تازہ ترین

وزیر داخلہ کی قومی سلامتی مشیر کیساتھ اہم میٹنگ

نئی دلی// جموں و کشمیر کو لے کر جاری تمام قیاس آرائیوں کے درمیان وزیر داخلہ امت شاہ نے وزارت داخلہ کے اعلی افسران اور خفیہ ایجنسی کے اہلکاروں کے ساتھ میٹنگ کی۔اس میٹنگ میں قومی سلامتی کے مشیر اجیت دوول بھی موجود تھے۔ میٹنگ میں کشمیر وادی کے تازہ حالات پر تبادلہ خیال کیا گیا۔پارلیمنٹ ہائوس میں منعقد ہوئی میٹنگ کے دوران سراغ رساں ایجنسیوں کے سربراہان کے علاوہ مرکزی ہوم سیکریٹری اور دیگر اعلیٰ افسران موجود تھے۔ میٹنگ قریب ایک گھنٹے تک چلی ۔البتہ میٹنگ کے دوران کیا بات چیت ہوئی اس بارے میں کچھ نہیں بتایا گیا۔    

مرکزی کابینہ کی میٹنگ آج

نئی دہلی//مرکزی کابینہ کی آج وزیراعظم کی سرکاری رہائش گاہ پر میٹنگ ہوگی۔ سیکورٹی سے متعلق کابینہ کمیٹی اور پارلیمانی امورسے متعلق کابینہ کمیٹی کی بھی آج میٹنگ ہونے کاامکان ہے۔ذرائع کے مطابق ان اعلیٰ سطحی میٹنگوں میں جموں کشمیرسے متعلق معاملات پر غور ہوگا۔سپریم کورٹ میں ججوں کی تعداد میں اضافہ کرنے سے متعلق بل پر بھی لوک سبھا میں پیش کئے جانے سے قبل کابینہ میں غور ہوگا۔   

عمران خان نے سلامتی کا جائزہ لیا| بگڑتی صورتحال پر تشویش:او آئی سی

سرینگر //او آئی سی کی جانب سے جاری بیان کے مطابق کشمیر میں بگڑتی ہوئی صورت حال پر تشویش ہے۔ وادی میں بھارتی فوج کی اضافی نفری پر بھی تشویش ہے۔او آئی سی نے عالمی برادری پر زور دیا کہ مسئلہ کشمیر کے پرامن حل کے لیے عالمی برادری اپنی ذمہ داری پوری کرے اور اقوام متحدہ کی قراردادوں کے مطابق اس کو حل کیا جائے۔او آئی سی نے بھارتی فوج کی جانب سے سیزفائر کی خلاف ورزیوں کے باعث ہونے والے جانی نقصان پر بھی افسوس کا اظہار کیا۔اپنے بیان میں کہا کہ بھارت کی جانب سے سویلین آبادی پر کلسٹربم کے استعمال پر شدید تشویش ہے۔وزیر خارجہ شاہ محمود قریشی نے او آئی سی کے سیکرٹری جنرل ڈاکٹر یوسف احمد سے ٹیلی فونک رابطہ کیااور او آئی سی سے مطالبہ کیا تھا کہ کشمیر میں گھمبیر ہوتی صورتحال کا نوٹس لیا جائے۔ادھر پاکستان کی قومی سلامتی کمیٹی کا اجلاس وزیراعظم عمران خان کی زیر صدارت ہوا ،جس میں کہا گیا ہے کہ بھارت

