تازہ ترین

مزید خبریں

25 ستمبر 2018 (00 : 01 AM)   
(      )

عسکری قیادت سے بات چیت ضروری:انجینئر 

مسلمانوں پر چینی مظالم کو روکنے کیلئے پاکستان خاموشی توڑ دے

لنگیٹ //اے آئی پی سربراہ انجینئر رشید نے اس بات کو دہرایا ہے کہ کشمیر میں خون خرابہ روکنے کی کنجی نئی دلی کے پاس ہے اور اس کا واحد طریقہ عسکری قیادت ، پاکستان اور جائز سیاسی قیادت کو بلا شرط مذاکرات کیلئے دعوت دینے میں مضمر ہے۔ ہائراسکینڈری اسکول ہندواں پورہ لنگیٹ میں سالانہ تقریب میں شرکت کے بعد ذرائع ابلاغ کے نمائندوں کے ساتھ گفتگو کرتے ہوئے انجینئر رشید نے کہا کہ خون خرابہ کسی کے لئے بھی فائدہ مند نہیں لیکن اس سے روکنا ہر حال میں ہندوستان ہی کے دائرہ اختیار میں ہے۔ انجینئر رشید نے چین کے زنگ یانگ اور اگیار خطوں میں لاکھوں مسلمانوں پر چینی سرکار کی طرف سے مظالم ڈھائے جانے کی کاروائیوں کے متعلق ایمنسٹنی انٹر نیشنل کے سخت بیان کو حوصلہ افزاء قرار دیتے ہوئے پاکستانی سرکار سے مطالبہ کیا کہ وہ زنگ یانگ کے مسلمانوں پر ڈھائے جانے والے مظالم پر خاموشی توڑ دے ۔ انہوں نے کہا ’’جہاں کشمیر اور دیگر متنازعہ علاقوں میں پاکستان کی سرکار کا مظلوموں کے حق میں آواز اٹھانا ہر جگہ باعث تعریف سمجھا جاتا ہے وہاں پاکستانی سرکار کو یہ بات ذہن میں رکھنی ہوگی کہ دنیا بھر کے مظلوم مسلمانوں کی کافی امیدیں پاکستان سے واسطہ ہیں اور چین کے بے بس مسلمان اس سے ہرگز مستثنیٰ نہیں ٹھہرائے جا سکتے ۔ جس طرح مختلف کیمپوں میں زنگ یانگ کے مسلمانوں کو عذاب و عتاب کا نشانہ محض اس لئے بنایا جا رہا ہے کہ وہ اپنا دین چھوڑ دیں اس کی جتنی مذمت کی جائے وہ کم ہے ۔ پاکستانی سرکار کا یہ اخلاقی فرض ہے کہ وہ اپنے سب سے قریبی دوست چین کی سرکار کو چینی مسلمانوں کے خلاف دہشتگردی جاری رکھنے سے باز رکھے اور بغیر کسی بہانہ بازی اور تاخیر کے زنگ یانگ کے مسلمانوں کے حق میں مضبوط اور موثر ڈھنگ سے آواز اٹھائے ۔
 
 

۔ 100کروڑ روپے مالیت کے ٹیکنالوجی مرکزکا قیام

بی بی وِیاس نے مرکزی حکومت کے ساتھ تبادلہ خیا ل کیا

 جنگلاتی اراضی پر قبضے کے الزامات  جائزہ لینے کیلئے کمیٹی تشکیل دی گئی

سرینگر/ /حکومت نے ایک کمیٹی تشکیل دینے کو منظوری دی ہے جو جنگلاتی اراضی پر قبضے کے الزامات کا جائزہ لے گی۔یہ کمیٹی رام نگر تحصیل کوٹ رانکا ضلع راجوری میں خسرہ نمبر 653من کے تعلق سے جنگلاتی اراضی پر غیر قانونی قبضے کی شکایت کا جائزہ لے گی ۔ایڈیشنل کمشنر جموں اس کمیٹی کے چیئرمین ہوں گے جبکہ ایڈیشنل ڈپٹی کمشنر راجوری ،کنزرویٹر جنگلات ویسٹ سرکل راجوری ، ایس ایس پی راجوری اور سی سی ایف جموں کی جانب سے نامزد جانے والے ڈی ایف او اس کمیٹی کے ممبران ہوں گے۔کمیٹی کے چیئرمین کو کوئی اور ممبر نامزد کرنے کا اختیار دیا گیا ہے۔یہ کمیٹی اپنی حتمی رِپورٹ حکومت کو دو ماہ کے اندر پیش کرے گی۔
 

