہنچایا۔ یہ تشدد جموں بند کے دوران بھڑک اُٹھا جس کی اپیل جموں تاجر برادری نے کر رکھی تھی اور جس کی حمایت جموں کے وکلاء اور نیشنل کانفرنس نے بھی کی تھی۔ عینی شاہدین کے مطابق موٹر سائیکلوں پر سوار ، بھارت کا ترنگا اُٹھائے مظاہرین نے گاڑیوں اور رہائشی مکانوں پر سنگباری کی اور پریم نگر علاقے میں کچھ گاڑیوں کو نذر آتش بھی کیا۔ انہوں نے کہا کہ حکام نے علاقے میں کرفیو نافذ کردیا لیکن اس کے باوجود بھیڑ جمع

لیتہ پورہ حملے پر مشترکہ مزاحمتی قیادت کا رد عمل

سرینگر/لیتہ پورہ حملے پر تبصرہ کرتے ہوئے سید علی گیلانی، میرواعظ عمر فاروق اور محمد یاسین ملک پر مشتمل علیحدگی پسندوں کے وفاق، ،مشترکہ مزاحمتی قیادت نے جمعہ کو ایک بیان میں کہا کہ کشمیر کے لوگوں اور قیادت کو یہاں کی سر زمین پر ہونے والی ہر ہلاکت پر افسوس ہے۔ انہوں نے اپنے ایک بیان میں کہا''چونکہ یہاں کے لوگ روز اپنے پیاروں کے جنازوں کو کاندھا دیتے آرہے ہیں اس لئے ہر مرنے والے کے خاندان کا دکھ درد سمجھ سکتے ہیں۔'' انہوں نے کہا '' کشمیر تنازع کے حل میں تاخیر، جموں کشمیر کے لوگوں کی خواہشات سمجھنے سے انکار اور یہاں کے لوگوں کیخلاف طاقت کا استعمال عمل میں لاکر ایک سیاسی مسئلے کوفوجی رنگ دینے سے وادی کشمیر میں خاص کر صورتحال سنگین بنی ہوئی ہے اور ہماری نئی نسل اس کا شکار ہورہی ہے۔ جو بھارت کی پالیسی کو یہاں نافذ کرنے کیلئے تعینات ہیں ، اُنہیں بھی اس کی قیمت ا

لیتہ پورہ حملہ: بھارت نے پاکستان سے 'پسندیدہ ملک کا درجہ' واپس لیا

سرینگر/بھارت نے جمعہ کو پاکستان سے ''پسندیدہ ملک کا درجہ'' واپس لے لیا۔ یہ اقدام جنوبی کشمیر کے لیتہ پورہ پانپور میں عسکریت پسندوں کے حملے کے اگلے روز کیا گیا۔ اس حملے میں کم سے کم49فورسز ہلکار ہلاک ہوگئے۔ خبر رساں ادارے پی ٹی آئی کے مطابق نئی دلی میں سیکورٹی سے متعلق کابینہ کمیٹی کی میٹنگ کے بعد وزیر خزانہ ارون جیٹلی نے نامہ نگاروں سے بات کرتے ہوئے کہا کہ حملے میں ملوث افراد کو قانون کے دائرے میں لانے کی ہر ممکن کوشش کی جائے گی۔ انہوں نے مزید کہا ''پاکستان کو الگ تھلگ کرنے کیلئے سفارتی کوششیں تیز کی جارہی ہیں''۔ بھارت نے بہت پہلے پاکستان کو''پسندیدہ ملک کا درجہ'' دے رکھا تھا، جو آپسی تجارت سے متعلق ہے تاہم پاکستان نے ابھی بھارت کو یہ درجہ نہیں ہے۔ بھارت کا الزام ہے کہ لیتہ پورہ حملے میں پاکستان ملوث ہے ۔ اس حملے میں م