جموں وکشمیر بنک میں غیر قانونی بھرتیاں | انٹی کرپشن بیورو کی محبوبہ کے نام نوٹس

سرینگر //انٹی کرپشن بیورو نے پی ڈی پی صدر محبوبہ مفتی کے نام نوٹس جاری کرتے ہوئے انہیں جموں وکشمیر بنک میں بھرتی کئے گئے ملازمین میں بے ضابطگیوں کے حوالے سے وضاحت طلب کی ہے۔ محبوبہ مفتی نے کہا کہ اس طرح کے اقدامات سے مرکزی سرکار مین اسٹریم سیاسی لیڈران کو ڈرانا اور دھمکانا چاہتی ہے جو کوئی حیرانگی کی بات نہیں۔انٹی کرپشن بیورو کی جانب سے جاری کردہ خط زیر رنمبر SSP/ACBK/FIR-1 0/2019/3064 بتاریخ  03-08-2019 میں محبوبہ مفتی کو مخاطب ہوکر کہا  گیاہے کہ ’’کیس زیر ایف آئی آر نمبر 10/2019بتاریخ 08-06-2019 کی تحقیقات کرنے کے دوران یہ بات سامنے آئی ہے کہ جموں وکشمیر بنک میں بعض تقرریاں غیر قانونی طریقے پر عمل میں لائی گئی ہیں۔ خط میں کہا گیا ہے کہ بنک کے اُس وقت کے چیئرمین پرویز احمدنے پی ڈی پی کے بعض وزراء کی سفارشات پر کئی اُمیدواروں کو بنک میں ملازمت فراہم کی ہے۔ محبو

این آئی اے کے سامنے طلبی | انجینئر رشید نئی دہلی میں

سرینگر // قومی تحقیقاتی ایجنسی (این آئی اے) نے عوامی اتحاد پارٹی سربراہ انجینئر رشید کے نام سمن جاری کرتے ہوئے انہیں نئی دہلی طلب کرلیا ہے ۔ پیپلز یونائیٹڈ فرنٹ نے کارروائی کی مذمت کرتے ہوئے اسے سیاسی لیڈران کو ہراسان کرنے کی کارروائی قرار دیا ہے۔ سماجی رابطہ سائٹ فیس بک پر انجینئر رشید نے تحریر کیاکہ این آئی اے نے انہیں اتوار کے روز پوچھ تاچھ کیلئے نئی دہلی طلب کیا ہے۔ پیپلز یونائٹیڈ فرنٹ لیڈر ڈاکٹر شاہ فیصل نے کہا ہے کہ انجینئر رشید کو پوچھ تاچھ کیلئے نئی دہلی طلب کرنا مذموم عمل ہے جس کا مقصد یہاں کے سیاسی لیڈران کوجان بوجھ کر ہراساں اور خوفزدہ کرنا ہے۔شاہ فیصل کا کہنا تھا کہ سابق ممبر اسمبلی ایک عوامی لیڈر ہیں اور ایسے وقت میں جب کشمیر پر کئی مصیبتیں آن پڑی ہیں، مذکورہ لیڈر کو پوچھ تاچھ کے بہانے طلب کرنا ان کی سیاسی سرگرمیوں پر قدغن عائد کرنا ہے۔ڈاکٹر شاہ فیصل کا کہنا تھا کہ قومی

صوبائی انتظامیہ کیلئے 204 سیٹلائٹ فون فراہم

سرینگر// صوبائی انتظامیہ نے موجودہ صورتحال کے نتیجے میں موبائیل فون سروس کے منقطع ہونے کے خدشے کے پیش نظر تمام اضلاع کے ڈپٹی کمشنروں ، ضلع پولیس سربراہوں ، تحصیل مجسٹریٹوں ، سیول سیکریٹریٹ کے افسران ، مختلف محکموں کے انتظامی افسران کو دئے گئے سیٹلائٹ فون نمبرات کی ڈائریکٹری جاری کردی ہے ۔ ڈویژنل کمشنر آفس سمیت ضلع ترقیاتی کمشنروں کے 55 نمبرات دئے گئے ہیں جبکہ چیف سیکریٹری آفس کے 15 ، پولیس افسران کے 29 وادی کے 10اضلاع کے ایس ایچ اووز کے 105 سیٹلائٹ فون نمبرات مشتہر کئے گئے ہیں۔   