میونسپل انتخابات2018 

لیہہ میں کنٹرول روم قائم7 نامزدگیاں داخل 

لیہہ//میونسپل انتخابات2018 کے سلسلے میں ریاست کے چیف الیکٹورل افسر نے ڈی سی آفس لیہہ کی الیکشن سیل میں کنٹرول روم قائم کرنے کی ہدایت دی ہے۔ضلع الیکشن افسر نے تاشی انگمو ای این ٹی، گرمیت سیانگ، ایچ اے ڈی آئی سی آفس، سٹینزن لُنڈُپ،جونئیر اسسٹنٹ ڈی آئی سی، دورجے انگچُک سٹیٹسٹکل اسسٹنٹ، ڈی آر ڈی اے اور محمد زکریا آئی پی او ڈی آئی سی لیہہ کو کنٹرول روم کے انچارج تعینات کرنے کے احکامات دیئے ہیں۔کنٹرول روم ڈسٹرکٹ الیکشن افسر لیہہ ڈاکٹر اودہم داس شرما کنٹرول روم کی نگران ہوں گے۔الیکشن سیل میں ٹول فری نمبر18001807072 اور لینڈ لائین نمبر01982251774 کے علاوہ موبائل نمبر9419326331 دستیاب رہیں گے۔ادھر لیہہ میونسپل انتخابات کے لئے ایک خاتون اُمیدوار سمیت 7 اُمیدواروں نے اپنے کاغذات نامزدگی داخل کئے۔قابل ذکر ہے کہ لیہہ میں نامزدگیاں داخل کرنے کی آخری تاریخ25 ستمبر2018 ہے اور اس روز سہ پہر تین بجے تک کاغذاتِ نامزدگی داخل کئے جاسکتے ہیں۔
 
 

کشمیر چیمبر آف کامرس اینڈ انڈسٹریز کی ووٹ شماری مکمل

۔29ستمبر کو سالانہ اجلاس میںنتائج کا اعلان ہوگا 

سرینگر//کشمیر چیمبر آف کامرس اینڈ انڈسٹریز نے پیر کو حال ہی میں ایگزیکٹو کمیٹی کی تشکیل کیلئے ڈالے گئے ووٹوں کی شماری مکمل کی۔ذرائع کے مطابق ابتدائی نتائج میں پتہ چلا ہے کہ انتخابات میںیونائٹیڈ21کے بیشتر امیدوار کامیاب ہوئے ہیںجو کہ کریڈیبل21کے خلاف میدان میں تھے۔ذرائع کے مطابق29ستمبر کو منعقد ہونے والے سالانہ عام اجلاس کے دوران نتائج کا اعلان کیا جائے گا،جس کے دوران کشمیر چیمبر آف کامرس اینڈ انڈسٹریز کیلئے نئے نظم کو بھی تشکیل دیا جائے گا۔ شیخ عاشق اور ناصر حامد خان کے سربراہی والے یونائٹیڈ21 کے ایک ممبر کا کہنا ہے کہ گروپ چیمبر کے الیکشن کمیشن کے سامنے اپیل کرنے پر غور کر رہی ہے کہ60ووٹوںپر نظر ثانی کی جائے،جس کا فیصلہ الیکشن کمیشن کو کرنا ہے۔ذرائع کے مطابق کشمیر ہوٹل اینڈ ریسٹورنٹ اونرس فیڈریشن کے صدر فاتح امیدواروں کی فہرست میں شامل ہیں۔ذرائع کا کہنا ہے کہ21 آگے چل رہے امیدواروں میں عبدالواحد ملک551،جاوید احمد ٹینگہ546،شیخ عاشق537،فاروق امین528،ساجد فاروق شاہ528،سید مسعود شاہ528،ڈاکٹر ائے ایم ر526، فیض احمد بخشی524،نذیر احمد خان524،شیخ عمران519، عاشق احمد شنگلو516مظفر ماجد جان514،عاشق صدیق ڈگہ511، فیاض احمد پنجابی510 الطاف احمد ترمبو509،فیروز احمد مکیر508،منظور احمد پختون508، عمر تبت بقال506،غلام نبی بٹ505،شیخ گوہر علی503 اور بابر چودھری502وٹوں کے ساتھ دوڑ میں آگے ہیں۔42ممبران پر مشتمل تجارتی فورم کشمیر چیمبر آف کامرس اینڈ انڈسٹریز گزشتہ کئی دنوں سے21ممبران پر مشتمل ایگزیکٹو نظم تشکیل دینے کیلئے انتخابات لڑ رہی ہے۔
 