کشمیر شاہراہ تازہ پسیاں گر آنے کے بعد ٹریفک کیلئے پھر بند

 سرینگر/تین دن تک جزوی طور کھلی رہنے کے بعد سرینگر۔جموں شاہراہ کو جمعہ کو ٹریفک کیلئے پھر بند کیا گیا۔ حکام کے مطابق یہ اقدام شاہراہ پر رامبن۔رامسو علاقے میں تازہ پسیاں گر آنے کے بعد اٹھایا گیا ہے۔ انہوں نے کہا کہ رات بھر بارش ہونے کی وجہ سے شاہراہ پر پسیاں گر آئی ہیں جنہیں ہٹانے کا کام جاری ہے۔  

لیتہ پورہ جنگجو حملہ: مرنے والے فورسز اہلکاروں کی تعداد بڑھ کر20

سرینگر/سرینگر۔جموں شاہراہ پر لیتہ پورہ کے نزدیک گوری پورہ میں جمعرات کو جنگجوئوں نے سی آر پی ایف کی ایک گاڑی کو نشانہ بناتے ہوئے حملہ کیا جس کے نتیجے میں کم سے کم 20اہلکارہلاک اورمتعدد زخمی ہوگئے۔ جنگجوئوں کا یہ حملہ اپنی نوعیت کا انوکھا حملہ تھا جس میں جنگجوئوں نے سی آر پی ایف گاڑی کو دھماکے کی زد میں لایا۔ اطلاعات کے مطابق علاقے میں ایک زور دار دھماکے کی آواز سنی گئی جس کے بعد علاقے میں لوگوں کو بھاگتے ہوئے دیکھا گیا۔ ذرائع کے مطابق پورے علاقے کو محاصرے میں لے لیا گیا ہے۔ مزید تفصیلات کا انتظار ہے۔  

لیتہ پورہ جنگجو حملہ: 12فورسزا ہلکار ہلاک15زخمی

سرینگر/سرینگر۔جموں شاہراہ پر لیتہ پورہ کے نزدیک گوری پورہ میں جمعرات کو جنگجوئوں نے سی آر پی ایف کی ایک گاڑی کو نشانہ بناتے ہوئے حملہ کیا جس کے نتیجے میں  12اہلکارہلاک اورکم سے کم15 زخمی ہوگئے۔ جنگجوئوں کا یہ حملہ اپنی نوعیت کا انوکھا حملہ تھا جس میں جنگجوئوں نے سی آر پی ایف گاڑی کو دھماکے کی زد میں لایا۔ اطلاعات کے مطابق علاقے میں ایک زور دار دھماکے کی آواز سنی گئی جس کے بعد علاقے میں لوگوں کو بھاگتے ہوئے دیکھا گیا۔ ذرائع کے مطابق پورے علاقے کو محاصرے میں لے لیا گیا ہے۔ مزید تفصیلات کا انتظار ہے۔  

لیتہ پورہ پانپور میں فورسز گاڑی پر جنگجوئوں کا شدید حملہ،15اہلکار زخمی

سرینگر/سرینگر۔جموں شاہراہ پر لیتہ پورہ کے نزدیک گوری پورہ میں جمعرات کو جنگجوئوں نے سی آر پی ایف کی ایک گاڑی کو نشانہ بناتے ہوئے حملہ کیا جس کے نتیجے میں کئی اہلکاروں کے شدید زخمی ہونے کی اطلاعات موصول ہوئی ہیں۔ اطلاعات کے مطابق علاقے میں ایک زور دار دھماکے کی آواز سنی گئی جس کے بعد کم و بیش 15سی آر پی ایف اہلکاروں کو شدید زخمی حالت میں پایا گیا۔ ذرائع کے مطابق پورے علاقے کو محاصرے میں لے لیا گیا ہے۔ مزید تفصیلات کا انتظار ہے۔  