کیرن علاقہ میں بارودی دھماکہ | شہری جا ں بحق ،دوکاندارگرفتار

کپوارہ // کپوارہ کے حد متارکہ پر کیرن گائو ں میں بارودی دھماکہ ہوا  ہے جسمیں ایک شہری موقع پر ہی جا ں بحق جبکہ ایک زخمی ہوا ۔اتوار کی صبح کیرن میں پرائمری ہیلتھ سنٹر کے متصل ایک ٹیلر دکان کے باہر زور دار بارودی دھماکہ ہوا جسمیں ٹیلر ماسڑ پرویز احمد خواجہ ساکن فرکن میلیال کرالہ پورہ معمولی زخمی ہوگیا تاہم دکان کے قریب موجودعبدالحمید سانگو ولد عبد الرشید سانگو ساکن فرکن میلیال کرالہ پورہ موقع پر ہی جا ں بحق ہوگیا۔ فوج اور پولیس نے ٹیلر ماسٹر پرویزا حمد کے دکان کی تلاشی لی جس کے دوران 15سے ہتھ گولے بر آمد کئے گئے اور پرویز احمد کو گرفتار کیا گیا ۔واضح رہے کہ  سنیچر کواسی طرح کے ایک واقعہ میں نستہ ژھن گلی (سادھنا ) کے نزدیک کھپی بہک گبر ہ کرناہ کے رہنے والے شبیر احمد کا پیر بارودی شل سے ٹکرا گیا اور وہ دھماکے میں جاں بحق ہوا۔  

منشیات کیخلاف کارروائی | 3گرفتار ، نشہ آور ادویات بھی ضبط

سرینگر//منشیات اور نشیلی ادویات کا کاروبار کرنے والوں کے خلاف مہم جاری رکھتے ہوئے سرینگر پولیس نے دو منشیات فروشوں کی گرفتاری عمل میں لا کر اُن کے قبضے سے کوڈین بوتلیں برآمد کرکے ضبط کیں۔  پولیس نے نالہ مار روڑ پر سید کوچہ کاوڈارہ کے نزدیک ناکہ چیکنگ کے دوران ایک آٹو زیر نمبر JK01V-4404 کو روک کر اُس میں سوار دو منشیات فروشوں واجد احمد بیگ ولد غلام محمد ساکن شاداب کالونی الٰہی باغ اور عابد حسین ڈار ولد مرحوم غلام حسن ساکن بخشی آباد کالونی بٹہ مالو گرفتار کر کے انکے قبضے سے 48کوڈین بوتلیں برآمد کرکے تحویل میں لے لیں۔  اُن کے خلاف ایف آئی آر زیر نمبر 38/2019کے تحت مہاراج گنج پولیس اسٹیشن میں کیس درج کرکے تحقیقات شروع کی ہے۔ ادھر پولیس نے کہکشا ں ہوٹل نائو پورہ کے نزدیک ناکہ چیکنگ کے دوران عبدالرشید گنائی ولد محمد رمضان ساکن پازال پورہ ماگام ہندواڑہ کی گرفتاری عمل میں لاکر اُس ک

سوپور اور شوپیان میں مسلح جھڑپیں | 4 جنگجو، غیر ریاستی مزدور اور فوجی ہلاک،7رہائشی ڈھانچے خاکستر

سوپور+شوپیان// سوپور اور شوپیان میں مسلح تصادم آرائیوں کے دوران4جنگجو ، ایک بہاری مزدور اور ایک فوجی جاں بحق جبکہ دو فوجی اہلکار زخمی ہوئے۔ شوپیاں میں 40گھنٹے تک جھڑپ جاری رہی جس کے دوران مقام جھڑپ کے نزدیک مظاہرین اور فورسز میں شدید جھڑپیں ہوئیں جس میں نصف درجن مظاہرین کو پیلٹ لگے۔ضلع میں انٹر نیٹ سہولیات دوسرے روز بھی بند رہیں جبکہ کاروبار اور ٹریفک کی نقل وحمل پر بھی اثر پڑا۔ سوپور  شمالی کشمیر کے سوپور وارہ پورہ، ملما پنپورہ میں32آر آر، سی آر پی ایف اور ایس او جی سوپور نے علاقے میں جنگجوئوں کی موجود گی کی اطلاع ملنے کے بعد محاصرے کیا اور تلاشی کاروائیاں شروع کیں ۔اس دوران جنگجوئوں نے فورسز پارٹی پر اند دھند فائرنگ کر کے محاصرہ توڑ کر فرار ہونے کے کوشش کی تاہم فورسز نے پہلے ہی تمام راستوں کو سیل کر دیا تھا۔ فورسز نے بھی جوابی فائرنگ کی جس دوران یہاں کچھ دیر تک گولیو

