تازہ ترین

سمندری طوفان ’تتلی ‘ آندھرا پردیش سے 230کلومیٹر دور

آئندہ 12 گھنٹے میں مزید خطرناک شکل اختیار کرنے کا اندیشہ ، وارننگ جاری

11 اکتوبر 2018 (00 : 01 AM)   
(      )

نئی دہلی// خلیج بنگال میں اٹھا سمندری طوفان 'تتلی' آج صبح ساڑھے گیارہ بجے آندھراپردیش کے کلنگاپتنم سے 230کلومیٹر اور اوڈیشہ کے گوپال پور سے 280کلومیٹر کی دوری پر پہنچ چکا تھا۔ محکمہ موسمیات سے موصولہ اطلاع کے مطابق 'تتلی' پندرہ کلومیٹر فی گھنٹہ کی رفتار سے شمال مغرب کی طرف بڑھ رہا ہے ۔ اس کے آئندہ 12 گھنٹے میں مزید خطرناک شکل اختیار کرنے کا اندیشہ ہے ۔محکمہ نے بتایا کہ طوفان گوپال پور اور کلنگاپتنم کے درمیان جمعرات کی صبح ساحل سے ٹکرائے گا۔ اس کے بعد اس کے شمال مشرق کی طرف مڑھ کر اودیشہ کے شالی حصہ سے ہوتے ہوئے مغربی بنگال کے گنگاکے میدانی علاقوں کی طرف بڑھنے کااندازہ ہے ۔ جمعرات کی نصف رات تک یہ نہایت سنگین طوفان سے سمندری طوفان میں اور اس کے بعد گہرے دباو کے علاقہ میں تبدیل ہوجائے گا۔ جمعرات کی صبح 5.30بجے سے ساڑھے گیارہ بجے تک متاثرہ علاقوں میں 140کلومیٹر سے 150کلومیٹر کے درمیان کی رفتار سے ہوائیں چلنے کی آثار ہیں۔ جمعرات کو اوڈیشہ میں بیشتر مقامات اور شمالی ساحلی آندھراپردیش میں کئی مقامات پر شدید سے بہت زیادہ شدید بارش کی وارننگ جاری کی گئی ہے ۔ آندھراپردیش کے وشاکھا پٹنم ، وجے نگرام اور شری کاکلم اور ادیشہ کے گجپتی، گنجم ، خردہ، نیا گڑھ اوشر پوری اضلاع میں طوفان سے نقصان کا اندیشہ ہے ۔ ان علاقوں میں ماہی گیروں کو 11اکتوبر تک سمندر میں نہ جانے کا مشورہ دیا گیا ہے ۔یو این آئی