لیتہ پورہ پانپور میں فورسز گاڑی پر جنگجوئوں کا شدید حملہ

سرینگر/سرینگر۔جموں شاہراہ پر لیتہ  پورہ  کے  نزدیک  گوری  پورہ  کے  مقام  پرجمعرات کو جنگجوئوں نے سی آر پی ایف کی ایک گاڑی کو نشانہ بناتے ہوئے حملہ کیا جس کے نتیجے میں کئی اہلکاروں کے شدید زخمی ہونے کی اطلاعات موصول ہوئی ہیں۔ مقامی ذرائع کے مطابق انہوں نے ایک زور دار دھماکے کی آواز سنی جس کے بعد شدید فائرنگ ہوئی۔ ذرائع کے مطابق پورے علاقے کو محاصرے میں لے لیا گیا ہے۔ مزید تفصیلات کا انتظار ہے۔  

گیارہویں میں ناکام ہوئے طالب علموں کا احتجاج، بمنہ بورڈ آفس میں توڑ پھوڑ

سرینگر/جمعرات کوگیارہویں جماعت کے امتحانی نتائج میں ناکام ہوئے بیسیوں طالب علموں نے جموں کشمیر سٹیٹ بورڈ آف سکول ایجوکیشن کے آفس واقع بمنہ، سرینگر میں جمع ہوکر'' خراب ''نتائج کیخلاف احتجاج کیا۔ بورڈ آفس حکام نے کہا کہ احتجاجی طالب علموں نے بورڈ کے دفتر میں کھڑکیوں کے شیشے توڑ دئے اور توڑ پھوڑ بھی کی۔ بورڈ سے وابستہ ایک آفیشل نے کہا کہ احتجاج طالب علموں کو چاہئے کہ وہ اپنے جوابی پرچوں کی نقل حاصل کرکے اپنی کارکردگی خوددیکھیں یا مذکورہ پرچوں کی دوبارہ مارکنگ کیلئے درخواست دیں۔ انہوں نے کہا کہ طالب علموں نے بورڈ کے دفتر میں امن و قانون کی صورتحال پیدا کی جس کو لیکر بورڈ حکام پولیس طلب کرنے پر مجبورہوگئے جنہوں نے صورتحال کو قابو میںکرلیا۔ اس واقعہ کے کچھ ویڈیوز، جو وائرل ہوئے ہیں، میں کئی احتجاجی طالب علموں کو بورڈ آفس میں توڑ پھوڑ کرتے ہوئے دیکھا جاسکتا ہے

چھتیس گڑھ میں کشمیری طالب علموں پر حملہ،چار زخمی

سرینگر/چھتیس گڑھ کے رائپورہ میں ایک ٹریننگ پروگرام کے کشمیری طالب علموں نے جمعرات کو الزام عاید کہ اُن پر مہاراشٹرا اور بعض مقامی طالب علموں نے حملہ کیا جس کے نتیجے میں چار کشمیری طالبان علم زخمی ہوگئے۔ حمایت پروجیکٹ کے تحت چھتیس گڑھ میں تربیت حاصل کرنے والے34کشمیری طالبان علم کے مطابق اُن پر گذشتہ شام دیشا انسٹی چیوٹ آف منیجمنٹ اینڈ ٹیکنالوجی کے کینٹین میں حملہ ہوا۔ انہوں نے الزام عاید کیا کہ اُن پر لوہے کی سلاخوں اور پتھروں سے حملہ کیا گیا۔ یہ حملہ بقول کشمیری طالبان علم، اُن پر اُس وقت ہوا جب وہ کینٹین میں رات کا کھانا کھانے پہنچے اور ایک کشمیری طالب علم کا مہاراشٹرا کے ایک طالب علم کے ساتھ توتو میں میں ہوا۔منظور احمد میر، ساکنہ داچھی گام بانڈی پورہ نامی طالب علم کے مطابق اُنہیں اُن کے ہوسٹل کمروں تک ہانکا گیا جس کے بعد مہا راشٹرا اور بعض مقامی طالب علموں نے اُن کا سامان