سبھی مین سٹریم پارٹیاں متحد: محبوبہ مفتی

بڈگام//پی ڈی پی صدر محبوبہ مفتی کا کہنا ہے کہ جموں وکشمیر کی خصوصی پوزیشن کے دفاع کے حوالے سے سبھی مین اسٹریم سیاسی جماعتیں متحد ہیں۔انہوں نے بتایا کہ جموں وکشمیر کو جن حالات کا سامنا اس وقت درپیش ہے، اُن کے تناظر میں ہمیں ہر اُس بات اور بیان سے دور رہنا ہوگا جس سے ہمارے اتحاد کو نقصان پہنچنے کا اندیشہ ہو۔ وسطی ضلع بڈگام میں میڈیا کیساتھ بات کرتے ہوئے محبوبہ مفتی نے کہا  ’’ہم چاہتے ہیں کہ پی ڈی پی، نیشنل کانفرنس، کانگریس اور دیگر سیاسی جماعتوں کے ورکر متحد ہوجائیں تاکہ ہم اجتماعی طور پر کسی بھی صورتحال کا مقابلہ کرسکیں‘‘۔ محبوبہ مفتی نے بتایا کہ ’’دفعہ 35Aاور 370کا تحفظ یقینی بنانے کیلئے جموں وکشمیر کی مین اسٹریم سیاسی پارٹیاں کسی بھی حد تک جانے کیلئے تیار ہیں‘‘۔جموں وکشمیر میں اُبھرتی صورتحال کے تناظر میں کل جماعتی اجلاس بلائے جانے

مرکز کنفیوژن دور کرے :سجاد لون

 سرینگر //پیپلز کانفرنس چیئر مین سجاد غنی لون نے کہا ہے کہ سرکار کی جانب سے جاری کئے جانے والے متعدد حکمناموں کی وجہ سے اہل وادی کو خوف کا شکار بنایا جارہا ہے۔سجاد لون نے کہا’’ یہ انتہائی اہم ہے کہ حکومت وقت یہ نہ سوچے کہ کشمیرمحض ایک زمینی ٹکڑے کا نام ہے بلکہ کشمیر کے جغرافیائی خطے کے انسانی پہلو بھی ہیں۔سجاد لون نے مزید کہا کہ حکومتی سطح پر جاری ہونے والے متعدد حکمناموں نے گذشتہ کچھ روز سے اہل وادی کے اندر خوف اور غیر یقینیت کو جنم دیاہے۔انہوں نے کہا’’سوشل میڈیا پر ایڈائزریوں کی بڑی تعداد حفاظتی معاملات سے جڑی ہیں،یہ سیکورٹی فورسز کی سرگرمیوں سے متعلق یا اُن کی تعیناتی سے متعلق ہیں،یہ یاتریوں اور سیاحوں کو کشمیر چھوڑ کر چلے جانے سے متعلق ہیں،یہ ٹھیک نہیں ہے کہ حکومت وقت یہاں رہنے والے لوگوں تک محض ایڈوائزریوں کے ذریعے پہنچے‘‘۔سجاد لون نے مرکزی

پارلیمنٹ میں وضاحت کیجائے:عمر

سرینگر // نیشنل کانفرنس نائب صدر عمر عبد اللہ نے مرکزی سرکارسے کہا ہے کہ وہ جاری کی گئی ایڈوائزری کے بارے میں وضاحت کرے۔ سنیچر کو گورنرستیہ پال ملک سے ملاقات کرنے کے بعد میڈیا سے بات کرتے ہوئے انہوں نے کہا ’’گورنر نے یقین دہانی کرائی  ہے کہ ریاست کی خصوصی پوزیشن کو تبدیل کرنے کا کوئی منصوبہ نہیں ہے‘‘۔عمر نے کہا کہ وادی میں پچھلے کچھ دنوں سے جو خوف وڈر کا ماحول بنا ہوا تھا اس نے کل کے حکم نامہ کے بعد بہت زیادہ حالات بگاڑ دیئے ، اچانک لوگ پٹرول پمپوں کی طرف دوڑ پڑے، دکانوں کو خالی کر دیا گیا  سونہ مرگ ،گلمرگ اور پہلگام علاقے ، جوکبھی ملی ٹنسی کا شکار نہیں رہے، اُن کو بھی خالی کیا گیا جس کا اثر عام لوگوں پر پڑا ۔انہوں نے کہا’’ ہمیں کہیں سے بھی صیحح جواب سننے کو نہیں مل رہا ہے‘‘ ۔انہوں نے کہا ’’ سچ سننے کیلئے جب ہم افسرو