سرینگرجموں شاہراہ پردوطرفہ ٹریفک بحال 

 محمد تسکین 
بانہال // بارشوں اور پسیوں کے گر آنے کی وجہ سے اتوار کے روز دن بھر ٹریفک کی نقل و حرکت کیلئے متاثر رہنے کے بعد جموں سرینگر شاہراہ پر پیر کی صبح ٹریفک کو دوبارہ بحال کیا گیا ہے تاہم ناشری ٹنل کے آر پار اور بانہال رام بن سیکٹر میں وقفے وقفے کے ٹریفک جام کی وجہ سے گاڑیوں کی آمدورفت سست رفتاری کے ساتھ جاری رہی ۔ اتوار کے روز ادہمپور کے نزدیک گر آئی ایک بڑی پسی کی وجہ سے شاہراہ پر ٹریفک کی نقل وحرکت روک دی گئی تھی اور اتوار کی رات دیر گئے اسے قابل آمدورفت بنایا گیا تھا تاہم رام بن بانہال سیکٹر میں گرتے پتھروں کے خدشے کے پیش نظر رات کے اوقات کے بجائے گاڑیوں کی آمدورفت پیر کی صبح بحال کی گئی اور ادہمپور ، نگروٹہ اور دھار روڈ پر بند کئے گئے ٹریفک کو ترجیحی بنیادوں پر چلنے کی اجازت دے دی گئی ۔ ٹریفک زرائع نے کشمیر عظمی کو بتایا کہ ادہمپور کے مقام پرگر آئی ایک بھاری پسی کو اتوار کی رات ہی صاف کرکے شاہراہ کو قابل آمدورفت بنایا گیا تھا لیکن رام بن بانہال سیکٹر میں مختلف مقامات پر گر آنے والے پتھروں کے خطرے کے پیش نظر گاڑیوں کی آمدورفت رات کو معطل رکھی گئی اور پیر کی صبح شاہراہ کی حالت جاننے کے بعد ٹریفک کو چلنے کی اجازت دی گئی ۔ انہوں نے کہا کہ اتوار کی صبح سے ادہمپور میں روکے گئے ٹریفک کو وادی کشمیر کی طرف بڑھنے کی اجازت دی گئی اور پیر کی شام تک معمول کا ٹریفک جاری تھا ۔ انہوں نے کہا کہ پیر کی شام تک بیشتر ٹریفک ٹنل پار کر چکا تھا اور مزید ٹریفک آگے بڑھ رہا ہے ۔ادھر بانہال رام بن سیکٹر اور ناشری ٹنل کے دونوں طرف پیر کی صبح سے ہی ٹریفک جام کا سلسلہ وقفے وقفے سے کئی گھنٹوں تک جاری رہا اور کئی مقامات پر چھوٹی گاڑی والوں کی اورٹیکنگ کی وجہ سے ٹریفک کا سلسلہ بار بار متاثر رہا تاہم شام پانچ بجے بعد ٹریفک جام پر قابو پایا گیا۔ ایک ٹرک ڈرائیور نے کشمیر عظمیٰ کو بتایا کہ وہ رات کے تین بجے ادہمپور سے نکلے ہیں لیکن ٹریفک جام کی وجہ سے انہیں بانہال پہنچنے میں گیارہ گھنٹوں کا وقت لگا جبکہ عام حالات میں یہ سفر چار پانچ گھنٹوں میں طے ہوتا ہے ۔
 

اقلیتی طبقہ کے طلبہ کیلئے وظائف

درخواستوں کی تاریخ میں 31اکتوبر تک توسیع

سرینگر//مرکزی وزارت برائے اقلیتی معاملات نے اقلیتی طبقوں کے لئے پری میٹرک ، پوسٹ میٹرک اور میرٹ کم مینز بیسڈ سکالر شپ سکیموں کے سلسلے میں آن لائن درخواستوں کو پیش کرنے کی آخری تاریخ کو 31؍ اکتوبر 2018ء تک بڑھایا ہے۔
 