حراستی پیرول ختم ہونے کے بعد شاہد الاسلام پھر تہار جیل پہنچے

سرینگر/حریت کانفرنس (ع) کے ترجمان شاہد الاسلام، جس کو حراستی پیرول پر سرینگر لایا گیا تھا، کا پیرول ختم ہوتے ہی پھر دلی کے تہار جیل میں پہنچائے گئے ہیں۔  ذرائع نے کہا کہ شاہد کو فروری کے پہلے ہفتے کے دوران حراستی پیرول پر رہا کرکے سرینگر لایا گیا تھا۔ اُنہیں سرینگر میں رہتے ہوئے افراد خانہ کے بغیر کسی سے ملنے کی اجازت نہیں دی جارہی تھی۔انہیں دن بھر اپنے گھر میں رکھنے کے بعد شام کو رات کیلئے پولیس سٹیشن راج باغ منتقل کیاجاتا تھا۔ این آئی اے ذرائع کے مطابق شاہد کا حراستی پیرول 8فروری کو ختم ہوگیا تاہم موسم کی خرابی کے باعث اُنہیں دلی منتقل نہیں کیا جاسکا۔ ذرائع نے مزید کہا کہ شاہد کو آج دلی پہنچایا گیا ہے اور اُنہیں دوبارہ تہار جیل میں مقید رکھا گیا ہے۔ واضح رہے کہ شاہد سمیت کئی علیحدگی پسندوں کو جولائی 2017میں این آئی اے یا ای ڈی نے گرفتار کرکے دلی منتقل کیا۔ یہ سبھ

کشمیر میں کل سے موسم خوشگوار ہونا متوقع: محکمہ موسمیات

سرینگر/محکمہ موسمیات نے جمعرات کو کہا کہ کل یعنی 15فروری سے جموں کشمیر کے اندر موسم میں خوشگوار تبدیلی ہونا متوقع ہے۔ اپنے ایک بیان میں محکمہ موسمیات کے ڈائریکٹر سونم لوٹس نے کہا کہ گذشتہ24گھنٹوں کے دوران کئی مقامات پر بارش اور کئی پر برفباری کی اطلاعات موصول ہوئی ہیں۔ انہوں نے کہا کہ آج موسم ابر آلود رہنے والا ہے اور کہیں کہیں بارش اور برفباری بھی ہوسکتی ہے۔ سونم نے مزید کہا کہ 14اور15فروری کی درمیانی شب کے دوران درمیانہ درجے کی بارش ہوسکتی ہے تاہم کل یعنی 15فروری بعد دوپہر سے موسم میں خوشگوار تبدیلی متوقع ہے۔  

کشمیر شاہراہ پر آج صرف درماندہ گاڑیوں کو چلنے کی اجازت

سرینگر/حکام نے جمعرات کو کہا کہ سرینگر۔جموں شاہراہ آج پھر جزوی طور ہی کھلی رہے گی جبکہ اس شاہراہ پر صرف درماندہ گاڑیوں کو ہی چلنے کی اجازت دی جائے گی۔ گذشتہ روز کم و بیش تین ہزار گاڑیاں جواہر ٹنل پار کرکے وادی کے اندر داخل ہوئیں جن میں سے ایک ہزار ضروری اشیاء سے لدی تھیں۔ حکام کے مطابق آج شاہراہ پر جموں کی طرف جانے والی درماندہ گاڑیوں کو چلنے کی اجازت دی گئی ہے تاکہ شاہراہ پر گاڑیوں کی تعداد کم کی جاسکے۔ انہوں نے کہا کہ شاہراہ پر رامبن۔رامسو سیکٹر میں مروگ کے مقام پر کم و بیش دو سو میٹر سڑک بہت خراب ہے اور یہاں بہت احتیاط کی ضرورت ہے۔ نیز یہاں سڑک اتنی تنگ ہے کہ اس پر صرف ایک ہی گاڑی چل سکتی ہے۔  ذرائع کے مطابق شاہراہ کو گاڑیوں کی آمد و رفت کے قابل بنائے جانے کے بعد سے وادی میں اشیائے ضروریہ کی فراہمی میں قدرے بہتری آئی ہے۔  