منشیات کیخلاف مرکزی تفتیشی ادارہ میدان میں آگیا

کپوارہ//ایک مرکزی تفتیشی ادارے ڈائریکٹوریٹ آف ریو نیو انٹلی جنس (ڈی آر آئی)کی طرف سے سرحدی ضلع کرناہ کپوارہ میں ڈرامائی کارروائی کے دوران منشیات فروشو ں کیخلاف ایک خصوصی کارروائی میں 7کلو سے زائد ہیروئن ضبط کی ۔ اس کارروائی میں ابھی تک ایک ڈرائیور سمیت 2افراد کو حراست میں لیا جاچکا ہے۔ذرائع سے کشمیر عظمیٰ کو معلوم ہوا ہے کہ جمعہ کو پولیس اور ڈائریکٹوریٹ آف ریو نیو انٹلی جنس نے کرنا سے کپوارہ آرہی ایک ٹا ٹا سومو گاڑیزیر نمبر JK09/4751 کو روک کر اسکی تلاشی لی۔تفتیشی ایجنسی کو اس بات کی مصدقہ اطلاع ملی تھی کہ مذکورہ گاڑی سے منشیات کی بھاری مقدار سمگل کی جارہی ہے۔گاڑی کی تلاشی کے دوران قریب 3کلو گرام ہیر ئون ضبط کی گئی جبکہ سومو ڈرائیورسجاد احمد کو گرفتارکیا گیا ۔ذرائع کا کہنا ہے کہ ڈرائیور کی تفتیش کے دوران اُس نے تحقیقاتی ایجنسی کو اہم معلومات فراہم کیں جس کے بعدسنیچر کوکرناہ میں لا

۔20ہزار سیاحوں کی واپسی ،معیشت کی تباہی کا اعلان:چیمبر آف کامرس

سرینگر// حکومت پروادی میں’’ آپریشن افراتفری‘‘ شروع کرنے کا الزام عائد کرتے ہوئے چیمبر آف کامرس اینڈ انڈسٹریزنے کہا ہے کہ سرکاری احکامات سے ریاست کی معیشت کو نا قابل تلافی زک پہنچنے کا خدشہ ہے۔چیمبر آف کامرس اینڈ انڈسٹریز کے صدر شیخ عاشق حسین نے پریس کانفرنس میں کہا ’’ فورسز کی نقل و حرکت سے متعلق خفیہ معلومات کو دانستہ طور پر منکشف کرنا،سرکاری میٹنگوں میں مباحثوں اور حکم نامہ کی تفصیلات،عوامی سطح پر افراتفری ہونے والے حکم ناموں کی اجرائی کے علاوہ افواہوں اور پرپگنڈاکے نتائج میں ریاست میں غیر یقینی بحران پیدا ہوگیا ہے۔انہوں نے کہا کہ پرنسپل سیکریٹری محکمہ داخلہ کی طرف سے جاری حکم نامہ سے ماحول میں میز کشیدگی پیدا ہوگئی ہے۔ انہوں نے کہا کہ جامع آپریشن کرکے ایس آر ٹی سی گاڑیاں اور دیگر سرکاری گاڑیوں کو سیاحی مقامات پر یاتریوں اور سیاحوں کو واپس لان

پولیس کو غیر مسلح کرنے کی افواہیں | بد نیتی پر مبنی مجرمانہ عمل:منیر خان

سرینگر//ایڈیشنل ڈائریکٹر جنرل آف پولیس (لا اینڈ آرڈر) منیر احمد خان نے پولیس اہلکاروں کو غیر مسلح کئے جانے کی افواہوں کو مسترد کرتے ہوئے اسے بے بنیاداور بدنیتی پر مبنی قرار دیا۔ منیر احمد خان نے کہا کہ اس طرح کی باتیں پھیلانے والوں کیخلاف سخت کارروائی عمل میں لائی جائیگی۔سوشل میڈیا پر وائرل ہوئے ٹویٹ جس میں اس بات کا دعویٰ کیا گیا تھا کہ ’’پولیس اہلکاروں کو ہدایت کی گئی ہے کہ وہ اپنا اسلحہ سرکار کو واپس کریں اور تمام پولیس اسٹیشنوں کا چارج سی آر پی ایف اور فوج کے حوالے کردے‘‘ پر اپنے رد عمل میں منیر احمد خان کا کہنا تھا کہ اس طرح کی افواہ بازی مجرمانہ فعل ہے۔انہوں نے کہا کہ جموں وکشمیر پولیس نے ریاست اور ملکی سلامتی کیلئے غیر معمولی قربانیاں دی ہیں اور یہ فورس مستقبل میں بھی قربانی دینے سے گریز نہیں کریگی۔   ا