حالیہ ایام میں جاں بحق ہوئے جنگجوئوں کو خراج عقیدت

سرینگر//مسلم لیگ نے بانڈی پورہ اور ترال میں جاں بحق ہوئے جنگجوئوں کو خراج عقیدت پیش کرتے ہوئے کہا ہے کہ بھارت جس طرح کشمیر کے اندر خون کی ندیاں بہا رہا ہے وہ پوری انسانیت کے لئے چشم کشا ہے ۔پارٹی ترجمان سجاد ایوبی نے کہا کہ بانڈی پورہ میں جس طرح فوج نے کمیائی ہتھیاروں کا استعمال کر کے لاشوں کو مسخ کیا اور انہیں قابل شناخت نہ چھوڑا وہ نہ صرف ان لاشوں کی بے حرمتی ہے بلکہ یہ اس صدی کی سب سے بڑی سفاکیت کا ثبوت ہے ۔
 

خان سوپوری کی صحتیابی کیلئے دعائوں کی اپیل:پیپلز لیگ

سرینگر//پیپلز لیگ نے پارٹی کے محبوس چیئرمین غلام محمد خان سوپوری کی مسلسل نظربندی اور تیزی سے بگڑتی ہوئی صحت پر تشویش کا اظہارکرتے ہوئے ائمہ مساجد اور خطباء سے دردمندانہ اپیل کی ہے کہ وہ نماز جمعہ کے موقع پرسینئر مزاحمتی قائد خان سوپوری کی جلدصحتیابی اور رہائی کیلئے خصوصی دعائوں کا اہتما کریں۔بیان کے مطابق خان سوپوری کورٹ بلوال جیل کے اندر کئی امراض میں مبتلا ہیں اور انہیںمناسب علاج و معالجہ فراہم نہیں کیا جارہا ہے۔
 

محکمہ جنگلات کے اہلکاروں کو سمگلروں کی دھمکیاں 

 سرینگر//پلوامہ کے مضافاتی دیہات میں جنگل سمگلروں کے خلاف کاروائی عمل میں لانے کے بعد محکمہ جنگلات کے ملازم کو مسلسل جان سے مارنے کی دھمکیاں موصول ر ہی ہیں۔اس سلسلے میں پولیس نے چار سمگلروں کے خلاف کیس درج کرکے تفتیش شروع کردی ہے۔سی این ایس کے مطابق محکمہ جنگلات میں تعینات ملازمین نے ایک ہفتہ قبل سنگرونی پلوامہ میں سمگلروں کے خلاف ایک کاروائی عمل میں لائی جس دوران جنگلات ملازمین اور سمگلروں کے مابین جھڑپیں ہوئیں اور سمگلروں نے آہنی ہتھیاروں سے محکمہ جنگلات پر حملہ کرکے دو ملازمین کو زخمی کردیا۔اس جان لیوا حملے کے بعد پولیس سٹیشن راجپورہ نے 4 سمگلروں کے خلاف ایک کیس زیر ایف آئی آر نمبر 83/18 بتاریخ 18/09/18 کے تحت درج کرلیا۔ اس واقعہ کے بعد جنگل سمگلنگ میں ملوث اہلکاروں نے کئی مرتبہ سراج الدین چیچی کو اہل خانہ سمیت جان سے مارنے کی دھمکیاں دی  ہیں۔مذکورہ ملازم نے دھکیاں دینے والوںکے خلاف فوری کاروائی کا مطالبہ کیا ہے۔
 

لکھن پور میں کوڈین فاسفیٹ کی 900بوتلیں ضبط 

لکھن پور//محکمہ ایکسائز ٹول پوسٹ لکھن پور نے پولیس کے تعاون سے ریاست میں 900 کوڈین فاسفیٹ کی بوتلیں ضبط کی ہیں جنہیں ایک گاڑی نمبر 37D-5980 لے جایا جارہا تھا۔یہ کارروائی این ڈی پی ایس ایکٹ کے تحت پولیس سٹیشن لکھن پور نے عمل میں لائی۔ایکسائز کمشنر طلعت پرویز نے محکمہ کے افسروں کی اس کوشش کو سراہتے ہوئے ڈپٹی ایکسائز کمشنر ٹول پوسٹ لکھنپور اشیش کمار گپتا اور ان کی ٹیم کو مبارک باد دی۔
 