دفعہ 35اے : کل کوئی ہڑتال نہیں ہوگی :مزاحمتی قیادت

سرینگر: سید علی گیلانی، میرواعظ عمر فاروق اور محمد یاسین ملک پر مشتمل علیحدگی پسندوں کے وفاق، مشترکہ مزاحمتی قیادت نے بدھ شام دیر گئے کل یعنی جمعرات کیلئے دی گئی ہڑتال کال واپس لے لی۔ ایک بیان میں قیادت نے کہا کہ دلی سے بار ایسو سی ایشن سے وابستہ وکلاء نے اُنہیں مطلع کیا ہے کہ جاری فہرست میں جمعرات کو دفعہ35اے کیس کی سماعت نہیں رکھی گئی ہے اس لئے کل یعنی14فروری کیلئے دی گئی ہڑتال کال واپس لی جاتی ہے۔ قیادت نے تاہم وضاحت کی ہے کہ وکلاء کل بھی عدالت عظمیٰ میں ہی رہ کر صورتحال پر قریبی نظر رکھیں گے۔ واضح رہے کہ مشترکہ مزاحمتی قیادت نے آج اور کل دفعہ35اے کیس سے متعلق عدالت عظمی میں شنوائی کو مد نظر رکھتے ہوئے دو روزہ ہڑتال کی اپیل کی تھی۔ یہ آئینی دفعہ جموں کشمیر کے عوام کی خصوصی شہریت سے متعلق ہے جس کیخلاف عدالت عظمیٰ میں کئی درخواستیں موجود ہیں ۔  

پلوامہ دھماکہ: زخمیوں کیلئے 50 ہزار روپے کے ایکس گریشیا کا اعلان

جموں /گورنر ستیہ پال ملک نے بدھ کو پلوامہ میں ایک سکول میں ہوئے دھماکے پر افسوس کا اظہار کیا ہے ۔ اس دھماکے میں کئی طلبا زخمی ہو گئے ۔ گورنر نے تمام زخمی بچوں کی فوری صحت یابی کی دعا کرتے ہوئے زخمیوں کیلئے 50 ہزار روپے کی ایکس گریشیا رلیف کا اعلان کیا  ۔ انہوں نے صوبائی کمشنر کشمیر کو زخمی بچوں کو بہتر طبی سہولیات اور علاج و معالجہ فراہم کرنے کو یقینی بنانے کی ہدایت دی  ۔    

گیارہویں جماعت کے امتحانی نتائج کا اعلان آج شام:بورڈ

سرینگر/جموں کشمیر سٹیٹ بورڈ آف سکول ایجو کیشن نے بدھ کو کہا کہ گیارہویں جماعت کے امتحانی نتائج کا اعلان آج شام کیا جائے گا۔  بورڈ حکام نے کہا کہ یہ نتائج بورڈ کی آفیشل ویب سائٹ پر آج شام ساڑھے چھ بجے سے موجود ہونگے۔  انہوں نے مزید کہا کہ اس امتحان میں پاس ہونے والے اُمیدواروں کی شرح63فیصد ہے۔ حکام کے مطابق اس امتحان میں مجموعی طور62101 اُمیدوار شامل ہوئے تھے جن میں سے39406کامیاب قرار پائے ہیں۔ یہ امتحانات گذشتہ برس ماہ اکتوبر۔نومبر میں لئے گئے تھے۔  