ین آئی ٹی سرینگر نوٹس کی وضاحت

سرینگر//سرینگر ضلع انتظامیہ نے واضح کیا ہے کہ این آئی ٹی سرینگر میں کلاسوں کو معطل کرنے کے سلسلے میں لوگوں میں کنفیوزن پیدا ہوا ہے ۔ انتظامیہ نے کہا ہے کہ کلاسوں کے کام کو معطل کرنے کا فیصلہ ادارے کا اپنا فیصلہ ہے اور اس سلسلے میں انتظامیہ کی جانب سے کوئی حکمنامہ جاری نہیں کیا گیا ۔ ڈپٹی کمشنر سرینگر ڈاکٹر شاہد اقبال چودھری نے کہا ہے کہ انتظامیہ نے اس طرح کے سبھی اداروں کے سربراہوں کو مشورہ دیا تھا کہ وہ موجودہ صورتحال کے پیش نظر ہوشیار رہیں ۔ انہوں نے کہا کہ این آئی ٹی کے طالب علموں کیلئے ادارے کے منتظمین کی درخواست پر ٹرانسپورٹ فراہم کیا گیا ۔ دریں اثنا این آئی ٹی سرینگر نے اپنا حکمنامہ واپس لیتے ہوئے معذرت کا اظہار کیا ہے ۔ منتظمین نے کہا ہے کہ ادارے میں اگلے ہفتے چھٹیوں کا آغاز ہو رہا ہے اور اس کو موجودہ صورتحال کے ساتھ جوڑا نہیں جانا چاہئے ۔ یہ بات قابلِ ذکر ہے کہ وادی کشمیر ک

سیاحتی صنعت کے تابوت میں آخری کیل:سیاحتی تاجر برادری

سرینگر// سیاحتی تجارت سے وابستہ رکھنے والے لوگوں نے حکومت کی طرف سے سیاحوں اور یاتریوں کے نام کشمیر چھوڑنے کی ایڈوائزری پر تشویش کا اظہار کیا،جبکہ سرکار کی اس کاروائی کو کشمیر کی دم توڑتی سیاحتی صنعت کے تابوت میں آخری کیل قرار دیا۔ٹورسٹ ٹریڈ فرٹنٹی نے کہا کہ اس ایڈوئزاری کو اس وقت جاری کیا گیا،جب یاتری سفر کے مختلف پڑائو پر تھے۔ انہوں نے یاترا کو ختم کرنے کے فیصلے کو کشمیریوں کی شبیہ کو مسخ کرنے سے تعبیر کرتے ہوئے کہا کہ کشمیر ایک  رودار معاشرہ ہے۔انہوں نے کہا کہ کشمیر بطور ایک پرامن سیاحتی مقام کی شبیہ کو بھی داغدار بنادیا گیا۔ ٹورازم فرٹنٹی نے اس بات پر حیرانگی کا اظہار کیا کہ اگر لوگوں کی سلامتی اور حفاطت سرکار کیلئے ترجیج نہیں ہے،جبکہ سیاحون کو وادی چھوڑ کر چلے جانے کی ہدایت دی گئی۔انکا کہنا تھا کہ سیاحوں کو ہوٹلون،ہاوس بوٹوں،گیسٹ ہائوسوں سے باہر نکالنا یہاں کی روایت نہیں ہے۔

