تازہ ترین

پہاڑی علاقوں میں حادثات کی بڑھتی تعداد سے خفا

نیشنل سٹوڈنٹس فیڈریشن کا جموں یونیورسٹی کے باہر مظاہرہ

11 اکتوبر 2018 (00 : 01 AM)   
(      )

 جموں//بالائی علاقوں بالخصوص خطہ چناب میں آئے روز ہونے والے حادثات پر گہرے غم و غصہ کا اظہار کرتے ہوئے نیشنل سٹوڈنٹس فیڈریشن کے پرچم تلے جموں یونیورسٹی کے داخلی گیٹ پر طلاب نے مظاہرہ کیا، ان کا کہنا تھا کہ ریاستی حکومت، محکمہ ٹرانسپورٹ و ٹریفک، پولیس اور تعمیری ایجنسیاں ان حادثات پر قابو پانے کے لئے کوئی حکمت عملی نہیں اپنا رہی ہیں جس کے نتیجہ میں آئے روز قیمتی انسانی جانیں تلف ہو جاتی ہیں۔ اپنے خطاب میں این ایس ایف کے سٹیٹ سیکرٹری اشتیاق نائیک نے کہا کہ پچھلے چند ماہ کے دوران چناب ویلی میں 17سڑک حادثات رونما ہو چکے ہیں جس کی بڑی وجہ سڑکوں کی خستہ حالی اور گاڑیوں میں ائور لوڈنگ ہے ۔ انہوں نے بھلیسہ کی سڑکوں کا ذکر کرتے ہوئے کہا کہ ان سڑکوں کی تعمیر و مرمت کے نام پر اگر چہ کروڑ ہا روپے خرچ دکھایا جاتا ہے لیکن زمینی صورتحال تشویش کن ہے اور ان سڑکوں کی حالت دن بدن بد سے بدتر ہوتی جا رہی ہے ۔ محکمہ ٹریفک کے اہلکاروں کو اپنے فرائض سے کوتاہی کرنے کے لئے ہدف تنقید بناتے ہوئے انہوں نے کہا کہ گزشتہ دنوں بھلیسہ کالجگاسر لنک روڈ پر ایک ٹاٹا سومو کو حادثہ پیش آئے جس پر 15مسافر سوار تھے لیکن محکمہ ٹریفک کے اہلکار ائور لوڈنگ پر روک لگانے میں اپنا کردار ادا نہیں کرتے ہیں۔ ریاستی حکومت کو سڑک پر قابو پانے کے لئے ٹھوس اقدامات کرنے کی اپیل کرتے ہوئے انہوں نے متنبہ کیا کہ اس مانگ کے حق میں طلاب سڑکوں پر اترنے سے بھی گریز نہیں کریں گے۔ اس موقعہ پر مشکور الٰہی خاں یونیورسٹی یونٹ صدر، شیتل سنگھ ، ظفر حسین ، منیش شرما، محمد انیس، محمد عارف ، ظفر حسین انل شرما اور دیگران بھی موجود تھے۔