تازہ ترین

ڈوگرہ صدر سبھاکااجلاس کااہتمام

ڈوگروں کی عظمت رفتہ بحالی کی بحالی کامطالبہ

9 اگست 2018 (00 : 01 AM)   
(      )

 جموں// ڈوگروں کی عظمت رفتہ بحالی کی مانگ کو لیکر ڈوگر ہ صدرسبھا کے چئیرمین جی ایس چاڑک کی سربراہی  میںایک خصوصی اجلاس کااہتمام کیا جس میں انہوں نے سرکار سے پرزورمطالبہ کیاہے کہ وہ ڈوگرہ جائیداد ورثہ میراث کو دھیان میںرکھتے ہوئے جموں کے تواریخی مقامات کو ازسرنو زندہ جاوید بنانے کیلئے کارگراقدامات کرے ۔یہاں پرجاری پریس بیان میں سبھا کے چیئرمین جی ایس چاڑ ک نے  مبارک منڈی کی تواریخی ورثہ کی تازہ صورتحال پر تشویش کااظہار کیاہے۔ انہوںنے جانکاری فراہم کرتے ہوئے مزید کہاہے کہ حال ہی موسم کی بے رنگی چال کے باعث ہوئی بھاری بارشوںکے سبب تواریخی مقام کی عمارتوں کو کافی نقصان پہنچا ہے۔ انہوںنے دکھ کا اظہارکرتے ہوئے کہاہے کہ مرکزی سرکار کی جانب سے فنڈز کی فراہمی کے باوجود بھی  تجدیدی کاموں میں بلاوجہ دیر کی جارہی ہے۔ انہوںنے مزید کہاہے کہ بیشقیمتی فتواریخی دستاویز ات سے متعلق35000فائلیں پہلے سے ہی کلاکیندر جموں میں منتقل کی گئیں ہیں جو بالکل وہاں پر غیر مطمئن اورغیر محفوظ انداز میں پڑی ہوئی ہیں۔ انہوں نے مزید کہاہے کہ موسم  میں نمی زیادہ ہونے کے باعث کم ازکم 6سے 7 لاکھ  تک کی فائلیں  خدا کے بھروسے ہیں۔ چاڑک نے یہ بھی بتایاہے کہ جنرل زوراور سنگھ چوک میں سنگھ کے مجسمے کی حالت بھی  کافی زار ہے جس کی طرف توجہ مرکوز کرنے کی ضرورت ہے۔ انہوںنے کہا ہے کہ اس ضمن میں ڈوگرہ صدر سبھا نے قصوروار افراد کے خلاف ایف آئی آر درج کی ہے اور114سال پرانی تنظیم نے فیصلہ کیاہے کہ وہ اب 11اگست سے  انتظامیہ کے  خلاف احتجاج کیلئے سڑکوں پر اتر آئے گی۔میٹنگ میں  میجرجنرل سنیتا کپور‘کرنل کرن سنگھ جموال‘پریم ساگر گپتا‘ْبرگیڈئر ایم ایس جموال ٌکرنل ڈاکٹر وریندر کے سیٹھی‘ پروفیسر انیتا بلوریہ ‘ شری تر ون اپل ‘شری پردیپ مہاجن اورکاوس ابرول نے شرکت کی ۔اس موقع پرشہید ہوئے میجر کے پی رانے  اور  تین جوانوں ہمیر سنگھ ‘وکرم جیت سنگھ اورمندیپ سنگھ راوت کو خراج عقدیت پیش کی۔