یاتری اور سیاح کشمیر چھوڑ کر چلے جائیں

   یاتریوں میں خوف کی لہر،وادی میں بے چینی کی کیفیت ،اے ٹی ایمزاور پٹرول پمپوں پر قطاریں لگ گئیں     سرینگر //حکومت نے امرناتھ یاتریوں اور سیاحو ں کیلئے سیکورٹی ایڈوائزری جاری کرتے ہوئے اُن سے کہا ہے کہ وہ وادی میں اپنا قیام مختصر کرکے جتنا جلد ممکن ہوسکے کشمیر چھوڑکر چلے جائیں۔پرنسپل سیکرٹری داخلہ شالین کابرا کی طرف سے جاری ایک حکمنامے میں کہا گیا ہے کہ امرناتھ یاترا کو نشانہ بنانے سے متعلق انٹلی جنس رپورٹیں موصول ہوئی ہیں۔چنانچہ ،وادی میں موجودہ سلامتی صورتحال اور سیاحوں و امرناتھ یاتریوں کی سلامتی کو مد نظر رکھتے ہوئے یاتریوں اور سیاحوں کو ہدایات دی جاتی ہیں کہ وہ وادی میں اپنا قیام مختصر کریں اور جلد از جلد واپس لوٹنے کے اقدامات کریں۔اس سے قبل مرکزی وزارت داخلہ نے قریب ایک ہفتہ قبل سی آر پی ایف، بی ایس ایف،آئی ٹی بی پی، ایس ایس بی اور دیگر نیم فوجی دست

لوگ افواہوں پر کان نہ دھریں:گورنر

سرینگر//ریاستی گورنر نے لوگوں سے اپیل کی ہے کہ وہ افواہوں پر کان نہ دھریں اور اپنا کام کاج جاری رکھیں۔ گورنر نے اُن سے ملاقات کرنے والے وفد جس میں محبوبہ مفتی، شاہ فیصل اور سجاد لون کے علاوہ عمران انصاری شامل تھے، سے ملاقات کی، جنہوں نے وادی کی موجودہ صورتحال کے بارے میں گورنر کی معاونت طلب کی تھی۔ سرکاری بیان میں کہا گیا ہے کہ گورنر نے وفد کو بتایا کہ سیکورٹی ایجنسیوں کے پا س یاترا پر حملہ ہونے کی مصدقہ اطلاع تھی جس کی وجہ سے حفاظتی اقدامات اٹھائے گئے۔ انہوں نے کہا کہ سیکورٹی ایجنسیوں کو اسی لئے تیاری کی حالت میں رکھا گیا تاکہ یاتریوں اور سیاحوں کو کوئی نقصان نہ پہنچے۔ گورنر نے وفد کو بتایا کہ کچھ گروپ تشدد آمیز صورتحال چاہتے ہیں لہٰذا یہ ریاست اور سیکورٹی ایجنسیوں کی ذمہ داری ہوتی ہے کہ شہریوں کو تحفظ فراہم کرے۔ گورنر نے سیاسی لیڈران سے کہا کہ وہ اپنے حمایتیوں سے کہیں کہ وہ خامو

مرکز آئینی ضمانتیں برقرار رکھے

نئی دلی//کانگریس پارٹی کی جموں کشمیر سے متعلق پالیسی پلاننگ گروپ نے مرکزی حکومت سے کہا ہے کہ وہ ریاست جموں کشمیرکودی گئی آئینی ضمانتوں کوبرقرار رکھیں۔ ایک بیان کے مطابق نئی دہلی میں پارٹی کی جموں وکشمیر سے متعلق پالیسی پلاننگ گروپ کی میٹنگ میں مرکزی وزارت داخلہ اور حکومت جموں وکشمیرکی اُن مسلسل رپورٹوں پر فکرمندی کااظہار کیا گیا جن سے حکومت ہند کے ارادوں سے متعلق خوف اور خدشات پیدا ہوئے ہیں۔ ریاست میں حفاظتی دستوں کی بھاری تعیناتی ،امرناتھ یاترا کی منسوخی اور یاتریوں اور سیاحوں کو کشمیر سے فوری طور چلے جانے کی ایڈوائزری جاری کرنے سے عدم تحفظ اور خوف کا ماحول پیدا ہواہے۔گروپ نے حکومت پرزوردیا ہے کہ وہ ایسا کوئی فیصلہ نہ لے جس سے حالات مزیدابتر ہوں گے ۔گروپ نے جموں کشمیرمیں دفعہ370اور35Aکو ختم کرنے سے متعلق مرکز کے ارادوں سے ریاست کے لوگوں میں پائے جارہے خوف پر بھی بحث کی گئی ۔میٹنگ ساب