سعودیہ سے سفارتکاری ختم کرنے کی خبریں من گھڑت ہیں: مراکش

11 فروری 2019 (00 : 01 AM)   
(      )

یو این آئی
رباط //  مراکشی وزیر خارجہ نے سعودی عرب سے سفارتی تعلقات میں کشیدگی کی خبروں کی تردید کرتے ہوئے کہا ہے کہ متحدہ عرب امارات اور سعودیہ سے سفارت کار واپس بلانے کی خبریں من گھڑت ہیں۔ تفصیلات کے مطابق مراکش اور سعودی عرب کے درمیان سفارتی تعلقات میں کشیدگی اور ریاض سے سفیر واپس بلانے کی خبریں گردش کررہی تھی، جن کی مراکشی وزیر خارجہ ناصر بوریطہ نے تردید کردی۔ مراکشی وزیر خارجہ کا کہنا تھا کہ سفارتی تعلقات میں کشیدگی کی خبریں مراکش کے سرکاری ذرائع سے نشر نہیں ہوئیں اس کیلیے یہ بیبنیاد اور غلط ہیں، ایسے فیصلوں کا اعلان مراکش حکومت اپنے میڈیا اداروں کے ذریعے کرتی ہے۔ خیال رہے کہ کچھ روز سے یہ خبریں عام ہورہی تھیں کہ سعودی عرب کی جانب سے یمن جنگ سمیت عالمی سطح اٹھائے گئے اقدامات پر اختلاف کرنے والی مراکشی حکومت اور سعودیہ کے درمیان سفارتی تعلقات میں تناؤ پیدا ہوگیا۔ تاہم کچھ خبر رساں اداروں کا کہنا ہے کہ مراکشی وزارت خارجہ نے سعودیہ کے خلاف مؤقف دینے کیلیے عمداً غیر ملکی میڈیا کا انتخاب کیا تھا جبکہ مراکش کے کچھ دیگر ذرائع سے بھی سعودیہ اور مراکش کے درمیان کشیدگی کی خبریں عام ہوئیں تھیں۔ میڈیا کے مطابق 2026 میں ہونے والے فٹبال کے عالمی کپ کی میزبانی کیلئے گزشتہ برس ہونے والی ووٹنگ میں سعودی عرب شمالی امریکا کی مہم چلارہا تھا۔