رامبن میں 2برفانی تودے گر آئے، شہری زندہ دفن، رہائشی مکان تباہ

سرینگر/ضلع رامبن میں بدھ کو دو برفانی تودے گر آئے جن کی زد میں آکر ایک شہری زندہ دفن ہوگیا جبکہ ایک رہاشی مکان تباہ ہوگیا۔ اطلاعات کے مطابق سلام الدین گجر  نامی شہری اُس وقت لقمہ اجل بن گیا جب وہ اپنے گھر کے نزدیک ایک برفانی تودے کی زد میں آگیا۔ وہ ضلع کے رامدگلی، ہلا داندرتھ علاقے کا رہنے والا تھا۔ ایس ایچ او، رامبن ،وجے کوتوال کے مطابق سلام الدین تودے کی زد میں آنے کے بعد موقع پر ہی جاں بحق ہوگیا۔ ایک اور برفانی تودہ مذکورہ ضلع کے مانگت گائوں میں گر آیا جس نے جمال الدین نامی شہری کے گھر کو زد میں لایا۔ حکام کے مطابق مذکورہ مکان تودے کی زد میں آکر تباہ ہوگیا تاہم خوش قسمتی سے حادثے کے وقت گھر کے اندر کوئی نہیں تھا۔  

چاڈورہ معرکہ میں جاں بحق عسکریت پسندوں کی شناخت ہوگئی

سرینگر/پولیس نے بدھ کو اُن دو عسکریت پسندوں کی شناخت کی جو آج صبح چاڈورہ بڈگام کے گائوں میں فورسز کے ساتھ ایک جھڑپ میں جاں بحق ہوئے تھے۔ پولیس نے کہا کہ جاں بحق عسکریت پسندوں میں ہلال احمد وانی ولد محمد اکرم وانی ساکنہ یاری پورہ اور شعیب محمد لون عرف مرسی ولد مرحوم ارشد حسین ساکنہ بمرتھ کولگام شامل ہیں، اور ان دونوں کا تعلق حزب المجاہدین کے ساتھ تھا۔ پولیس نے کہا کہ فورسز نے وسطی کشمیر کے چاڈورہ علاقے ، گوپالپورہ، واٹھورہ میں عسکریت پسندوں اور فورسز کے مابین شبانہ معرکہ آرائی کے دوران دو عسکریت پسند جاں بحق ہوگئے۔ پولیس کے مطابق فورسز نے عسکریت پسندوں کی موجودگی سے متعلق ایک مصدقہ اطلاع کے بعد گوپالپورہ کا محاصرہ کیا جس کے دوران چھپے جنگجوئوں نے فورسز پر گولیاں چلائیں۔ فورسز نے جوابی کارروائی عمل میں لائی اور یہاں باضابطہ معرکہ شروع ہوا جس کے دوران دو عسکریت پسند جاں بح

پلوامہ اسکول میں پُر اسرار دھماکے کے بعد جھڑپیں

سرینگر/جنوبی کشمیر کے پلوامہ ضلع میں بدھ کو ایک سکول کے اندر ہوئے پُر اسرار دھماکے میں کم سے کم 28بچوں کے زخمی ہونے کے بعد پولیس اور مظاہرین کے درمیان جھڑپیں ہوئی ہیں۔ یہ دھماکہ نارہ بل، کاکا پورہ نامی گائوں میں ہوا جہاں ایک پرائیویٹ سکول کے اندر بچے سرمائی ٹیوشن لینے میں مصروف تھے ۔ عینی شاہدین نے کہا کہ دھماکے کے فوراً بعد جونہی پولیس جائے مقام پر پہنچی تو نوجوانوں نے پولیس پر شدید تھرائو کیا اور پولیس اہلکاروں نے بھی جواب میں ٹیر گیس کے گولے داغے جس کے بعد یہاں جھڑپیں بھڑک اُٹھیں۔  مقامی مسجد کے لائوڈ سپیکر سے نوجوانوں سے پولیس پرپتھرائو نہ کرنے کی صلاح دی جارہی ہے۔ دریں اثناء پولیس کی  طرف سے جاری ایک بیان  میں بتایا گیا ہے کہ بدھ کے روز 2بجکر 30منٹ پر ضلع پلوامہ کے نارہ بل علاقے میں قائم فلاح ملت نامی پرائیوٹ اسکول(ٹیوشن سینٹر)کے ایک کمرے میں کسی بار