پوشن ابھیان کی عمل آوری کیلئے کمیٹیاں تشکیل

سرینگر//حکومت نے ریاست میں پوشن ابھیان کے لئے ریاستی کنورجنس پلان کمیٹی ، ڈسٹرکٹ کنورجنس پلان کمیٹی اور بلاک کنورجنس پلان کمیٹیاں تشکیل دینے کو منظوری دی ہے۔سٹیٹ کنورجنس پلان کمیٹی کے چیئرمین انتظامی سیکریٹری صحت و طبی تعلیم ہوں گے جبکہ محکمہ خزانہ، منصوبہ بندی، ترقی نگرانی، سکولی تعلیم، پی ایچ اینڈ آئی ایف سی، دیہی ترقی و پنچائتی راج، سماجی بہبود، خوراک، سول سپلائیز اور امور صارفین محکموں کے انتظامی سیکرٹری، سٹیٹ مشن ڈائریکٹر این آر ایچ ایم، فوڈ اینڈ نیوٹریشن بورڈ مرکزی سرکار کے نمائندے،این آئی پی سی سی ڈی کے ریاستی نمائندے اور سٹیٹ مشن ڈائریکٹر آئی سی ڈی ایس اس کمیٹی کے ارکان ہوں گے۔کمیٹی کا رول یہ ہوگا کہ وہ مختلف اضلاع سے موصول ہونے والے ضلع منصوبوں میں درج ضروریات کا جائیزہ لے کر اس میں معقولیت لانا اور اسے ایس سی پی میں شامل کرنے سے قبل مالی پہلوؤں کا جائیزہ لینا ہوگا۔ضلع کنورجنس پلان کمیٹی کے چیئرپرسن متعلقہ ضلع کے ضلع ترقیاتی کمشنرہوں گے جبکہ ضلع پروگرام افسر ممبر سیکرٹری کی حیثیت سے کام کریں گے ۔ بلاک کنورجنس پلان کمیٹی کے چیئرمین سب ڈویثرنل مجسٹریٹ ہوں گے جبکہ ایگزیکٹو انجنیئر پی ایچ ای اس کے ممبر اور سی ڈی پی او ،آئی سی ڈی ایس اس کے ممبر سیکرٹری ہوں گے۔
 

 ایران حملہ دہشت گردی

آغا حسن کی مذمت

سرینگر/انجمن شرعی شیعیان کے اہتمام سے 13 ویں محرم الحرام کو بھی وادی کے اطراف و اکناف سے علم شریف اور ذوالجناح کے جلوس برآمد کئے گئے جن میں عزاداروں نے حضرت امام حسین ؑ کو خراج عقیدت پیش کیا۔ جن مقامات پر انجمن شرعی شیعیان کے اہتمام سے جلوس ہائے عزا برآمد کئے گئے ان میں مولہ شولہ بیروہ، کاکنمرن، آکرویل بڈگام، باغپورہ اوڑینہ، گنڈ نوگام، پیر محلہ زالپورہ، سونہ برن اندرکوٹ سوناواری بانڈی پورہ، کانلو پٹن ، زاڈی محلہ دیورہ بارہمولہ وغیرہ شامل ہیں۔ اوڑینہ سوناواری میں عزاداروں سے خطاب کرتے ہوئے انجمن شرعی شیعیان کے سربراہ اور سینئر حریت رہنما آغا سید حسن نے فلسفہ شہادت وامامت کے کئی گوشوں کی وضاحت کرتے ہوئے کہا کہ یزید کا کردار و عمل نہ صرف اسلام اور شریعت اسلامی کے منافی تھا بلکہ انسانیت کے بنیادی اصول و اخلاق سے کوئی مطابقت نہیں رکھتا تھا ۔ انہوں نے اہوازایران میں حملے کی مذمت کرتے ہوئے کہا کہ یہ دہشت گردی کا ایک اور ثبوت ہے ۔ 
 

آئی سی ڈی ایس کے 11ملازمین غیر حاضر رہنے کی پاداش میں معطل 

سری نگر/ /سٹیٹ مشن ڈائریکٹر آئی سی ڈی ایس نے نارہ بل اور سنگھ پور ہ میں پیر کو آئی سی ڈی ایس پروجیکٹوں کا اچانک معائینہ کیا۔ معائینے کے دوران 11ملازمین کو اپنی ڈیوٹیوں سے غیر حاضر پایا گیا۔ سٹیٹ مشن ڈائریکٹر نے موقعہ پر ہی ان ملازمین کی معطلی کے احکامات جاری کئے۔اس موقعہ پر سی ڈی پی اوزکی طرف سے چلائے جارہے آنگن واڑی مراکز کی کارکردگی کا بھی جائزہ لیا گیااور انہیں غیر اطمینان بخش پایا گیا جس کے لئے سی ڈی پی اوز سے جواب طلبی کا حکم دیا گیا۔ سٹیٹ مشن ڈائریکٹر نے فیلڈ میں کام کرنے والے افسران کو آنگن واڑی مراکز کی کارکردگی میں بہتری لانے کی ہدایت دی۔